1. آئیے اہم اسلامی کتب کو یونیکوڈ میں انٹرنیٹ پر پیش کرنے کے لئے مل جل کر آن لائن ٹائپنگ کریں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ کے ذریعے آپ روزانہ فقط دس پندرہ منٹ ٹائپنگ کر کے ہزاروں صفحات پر مشتمل اہم ترین کتب کو ٹائپ کرنے میں اہم کردار ادا کرکے صدقہ جاریہ میں شامل ہو سکتے ہیں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ میں شمولیت کے لئے یہاں کلک کریں۔
  2. آئیے! مجلس التحقیق الاسلامی کے زیر اہتمام جاری عظیم الشان دعوتی واصلاحی ویب سائٹس کے ساتھ ماہانہ تعاون کریں اور انٹر نیٹ کے میدان میں اسلام کے عالمگیر پیغام کو عام کرنے میں محدث ٹیم کے دست وبازو بنیں ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔

"انٹرویو" پورشن میں خواتین کے انٹرویو نشر نہ کیئے جائیں

'تجاویز، آراء اور شکایات' میں موضوعات آغاز کردہ از سجاد, ‏مارچ 07، 2015۔

موضوع کا سٹیٹس:
مزید جوابات پوسٹ نہیں کیے جا سکتے ہیں۔
  1. ‏مارچ 11، 2015 #61
    محمد نعیم یونس

    محمد نعیم یونس خاص رکن رکن انتظامیہ
    شمولیت:
    ‏اپریل 27، 2013
    پیغامات:
    26,400
    موصول شکریہ جات:
    6,600
    تمغے کے پوائنٹ:
    1,207

    السلام علیکم ورحمۃ اللہ وبرکاتہ!
    ایک بہن نے دوسری بہن سے پوچھا
    تو ذاتی پیغام والی سہولت کا ذکر اسی لیے کردیا تھا۔تاکہ سند رہے۔۔ابتسامہ۔۔۔
     
    • پسند پسند x 3
    • شکریہ شکریہ x 1
    • لسٹ
  2. ‏مارچ 11، 2015 #62
    عبدالقیوم

    عبدالقیوم مشہور رکن
    شمولیت:
    ‏اگست 25، 2013
    پیغامات:
    825
    موصول شکریہ جات:
    408
    تمغے کے پوائنٹ:
    128

    یہ تھریڈ ختم کردیں تو بہتر بہتوں کی دل آزاری ہوچکی ہے
     
  3. ‏مارچ 11، 2015 #63
    Dua

    Dua سینئر رکن
    شمولیت:
    ‏مارچ 30، 2013
    پیغامات:
    2,579
    موصول شکریہ جات:
    4,379
    تمغے کے پوائنٹ:
    463

    اس تھریڈ میں میری یہ آخری پوسٹ ہے۔۔۔۔بہت "عزت افزائی " آپ نے ہماری کر لی ہے اور "کروا "بھی دی ، لہذا اب مزید کوئی وضاحت میں نہیں دوں گی!
    صرف ایک بات کہ محدث فورم کی ابتداء سے جو معزز سینیئر مرد اراکین کثیر تعداد میں یہاں موجود تھے ، ان کو ایک نئے" پہلو "سے سوچنے کا موقعہ ضرور دے دیا ہے۔شکریہ !

    انتظامیہ کو اپنا مؤقف "واضح " کرنا چاہیئے ، اور اس سلسلے میں "اقدامات " کی جانب بھی بڑھنا چاہیئے، نہ کہ منتظمین کی جانب سے یہ ادھورے جوابات !
    اللہ تعالی ہمیں ہر فتنہ سے محفوظ فرمائے ، اور حق پر چلنے اور قائم رہنے کی استطاعت نصیب فرمائے۔آمین
     
    • متفق متفق x 3
    • مفید مفید x 2
    • پسند پسند x 1
    • زبردست زبردست x 1
    • لسٹ
  4. ‏مارچ 11، 2015 #64
    محمد فیض الابرار

