1. آئیے اہم اسلامی کتب کو یونیکوڈ میں انٹرنیٹ پر پیش کرنے کے لئے مل جل کر آن لائن ٹائپنگ کریں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ کے ذریعے آپ روزانہ فقط دس پندرہ منٹ ٹائپنگ کر کے ہزاروں صفحات پر مشتمل اہم ترین کتب کو ٹائپ کرنے میں اہم کردار ادا کرکے صدقہ جاریہ میں شامل ہو سکتے ہیں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ میں شمولیت کے لئے یہاں کلک کریں۔
  2. آئیے! مجلس التحقیق الاسلامی کے زیر اہتمام جاری عظیم الشان دعوتی واصلاحی ویب سائٹس کے ساتھ ماہانہ تعاون کریں اور انٹر نیٹ کے میدان میں اسلام کے عالمگیر پیغام کو عام کرنے میں محدث ٹیم کے دست وبازو بنیں ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔

الیکشن میں ووٹ کاسٹ کرنے سے متعلق آپ کی رائے

'انتخابی سیاست' میں موضوعات آغاز کردہ از عمران اسلم, ‏جنوری 06، 2013۔

  1. ‏مارچ 21، 2013 #21
    کنعان

    کنعان فعال رکن
    جگہ:
    برسٹل، انگلینڈ
    شمولیت:
    ‏جون 29، 2011
    پیغامات:
    3,564
    موصول شکریہ جات:
    4,376
    تمغے کے پوائنٹ:
    521

    السلام علیکم

    اسلامی نظام پر پہلے یہ دیکھنا پڑے گا کہ جن اسلامی ممالک میں اسلامی نظام ١٠٠ فیصد ھے کیا وہاں سب مسلمانوں کو متوازی حقوق مل رہے ہیں؟ کیونکہ تمام ممالک یونئٹڈ نیشن کے ماتحت ہیں اس پر انٹرنیشل لاء کے مطابق درآمدان، برآمدات کے علاوہ بہت سے ٹرم اینڈ کننڈیشن ہیں یہ ہائی پروفائل مسئلہ اور ایک الگ بحث ھے۔

    جب نہ خلیفہ اور نہ بادشاہت تو پھر جو سسٹم پاکستان میں رائج ھے اس پر میرا جواب ووٹ کاسٹ کرنے پر ھے اور اس پر کوشش کرتا ہوں کہ مختصر رائے پیش کروں تاکہ سمجھنے میں آسانی ہو۔

    کسی بھی شہر کے ایک علاقہ سے ٤ ایم پی اے [SUP](ممبر آف پروینشل اسمبلی)[/SUP] حلقوں پر، ١ ایم این اے [SUP](ممبر آف نیشنل اسمبلی)[/SUP] ہوتا ھے۔
    [SUP](تعداد ٤ پر اگر کوئی اپڈیٹ ہو تو درج کر سکتا ھے)[/SUP]


    آپ/ میں نے جو ووٹ کاسٹ کرنا ھے اس پر نہ تو کوئی وزیر اعظم منتخب ہو گا اور نہ ہی صدر۔

    ہمیں ہر پانچ سال بعد ٢ ووٹ کاسٹ کرنے ہوتے ہیں۔ ١ صوبائی امیدوار کے لئے ووٹ اور ١ قومی امیدوار کے لئے ایک ووٹ۔

    مختلف پارٹیوں کی طرف سے ایک ایک صوبائی امیدوار اور اسی طرح قومی امیدوار کھڑے کئے جاتے ہیں جس پر ووٹر کو معلوم ہونا چاہئے کہ ان میں یہ کونسا امیدوار ہمارے حلقہ کا ایماندار، دیانتدار اور شرافت کی ایک مثال ھے جو ہمارے مسائل حکومت سے حل کروانے میں بہتر معاون ہو سکتا ھے جس پر ہمیں ان ٢ کا انتخاب کرنے کے لئے ووٹ دینے چاہئیں۔

