1. آئیے اہم اسلامی کتب کو یونیکوڈ میں انٹرنیٹ پر پیش کرنے کے لئے مل جل کر آن لائن ٹائپنگ کریں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ کے ذریعے آپ روزانہ فقط دس پندرہ منٹ ٹائپنگ کر کے ہزاروں صفحات پر مشتمل اہم ترین کتب کو ٹائپ کرنے میں اہم کردار ادا کرکے صدقہ جاریہ میں شامل ہو سکتے ہیں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ میں شمولیت کے لئے یہاں کلک کریں۔
  2. آئیے! مجلس التحقیق الاسلامی کے زیر اہتمام جاری عظیم الشان دعوتی واصلاحی ویب سائٹس کے ساتھ ماہانہ تعاون کریں اور انٹر نیٹ کے میدان میں اسلام کے عالمگیر پیغام کو عام کرنے میں محدث ٹیم کے دست وبازو بنیں ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔

فیچرز السلام علیکم ایک کتاب کے بارہ رہنمائی درکار ہے.

'معلومات محدث فورم' میں موضوعات آغاز کردہ از ibn-ul-qirtaas, ‏جنوری 15، 2019۔

  1. ‏جنوری 15، 2019 #1
    ibn-ul-qirtaas

    ibn-ul-qirtaas مبتدی
    شمولیت:
    ‏جنوری 15، 2019
    پیغامات:
    12
    موصول شکریہ جات:
    0
    تمغے کے پوائنٹ:
    6

    چند یوم قبل ایک حضرت نے کسی واٹس ایپ گروپ میں درج ذیل صفحات شئیر کئے تھے ایک تحقیق کے حوالہ جات بارہ میں. رہنمائ درکار ہے کہ کتاب ہذا کا نام اور مصنف کا کیا نام ہے.[​IMG][​IMG][​IMG][​IMG]

    Sent from my QMobile ENERGY X2 using Tapatalk
     
  2. ‏جنوری 16، 2019 #2
    اسحاق سلفی

    اسحاق سلفی فعال رکن رکن انتظامیہ
    جگہ:
    اٹک ، پاکستان
    شمولیت:
    ‏اگست 25، 2014
    پیغامات:
    6,372
    موصول شکریہ جات:
    2,398
    تمغے کے پوائنٹ:
    791

    ان امیجز کے کچھ مندرجات (تہذیب التہذیب لابن حجرؒ ) کے ہیں ،یعنی مذکورہ رواۃ کے یہ تراجم تہذیب التہذیب میں ہیں ۔
    لیکن ہماری معلومات کے مطابق اس کتاب کا ابھی تک ترجمہ نہیں ہوا ۔واللہ اعلم
     
    Last edited: ‏جنوری 16، 2019
    • معلوماتی معلوماتی x 1
    • مفید مفید x 1
    • لسٹ
  3. ‏جنوری 16، 2019 #3
    خضر حیات

    خضر حیات علمی نگران رکن انتظامیہ
    جگہ:
    طابہ
    شمولیت:
    ‏اپریل 14، 2011
    پیغامات:
    8,769
    موصول شکریہ جات:
    8,334
    تمغے کے پوائنٹ:
    964

    تہذیب، میزان الاعتدال ، تقریب وغیرہ مختلف کتابوں کا چربہ لگ رہی ہے۔
    حافظ ذہبی و ابن حجر کی کوئی تصنیف ہو تو اس میں خود حافظ ذہبی وابن حجر کے اقوال نقل نہیں ہونے چاہییں۔
    ان دونوں سے متاخر اس طرح کی کوئی کتاب ہے بھی نہیں۔ واللہ اعلم۔
    اس کتاب میں بقیہ اقوال کا ترجمہ پتہ نہیں کیا ہوگا، لیکن یہ ’علماء وذاکرین‘ کے ساتھ مجلس والی تعبیر عجیب و غریب ہے۔
     
  4. ‏جنوری 16، 2019 #4
    saeedimranx2

    saeedimranx2 رکن
    شمولیت:
    ‏مارچ 07، 2017
    پیغامات:
    136
    موصول شکریہ جات:
    13
    تمغے کے پوائنٹ:
    44

    جی بالکل مگر تاریخ بغداد کا حوالہ موجود ہے۔ اس کے حاشیہ میں۔
     
  5. ‏جنوری 16، 2019 #5
    اسحاق سلفی

    اسحاق سلفی فعال رکن رکن انتظامیہ
    جگہ:
    اٹک ، پاکستان
    شمولیت:
    ‏اگست 25، 2014
    پیغامات:
    6,372
    موصول شکریہ جات:
    2,398
    تمغے کے پوائنٹ:
    791

    یہ علماء و ذاکرین کا ترجمہ کرنے والے کی عربی دانی اور علمی حالت دیکھنی ہو تو "تہذیب التہذیب " میں متعلقہ اصل عربی عبارت دیکھ لیجئے :
    قال الخطيب: "ورد بغداد في أيام أحمد وجالس بها العلماء وذاكرهم, وكان ثقة فهما عالما فاضلا"
    ترجمہ : (احمد بن سعید ) امام احمدؒ کے دور میں بغداد آئے ، اور بغداد میں علماء کی مجالس میں شرکت کی ،اور ان سے مذاکرے کئے ،اور (قانون روایت کے لحاظ سے ) ثقہ اور فہیم عالم فاضل تھے ،انتھی
    ــــــــــــــــــ
    لگتا ہے امیج والا ترجمہ کسی شیعہ یا ان متاثر مقلد نے کیا ہے ۔اسی لئے "علماء ،ذاکرین " کی مجالس برپا کردیں ۔
     