    محمد فیض الابرار سینئر رکن
    جگہ:
    کراچی
    شمولیت:
    ‏جنوری 25، 2012
    پیغامات:
    3,033
    موصول شکریہ جات:
    1,194
    تمغے کے پوائنٹ:
    402

    یعنی شاکر بھائی کسی بھی سنجیدہ موضوع پر فورم پر بات اگر کی جائے تو اس طرح بغیر دلائل کے آپ موضوع کر ختم کر دیں گے تو کیا یہ مثبت اسلوب ہو گا
    کیا باقاعدہ دلائل کی صورت میں اس مسئلہ کو واضح نہیں کیا جا سکتا
    شاید اسی وجہ سے فورم پر کوئی بھی موضوع اپنے منطقی اور تجزیاتی اور حتمی اختتام نہیں لیتا بلکہ ادھورا ہی نظر آتا ہے کم از کم میرے ناقص اور ادھورے مطالعاتی دورہ کے مطابق شاید ہی کوئی موضوع کسی حتمیت تک پہنچا ہو
    اگر یہ غلط ہے تو پھر اسے بھی واضح کریں تاکہ ہم یہاں ہی نہیں ہر فورم پر اس سے بچیں اور اس کا سب سے بہترین طریقہ تو یہی ہے کہ مردوں کے لیے الگ اور خواتین کے لیے الگ فورم ہو تاکہ یہ شبہات پیدا ہی نہ ہوں
    اور اگر اس میں کوئی حرج نہیں تو صرف کسی ایک رکن کی رائے پر آپ کسی بھی مفید سلسلے کو بند نہ کریں
    صرف یہ کہہ دینا کہ انتظامیہ کا موقف جاننے کے لیے کافی ہے ، یہ غیر مناسب اسلوب ہے
    خدارا اب میری پوسٹ کو کسی منفی انداز میں مت لیجیے گا نہ تو میں غصہ میں ہوں اور نہ ہی ناراض
    لیکن ایک ایسے اعتراض پر جو فی نفسہ خود واضح نہیں ہے اس پر اتنی جلدی کسی قدم کا اٹھانا اور وہ بھی بغیر دلیل کے
    لیکن اس کے باوجود اگر انتظامیہ کا یہی موقف ہو گا تو اللہ آپ سب کو جزائے خیر دے آمین اور توفیق مزید سے نوازے آمین
     
    • مفید مفید x 2
    • شکریہ شکریہ x 1
    • پسند پسند x 1
    • لسٹ
  5. ‏مارچ 11، 2015 #65
    محمد نعیم یونس

    محمد نعیم یونس خاص رکن رکن انتظامیہ
    شمولیت:
    ‏اپریل 27، 2013
    پیغامات:
    26,400
    موصول شکریہ جات:
    6,600
    تمغے کے پوائنٹ:
    1,207

    السلام علیکم ورحمۃ اللہ وبرکاتہ!
    کسی حتمی نتیجہ پر پہنچنے سے پہلے، انٹرویو کے لیے جو ہدایات وشرائظ طے ہوئی تھیں اُن کو بھی مد نظر رکھا جائے۔
     
    • پسند پسند x 5
    • شکریہ شکریہ x 2
    • لسٹ
  6. ‏مارچ 11، 2015 #66
    بنات خدیجہ

    بنات خدیجہ رکن
    شمولیت:
    ‏ستمبر 01، 2014
    پیغامات:
    115
    موصول شکریہ جات:
    57
    تمغے کے پوائنٹ:
    54