    اگر ہم اپنا ووٹ استعمال نہیں کرتے تو پھر ہمارے حلقوں سے دونوں امیدوار جو غیرقانونی طریقوں سے صوبائی اور قومی اسمبلیوں کا حصہ بنیں گے وہ اگلے ٥ سال تک ہمارے لئے عذاب کا باعث بنیں گے اس لئے کوشش کر کے اپنا ووٹ پارٹی کو نہیں بلکہ کسی ایماندار کو ضرور دیں جس پر آپکو امید ھے کہ وہ آپکے مسائل حل کرنے میں آپ سے تعاون کرے گا۔

    والسلام
     
  2. ‏مارچ 21، 2013 #22
    makki pakistani

    makki pakistani سینئر رکن
    شمولیت:
    ‏مئی 25، 2011
    پیغامات:
    1,323
    موصول شکریہ جات:
    3,028
    تمغے کے پوائنٹ:
    282

    انتحابات میں مرکزی جمیعت اہل ھدیث ،جمیعت اھل حدیث(ابتسام الہی) مولانا لکھوی کے فرزندان کا گروپ۔جماعت اسلامی،جمیعت علماء اسلام (ف) (س) (ن)،جمعیت علماء پاکستان(ف)

    (ن)سمیت کیئ ایک دینی سیاسی جماعتیں نہ صرف حصہ لیتی ھیں بلکہ جھاں موقع ملے بھرپور سودے بازی (سیٹ ایڈجسٹمنٹ )بھی کرتی ھیں۔

    میری ذاتی رائے ھے کہ ایک نہائیت ھی منظم جماعت جس طرز پر ملک میں کام کر رھی ھے اور جس طرح ھر شعبہ زندگی کے معاملات

    میں اثر رسوخ رکھتی ھے شاید کل آنے والے کسی وقت میں ایک بھت بڑی انتحابی طاقت ثابت ھو سکتی ھے اور اسے ھونا بھی چاھیے۔

    دوسری بات ہمارے ایک ہم پیشہ سبز پوش طبیب شروع میں ٹی وی کو شیطانی آلہ سے تشبیہ دیتے تھے مگر جب ہریالی چینل کا آغاز

    ہوا تو یہی ٹی وی حسنات کا گہوارہ اور تبلیغ کا موثر زریعہ کھلانے لگا (بقول انکے)
     
  3. ‏مارچ 21، 2013 #23
    محمد ارسلان

    محمد ارسلان خاص رکن
    شمولیت:
    ‏مارچ 09، 2011
    پیغامات:
    17,865
    موصول شکریہ جات:
    40,798
    تمغے کے پوائنٹ:
    1,155

    سبحان اللہ
    جزاک اللہ خیرا

    آپ نے بہت اچھی وضاحت کی۔ ہائی لائٹ باتیں آپ کی بالکل حقیقت ہیں۔ ہر انسان کی اپنی رائے ہوتی ہے اور اپنی احتیاط کا تقاضا ہے۔ لہذا ہم تو اس غیر اسلامی نظام بلکہ کفریہ نظام میں شمولیت کو برا سمجھتے ہیں اسی لیے میں نے اپنے تمام گھر والوں کو روک دیا ہے کہ کسی کو نہ ووٹ نہیں دینا چاہے کتنا ہی واقف کار کیوں نہ آ جائے، یا کوئی تعلق والا چل کر آ جائے پھر بھی نہیں دینا۔ کیوں کہ یہ ان کی سپورٹ کرنے کے برابر ہے۔ اگر کوئی اچھا آدمی کھڑا بھی ہو گا تو کس حیثیت سے کھڑا ہو گا، اچھا آدمی جمہوریت میں ووٹ لینے کے لیے کھڑا ہو سکتا ہے اس نظام کے باطل ہونے کے بارے میں بتانے کے لیے کیوں کھڑا نہیں ہو سکتا۔
     
  4. ‏مارچ 21، 2013 #24
    محمد ارسلان

    محمد ارسلان خاص رکن
    شمولیت:
    ‏مارچ 09، 2011
    پیغامات:
    17,865
    موصول شکریہ جات:
    40,798
    تمغے کے پوائنٹ:
    1,155

