1. آئیے اہم اسلامی کتب کو یونیکوڈ میں انٹرنیٹ پر پیش کرنے کے لئے مل جل کر آن لائن ٹائپنگ کریں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ کے ذریعے آپ روزانہ فقط دس پندرہ منٹ ٹائپنگ کر کے ہزاروں صفحات پر مشتمل اہم ترین کتب کو ٹائپ کرنے میں اہم کردار ادا کرکے صدقہ جاریہ میں شامل ہو سکتے ہیں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ میں شمولیت کے لئے یہاں کلک کریں۔
  2. آئیے! مجلس التحقیق الاسلامی کے زیر اہتمام جاری عظیم الشان دعوتی واصلاحی ویب سائٹس کے ساتھ ماہانہ تعاون کریں اور انٹر نیٹ کے میدان میں اسلام کے عالمگیر پیغام کو عام کرنے میں محدث ٹیم کے دست وبازو بنیں ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔
شبنم زاھد
آخری سرگرمی:
‏اپریل 03، 2018
شمولیت:
‏مارچ 13، 2018
پیغامات:
1
تمغے کے پوائنٹ:
17
موصول مثبت ریٹنگ:
0
موصول نیوٹرل ریٹنگ:
0
موصول منفی ریٹنگ:
0

ریٹنگ شامل کریں

وصول شدہ: دی گئی:
شکریہ 0 0
پسند 0 0
ناپسند 0 0
متفق 0 0
غیرمتفق 0 0
زبردست 0 0
معلوماتی 0 0
علمی 0 0
مفید 0 0
غیرمتعلق 0 1
تکرار 0 0
صنف:
عورت
جگہ:
دہلی
پیشہ:
طالب علم

اس صفحے کو مشتہر کریں

شبنم زاھد

مبتدی, عورت, دہلیسے

آخری مرتبہ شبنم زاھد کو دیکھا گیا:
‏اپریل 03، 2018
    1. شبنم زاھد کے پروفائل پر فی الحال کوئی پیغامات موجود نہیں ہیں۔
  • لوڈ کرتے ہوئے...
  • لوڈ کرتے ہوئے...
  • بارے

    صنف:
    عورت
    جگہ:
    دہلی
    پیشہ:
    طالب علم
    ﺗﯿﺮﯼ ﺧﻮﺷﺒﻮ، ﻣﯿﺮﯼ ﭼﺎﺩﺭ
    ﺗﯿﺮﮮ ﺗﯿﻮﺭ، ﻣﯿﺮﺍ ﺯﯾﻮﺭ
    ﺗﯿﺮﺍ ﺷﯿﻮﮦ، ﻣﯿﺮﺍ ﻣﺴﻠﮏ
    ﻭَﺭَﻓَﻌﻨﺎ ﻟَﮏَ ﺫِﮐﺮَﮎ
    ﻣﯿﺮﯼ ﻣﻨﺰﻝ، ﺗﯿﺮﯼ ﺁﮨﭧ
    ﻣﯿﺮﺍ ﺳﺪﺭﮦ، ﺗﯿﺮﯼ ﭼﻮﮐﮭﭧ
    ﺗﯿﺮﯼ ﮔﺎﮔﺮ، ﻣﯿﺮﺍ ﺳﺎﮔﺮ
    ﺗﯿﺮﺍ ﺻﺤﺮﺍ ، ﻣﯿﺮﺍ ﭘﻨﮕﮭﭧ
    ﻣﯿﮟ ﺍﺯﻝ ﺳﮯ ﺗﺮﺍ ﭘﯿﺎﺳﺎ
    ﻧﮧ ﮨﻮ ﺧﺎﻟﯽ ﻣﯿﺮﺍ ﮐﺎﺳﮧ
    ﺗﯿﺮﮮ ﻭﺍﺭﯼ ﺗﺮﺍ ﺑﺎﻟﮏ
    ﻭَﺭَﻓَﻌﻨﺎ ﻟَﮏَ ﺫِﮐﺮَﮎ
    ﺗﯿﺮﯼ ﻣﺪﺣﺖ، ﻣﯿﺮﯼ ﺑﻮﻟﯽ
    ﺗُﻮ ﺧﺰﺍﻧﮧ، ﻣﯿﮟ ﮨﻮﮞ ﺟﮭﻮﻟﯽ
    ﺗﯿﺮﺍ ﺳﺎﯾﮧ، ﻣﯿﺮﯼ ﮐﺎﯾﺎ
    ﺗﯿﺮﺍ ﺟﮭﻮﻧﮑﺎ، ﻣﯿﺮﯼ ﮈﻭﻟﯽ
    ﺗﯿﺮﺍ ﺭﺳﺘﮧ، ﻣﯿﺮﺍ ﮨﺎﺩﯼ
    ﺗﯿﺮﯼ ﯾﺎﺩﯾﮟ، ﻣﯿﺮﯼ ﻭﺍﺩﯼ
    ﺗﯿﺮﮮ ﺫﺭّﮮ، ﻣﯿﺮﮮ ﺩﯾﭙﮏ
    ﻭَﺭَﻓَﻌﻨﺎ ﻟَﮏَ ﺫِﮐﺮَﮎ
    ﺗﯿﺮﮮ ﺩﻡ ﺳﮯ ﺩﻝِ ﺑﯿﻨﺎ
    ﮐﺒﮭﯽ ﻓﺎﺭﺍﮞ، ﮐﺒﮭﯽ ﺳﯿﻨﺎ
    ﻧﮧ ﮨﻮ ﮐﯿﻮﮞ ﭘﮭﺮ ﺗﯿﺮﯼ ﺧﺎﻃﺮ
    ﻣﯿﺮﺍ ﻣﺮﻧﺎ ﻣﯿﺮﺍ ﺟﯿﻨﺎ
    ﯾﮧ ﺯﻣﯿﮟ ﺑﮭﯽ ﮨﻮ ﻓﻠﮏ ﺳﯽ
    ﻧﻈﺮ ﺍٓﺋﮯ ﺟﻮ ﺩﮬﻨﮏ ﺳﯽ
    ﺗﯿﺮﮮ ﺩﺭ ﺳﮯ ﻣﯿﺮﯼ ﺟﺎﮞ ﺗﮏ
    ﻭَﺭَﻓَﻌﻨﺎ ﻟَﮏَ ﺫِﮐﺮَﮎ
    ﻣﯿﮟ ﮨﻮﮞ ﻗﻄﺮﮦ، ﺗُﻮ ﺳﻤﻨﺪﺭ
    ﻣﯿﺮﯼ ﺩﻧﯿﺎ ﺗﯿﺮﮮ ﺍﻧﺪﺭ
    ﺳﮓِ ﺩﺍﺗﺎ ﻣﯿﺮﺍ ﻧﺎﺗﺎ
    ﻧﮧ ﻭﻟﯽ ﮨﻮﮞ، ﻧﮧ ﻗﻠﻨﺪﺭ
    ﺗﯿﺮﮮ ﺳﺎﺋﮯ ﻣﯿﮟ ﮐﮭﮍﮮ ﮨﯿﮟ
    ﻣﯿﺮﮮ ﺟﯿﺴﮯ ﺗﻮ ﺑﮍﮮ ﮨﯿﮟ
    ﮐﻮﺋﯽ ﺗﺠﮫ ﺳﺎ ﻧﮩﯿﮟ ﺑﮯ ﺷﮏ
    ﻭَﺭَﻓَﻌﻨﺎ ﻟَﮏَ ﺫِﮐﺮَﮎ