    دعا باجی! پلیز آپ ناراض نہ ہوئیے۔
    غلط فہمیوں کو دور کرلیجیئے۔ یقینا کسی کا مقصد آپ کو ہرٹ کرنا نہیں رہا ہوگا۔ اگر آپ ہرٹ ہوئی ہوں تو لوجہ اللہ معاف فرمادیں۔ اللہ تعالی معاف کرنے والا ہے اور وہ معافی کو پسند فرماتا ہے۔ ہم سب اللہ کے لئے بھائی بھائی ہیں۔ اللہ تعالیٰ ہم سب کے دلوں کو جوڑے رکھے۔
    اگر یہ مباحثہ صرف دلائل کے ساتھ ہوتا تو بہت بہتر ہوتا۔
    کیونکہ ایک مسلمان ہونے کے ناطے ہمیں اللہ رب العزت کا حکم ہے : فان تنازعتم فی شیئ فردوہ الی اللہ و رسولہ۔
    فریقین اپنے اپنے موقف واضح دلائل کے ساتھ پیش کریں تو ہمیں ایک نتیجہ پر پہنچنے میں آسانی ہوگی۔
    اور ہم سب یہی جاننا چاہتے ہیں کہ
    " اسلام کیا سکھلاتا ہے۔"
     
    • پسند پسند x 4
    • شکریہ شکریہ x 2
    • زبردست زبردست x 1
    • مفید مفید x 1
    • لسٹ
  7. ‏مارچ 12، 2015 #67
    خضر حیات

    خضر حیات علمی نگران رکن انتظامیہ
    جگہ:
    طابہ
    شمولیت:
    ‏اپریل 14، 2011
    پیغامات:
    8,763
    موصول شکریہ جات:
    8,333
    تمغے کے پوائنٹ:
    964

    محترم شیخ صاحب !
    اس دھاگے میں کچھ اراکین کی طرف سے دو متضاد آراء سامنے آرہی ہیں :
    1۔ اس دھاگے کو فورا بند کیا جائے کیونکہ اس سے کچھ اراکین کی حوصلہ شکنی وغیرہ ہوتی ہے ۔
    2۔ اس دھاگے کو کھلا رکھنا چاہیے تاکہ مسئلہ پر مزید کھل کر گفتگو ہو جائے اور کوئی بہتر فیصلہ کیا جاسکے ۔
    شاکر بھائی نے پہلی بات کو محسوس کیا اور اس مکالمے کو یہیں روکنے کی طرف اشارہ کیا ، لیکن ساتھ ساتھ ’’ مرد و زن کے فورم پر اختلاط ‘‘ والا معاملے کو علمی انداز سے حل کرنے کے لیے ایک نیا دھاگہ کھولنے کی تجویز بھی پیش کی ہے ۔ تاکہ معاملہ کی حیثیت ’’ ذاتی ‘‘ کی بجائے ’’ علمی ‘‘ ہو جائے ۔
    میں نے استاد محترم انس نضر صاحب سے فون پر بات کی تھی اور اس وقت تک جو باتیں سامنے آئیں ان کے گوش گزار کردیں ، جس میں انہوں نے یہی مشورہ دیا تھا کہ ذاتی قسم کی معلومات جن کا کوئی علمی یا دعوتی فائدہ نہیں ، ان کا تبادلہ نہیں ہونا چاہیے ۔
    لیکن لگ رہا ہے کہ اس معاملے پر مزید غور وفکر کرنا پڑے گا ، کیونکہ ’’ فتنے کا خدشہ ہونا ‘‘ الگ چیز ہے جبکہ ’’ فتنہ ہونا ‘‘ الگ چیز ہے ۔
    اور کچھ معاملات ایسے ہیں جہاں صرف ’’ فتنے کے خدشے ‘‘ کی بنیاد پر فیصلہ کرنا بعض دفعہ بھلائی سے محروم کردیتا ہے ۔
    مثلا ’’ انٹرنیٹ ‘‘ اور اس سے بھی پہلے ’’ کمپیوٹر ‘‘ بہت سارے فتنوں کا سبب بن سکتا ہے ، لیکن بہت سارے لوگ اس کو استعمال کرتے ہیں ، البتہ جو چیزیں واقعتا فتنہ یا برائی ہیں ان سے پرہیز کرتے ہیں ۔
    اب ہم کمپیوٹر اور انٹرنیٹ کے دلدادہ لوگ کبھی بھی اس منطق سے ان کا استعمال ترک نہیں کریں گے کہ یہ ’’ فتنوں کا باعث ‘‘ بن سکتا ہے ۔
    اور پھر جس نہج پر ہم کچھ انٹرویوز کو فتنے کا باعث سمجھ رہے ہیں اس طرح تو ہم ’’ صنف مخالف ‘‘ کی فورمز پر رکنیت پر بھی اعتراض کرسکتے ہیں کہ فتنے کا خدشہ ہے ۔
    لہذا میرے خیال میں ہمیں بنیاد ’’ خدشات ‘‘ کی بجائے ’’ حقائق ‘‘ یا ’’ واقعات ‘‘ پر رکھنی چاہیے ۔
    سب مردو خواتین ، بہن بھائیوں کو اخلاق کے دائرے میں رہتے ہوئے آزادی ہونی چاہیے ، ہاں جو غلط سرگرمی میں ملوث ہو اس کے خلاف کاروائی کرنی چاہیے ۔
     