    "ارسلام" نہیں "ارسلان"
    تنقید کی کوئی بات نہیں ہے۔
    آج تک یہی بات کیوں نہیں سوچی گئی کہ اسلامی نظام کو کس طرح نافذ کیا جائے۔ کیا 65 سالوں میں علماء کو صرف ایک ہی طریقہ نظر آیا ہے کہ اس کفریہ نظام میں کود کر اسے بدلا جا سکتا ہے، یعنی شرابی کو شراب پینے سے روکنے کے لیے پہلے خود شراب پی جائے اور پھر جو نشہ چڑھے اترنے پر شرابی کو بتایا جائے کہ یہ نقصان ہے شراب پینے کا؟

    میرا گمان تو یہ ہے کہ یہ مذھبی جماعتیں اللہ کے دین کے ساتھ مخلص نہیں ہیں (تمام نہیں اکثریت) کیونکہ یہ کیسے ہو سکتا ہے کہ کوئی اللہ کے دین کے ساتھ مخلص ہو اور اسے کامیابی نہ ملے۔ صحابہ کرام رضی اللہ عنھم اجمعین اللہ کے دین کے ساتھ مخلص تھے ملک پر ملک فتح ہوتے چلے گئے آج ہمیں کشمیر تک حاصل نہیں ہو رہا۔ یہ سب جماعتیں اپنے اپنے مفادات اور اپنی اپنی جماعتوں کو تقویت پہچانے کی خاطر اس نظام میں شامل ہیں ،( یہ میرا گمان ہے ہو سکتا ہے کہ صحیح بھی ہو سکتا ہے غلط بھی ہو)

    حرب بن شداد بھائی! آپ سے میں یہ پوچھنا چاہتا ہوں کہ آپ اس نظام میں کود کر کون سی تبدیلی آ سکتی ہے؟

    پوری دنیا میں اسلامی نظام نہیں ہے اسی لیے تو پوری دنیا میں امن بھی نہیں ہے۔
    اور میں نے یہ بات کہی بھی نہیں پتہ نہیں آپ نے کن باتوں سے یہ بات اخذ کر لی۔
    آپ بتائیں اس کفریہ نظام میں وہ کون سا فائدہ ہے جو آپ کو تو نظر آرہا ہے اور ہماری آنکھیں اُسے دیکھنے سے قاصر ہیں
     
  5. ‏مارچ 21، 2013 #25
    محمد ارسلان

    محمد ارسلان خاص رکن
    شمولیت:
    ‏مارچ 09، 2011
    پیغامات:
    17,865
    موصول شکریہ جات:
    40,798
    تمغے کے پوائنٹ:
    1,155

    کیا آپ پورے وثوق سے کہہ سکتے ہیں کہ ان پارٹیوں کے اقتدار میں آنے کے بعد مندرجہ ذیل تبدیلیاں آ جائیں گیں:
    • کتاب و سنت کے مطابق فیصلہ
    • چوری کرنے والے مرد و عورت کے ہاتھ کاٹنا
    • فساد فی الارض کے مرتکب لوگوں کے مخالف سمت سے ہاتھ پاؤں کاٹنا
    • رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کی گستاخی کرنے والے کو سزائے موت
    • قاتل کا سر قلم کرنا
    • ڈرون حملوں کا بند ہونا
    • امریکہ کی مداخلت ختم ہونا
    • کرپشن کا خاتمہ
    • مخلوط تعلیم ختم
    • پورے پاکستان میں سٹیج شوز اور سنیما ختم
    • حجاب کی پابندی
    • عدالتوں میں کتاب سنت کے مطابق فیصلے
    • ذمیوں سے جزیہ لینا
    • قادیانی، شیعہ اور منکرین حدیث کو کافر قرار دے کر ان سے جزیہ لینا
    • سود کے نظام کا خاتمہ
    • شرک کے اڈے مزارات کا خاتمہ
     
  6. ‏مارچ 21، 2013 #26
    حرب بن شداد

    حرب بن شداد سینئر رکن
    جگہ:
    اُم القرٰی
    شمولیت:
    ‏مئی 13، 2012
    پیغامات:
    2,149
    موصول شکریہ جات:
    6,249
    تمغے کے پوائنٹ:
    437