    Last edited: ‏جنوری 16، 2019
    • پسند پسند x 2
    • زبردست زبردست x 1
    • لسٹ
  6. ‏جنوری 16، 2019 #6
    ibn-ul-qirtaas

    ibn-ul-qirtaas مبتدی
    شمولیت:
    ‏جنوری 15، 2019
    پیغامات:
    12
    موصول شکریہ جات:
    0
    تمغے کے پوائنٹ:
    6

    جی بالکل یہ آپریشن کرنے والے کی اپنی عربی بھی کافی گلابی ہے...و جالس بہا العلماء (اور اس (بغداد) کے علماء کے ساتھ مجلس کی. وذاکرہم (اور اس کے ذاکرین) کے ساتھ...
    خیر نہایت عجیب بات ہے کہ یہ کہنا کہ یہ کسی شیعہ کا ترجمہ ہے بڑی عجیب بات ہے...صفحات میں اہل سنت کی کتب کے راویان پر تحقیق ہے جو کہ شیعہ اور رافضیوں کا تو خاصہ نہیں ہے..اور صرف یہ احتمال کر لینا کہ "ذاکرین" کا لفظ شیعہ استعمال کرتے ہیں ..یہ بھی تو جہالت ہے...بغداد میں ابن حنبل کے دور میں شیعہ ذاکرین کی مجالس کہاں ہوتی تھیں یہ بھی حوالے کے ساتھ بتایا جائے..

    Sent from my QMobile ENERGY X2 using Tapatalk
     
  7. ‏جنوری 16، 2019 #7
    اسحاق سلفی

    اسحاق سلفی فعال رکن رکن انتظامیہ
    جگہ:
    اٹک ، پاکستان
    شمولیت:
    ‏اگست 25، 2014
    پیغامات:
    6,372
    موصول شکریہ جات:
    2,398
    تمغے کے پوائنٹ:
    791

    اس عربی عبارت کا درست ترجمہ کردیں تاکہ پتا چلے آپریشن کرنے والے نے کیا غلطی کی ہے ؟
     
  8. ‏جنوری 16، 2019 #8
    ibn-ul-qirtaas

    ibn-ul-qirtaas مبتدی
    شمولیت:
    ‏جنوری 15، 2019
    پیغامات:
    12
    موصول شکریہ جات:
    0
    تمغے کے پوائنٹ:
    6

    یہ تو ثابت کیا جائے صحیح سند سے کہ ابن حنبل کے دور میں شیعہ ذاکرین کی مجلسیں ہوتی تھیں ??? اگر ثابت ہو جائے تو تب مان سکتے ہیں کہ آپ کی بات درست ہے اگر کسی صحیح سند سے ایسا ثابت نہیں تو پھر یہ کیسے مانا جا سکتا ہے.

    Sent from my QMobile ENERGY X2 using Tapatalk
     
  9. ‏جنوری 16، 2019 #9
    اسحاق سلفی

    اسحاق سلفی فعال رکن رکن انتظامیہ
    جگہ:
    اٹک ، پاکستان
    شمولیت:
    ‏اگست 25، 2014
    پیغامات:
    6,372
    موصول شکریہ جات:
    2,398
    تمغے کے پوائنٹ:
    791

    اس کا مطلب ہے آپ کو بھی عربی سے شناسائی نہیں ،
    بلکہ آپ کی پوسٹ سے عیاں ہے کہ آپ کو اردو بھی نہیں آتی ،
    اگر آپ اردو زبان سمجھ سکتے تو ذاکرین والا اعتراض بالکل نہ کرتے ،
    اس تھریڈ میں آپ کے پہلے سوال سے معلوم ہوتا ہے کہ آپ واقعی کوئی علمی بات سمجھنا چاہتے ہیں
    لیکن اب آپ کی آخری دو پوسٹیں بتارہی ہیں کہ آپ کا مقصد خواہ مخواہ کی بحث ہے ؟
    تلہ گنگ میں عشاء کی اذانیں ہوچکی ہیں ،باجماعت نماز کرلیں ۔
     
  10. ‏جنوری 16، 2019 #10
    ibn-ul-qirtaas

    ibn-ul-qirtaas مبتدی
    شمولیت:
    ‏جنوری 15، 2019
    پیغامات:
    12
    موصول شکریہ جات:
    0
    تمغے کے پوائنٹ:
    6

    بھائی میں عربی تو بالکل نہیں جانتا کسی نے مجھے بتایا تھا کہ اس کتاب کے حوالے سے محدث فورم پر چھان بین کرو...البتہ مایوسی تب ہوئی جب بغیر کسی تحقیق کے آپ نے شیعیت والی بات کر دی...اگر اس فورم پر تحقیق کا یہی حال ہے کہ صرف اندازوں سے بات کی جاتی ہے تو تحقیق کا اللہ ہی حافظ ہے...بحث تو آپ کر رہے ہیں جب میں نے ذاکرین کی محفلوں کے حوالے سے صحیح سند طلب کی تو تب آپ کی تنقید بھی شروع ہو گئی بجائے اس کے کہ آپ سند پیش کرتے...اور عربی آپریشن والی بات میں نے ترجمہ کرنے والے کے حوالے کو ملا کر کی تھی.. اس کا ترجمہ کرنے والے پر ہی منحصر ہے کہ وہ کیسے کرتا ہے...علماء اور ذاکرین خالی شیعہ میں تو نہیں ...اس دور میں تو ذکر کرنے والے کو بھی ذاکر ہی کہا جاتا تھا...

    Sent from my QMobile ENERGY X2 using Tapatalk
     
لوڈ کرتے ہوئے...

اس صفحے کو مشتہر کریں