    اس پربات کرتے ہیں!۔


    چلیں میں پوری دنیا کا لفظ واپس لے لیتا ہوں۔۔۔ اس کی جگہ ہم کہتے کے وہ اسلامی ممالک جو دعوٰے دار ہیں کہ ہم اسلامی مملکت ہیں۔۔۔ کیا اسلام پوری طرح نافذ ہے؟؟۔۔۔ آپ نے بالکل درست فرمایا کہ آپ نے ایسی بات نہیں کی لیکن موضوع کو آگے بڑھانے کے لئے مجھے یہ الفاظ شامل کرنے پڑے۔۔۔ آپ نے مجھ سے پوچھا کہ کفریہ نظام کا فائدہ بتائیں۔۔۔ لیکن اُس سے پہلے ایک چھوٹا سا سوال جو میں آپ سے پوچھنا چاہتا ہوں کے کیا ووٹ دینا ہی کفر کا نظام ہے؟؟؟۔۔۔ کیا ہم جس نظام میں اپنی صبح و شام بسر کررہے ہیں وہ کیا ہے؟؟؟۔۔۔ آپ نے گھر والوں کو ووٹ دینے سے روک دیا۔۔۔ لیکن کیا آپ خود کو بجلی، گیس کا بل ادا کرنے سے روک سکتے ہیں؟؟؟۔۔۔ کیونکہ اس میں ٹیکس جو کے کفریہ نظام کی پیداوار ہے شامل ہے؟؟؟۔۔۔ ہم حج جیسے اہم فریضے کے لئے گھر سے نکلتے ہیں تو سفری دستاویزات سے لیکر رہائش تک پر ہم ٹیکس ادا کرتے ہیں تو کیا اس نظام کے تحت جو سب ہم کررہے ہیں ایک فریضے کو انجام دینے کے لئے کیا وہ جائز ہے؟؟؟۔۔۔ اگر یہ سب جائز ہے تو پھر ووٹ کیسے ناجائز ہوسکتا ہے؟؟؟۔۔۔
     
  7. ‏مارچ 21، 2013 #27
    عبداللہ حیدر

    عبداللہ حیدر مشہور رکن
    شمولیت:
    ‏مارچ 11، 2011
    پیغامات:
    314
    موصول شکریہ جات:
    989
    تمغے کے پوائنٹ:
    120

    السلام علیکم،
    اسلامی اصول دین میں سے ایک قاعدہ ہے سد الذرائع ’’برائی کے اسباب کو بند کرنا‘‘۔
    ایک شخص حاکم تھا۔ لال مسجد میں خون بہا۔ مسلمانوں کو فروخت کیا گیا۔ بے حیائی اور فحاشی کا چلن ہوا۔ دوسرے مفاسد ظاہر ہوئے جن کی تفصیل سب جانتے ہیں۔
    دوسری طرف ایک شخص کہتا ہے میں حکومت میں آؤں تو نام نہاد وار آن ٹیرر سے واپسی کی راہ تلاش کروں گا۔ مسلمانوں کے خون کا تحفظ کروں گا۔ اسلامی احکام پر جتنا ہو سکا عمل کرنے اور کرانے کی کوشش کروں گا۔ فحاشی و عریانی کو لگام دینے کی کوشش کروں گا اور مسلمانوں کی دنیاوی فلاح کے لیے بھی ہر ممکن قدم اٹھاؤں گا۔
    بڑی عجیب منطق ہے اگر کوئی کہے ’’بھائی جان! آپ بھلے آدمی ہوں گے لیکن ہمارامسئلہ ہے کہ بس ہم ہی اصلی اور وڈے حق والے ہیں۔ جب تک خلافت اور شورائی نظام قائم نہ ہو ہماری گردن ہر ذمے داری سے آزاد ہے۔ بھلے ہماری خاموشی کی وجہ سے مسلمانوں کے خون کا سودا کرنے والے مسلط ہوتے رہیں لیکن یقین رکھیے ہماری طرف سے آپ کو تعاون کی کوئی رمق نہیں پہنچے گی‘‘
    والسلام علیکم
     
  8. ‏مارچ 21، 2013 #28
    محمد ارسلان

    محمد ارسلان خاص رکن
    شمولیت:
    ‏مارچ 09، 2011
    پیغامات:
    17,865
    موصول شکریہ جات:
    40,798
    تمغے کے پوائنٹ:
    1,155

    اس نظام کے تحت زندگی گزارنا ہماری مجبوری ہے لیکن ہم دل سے ہرگز قبول نہیں کرتے نہ ہی اسے اچھا سمجھتے ہیں ہمارا بس چلے تو ہماری ساری فیملی سعودیہ عرب شفٹ ہو جائے، ہیر پھیر کر کے غلط کو صحیح ثابت کرنے کی کوشش نہیں کرتے، بجلی، گیس اور ٹیلی فون کا بل دین نہیں ہے، اسلامی نظام نافذ کرنے سے مراد ملک کو اسلام کے اصولوں کے مطابق چلانا ہے، مثلا اس نظام میں ہمیں بجلی مہنگی ملتی ہے، لوڈ شیڈنگ بہت زیادہ ہوتی ہے اور بل بھی زیادہ آتا ہے، لیکن جب اسلام کے سنہری اصولوں پر کوئی عمل پیرا ہو گا حکمران کو قیامت کے دن اللہ کے سامنے جواب دہی کا خوف ہو گا تو وہ بجلی بھی پوری فراہم کرے گا اور ناجائز بل بھی وصول نہیں کرے گا۔

    ٱلْيَوْمَ أَكْمَلْتُ لَكُمْ دِينَكُمْ وَأَتْمَمْتُ عَلَيْكُمْ نِعْمَتِى وَرَ‌ضِيتُ لَكُمُ ٱلْإِسْلَـٰمَ دِينًا ۚ فَمَنِ ٱضْطُرَّ‌ فِى مَخْمَصَةٍ غَيْرَ‌ مُتَجَانِفٍ لِّإِثْمٍ ۙ فَإِنَّ ٱللَّهَ غَفُورٌ‌ۭ رَّ‌حِيمٌ ﴿٣﴾۔۔۔سورۃ المائدہ
    ترجمہ: آج میں نے تمہارے لئے دین کو کامل کردیا اور تم پر اپنا انعام بھرپور کردیا اور تمہارے لئے اسلام کے دین ہونے پر رضامند ہوگیا۔ پس جو شخص شدت کی بھوک میں بے قرار ہو جائے بشرطیکہ کسی گناه کی طرف اس کا میلان نہ ہو تو یقیناً اللہ تعالیٰ معاف کرنے واﻻ اور بہت بڑا مہربان ہے۔
     
  9. ‏مارچ 21، 2013 #29
    محمد ارسلان

    محمد ارسلان خاص رکن
    شمولیت:
    ‏مارچ 09، 2011
    پیغامات:
    17,865
    موصول شکریہ جات:
    40,798
    تمغے کے پوائنٹ:
    1,155

    آپ سے میرا وہی سوال ہے جو محمد اقبال کیلانی صاحب نے مسلم دانشور اور مفکرین سے پوچھا تھا:
    آخر اسلامی تاریخ میں پہلے سے استعمال کی گئی کتاب و سنت سے ثابت شدہ اصطلاحات نظام خلافت ،نظام شورائیت سے پہلو تہی کرنے کی وجہ کیا ہے؟
    جمہوریت بھی کفر کا نظام ہے
     
  10. ‏مارچ 21، 2013 #30
    عبداللہ حیدر

    عبداللہ حیدر مشہور رکن
    شمولیت:
    ‏مارچ 11، 2011
    پیغامات:
    314
    موصول شکریہ جات:
    989
    تمغے کے پوائنٹ:
    120

    اللہ سے دعا کرتا ہوں کہ آپ سعودی نظام کو عملا برت کر دیکھ سکیں۔
     
لوڈ کرتے ہوئے...

اس صفحے کو مشتہر کریں