    • متفق متفق x 7
    • پسند پسند x 2
    • مفید مفید x 1
    • لسٹ
  8. ‏مارچ 12، 2015 #68
    اسحاق سلفی

    اسحاق سلفی فعال رکن رکن انتظامیہ
    جگہ:
    اٹک ، پاکستان
    شمولیت:
    ‏اگست 25، 2014
    پیغامات:
    6,361
    موصول شکریہ جات:
    2,395
    تمغے کے پوائنٹ:
    791

    بالکل صحیح فرمایا آپ نے ،محترم بھائیوں نے محض اندیشہ ہائے دور دراز کو بنیادی دلیل سمجھ لیا۔۔
    اور اگر ایسے ’‘ ممکنہ خدشات ’‘ کو بنیاد بنا کر ۔۔پابندیاں ۔۔ لگانا شروع کریں ۔تو فورم کے مراسلات تو کیا ۔۔عورت کا مسجد جانا ۔۔ناجائز ٹھہرے ۔
    اور حکمِ محبوب ’’ لا تمنعوا اماء اللہ مساجد اللہ ‘‘کہ اللہ کی بندیوں کو اللہ کی مسجدوں میں آنے سے مت روکو۔‘‘ کو منسوخ کہا جائے گا ؟

    اور ایک بات جس پر دوستوں نے شاید توجہ نہیں دی ،،،کہ جب گھر میں گھٹن بڑھتی ہے ،تو لا محالہ ’‘ آزاد ٖفضا ‘‘ میں جانے کا خطرہ زیادہ ہوتا ہے ،
    یعنی جس خطرہ کے پیش نظر ۔۔سختی ۔۔ کا آرڈی ننس لانے کا مطالبہ ہے ۔وہ ’’خطرہ ‘‘ تو ۔سختی ۔کے بعد مزید ہے
    ۔
     
    • متفق متفق x 4
    • زبردست زبردست x 4
    • پسند پسند x 2
    • لسٹ
  9. ‏مارچ 12، 2015 #69
    محمد علی جواد

    محمد علی جواد سینئر رکن
    شمولیت:
    ‏جولائی 18، 2012
    پیغامات:
    1,986
    موصول شکریہ جات:
    1,495
    تمغے کے پوائنٹ:
    304

    متفق
     
  10. ‏مارچ 12، 2015 #70
    محمد علی جواد

    محمد علی جواد سینئر رکن
    شمولیت:
    ‏جولائی 18، 2012
    پیغامات:
    1,986
    موصول شکریہ جات:
    1,495
    تمغے کے پوائنٹ:
    304

    متفق
     
لوڈ کرتے ہوئے...
موضوع کا سٹیٹس:
مزید جوابات پوسٹ نہیں کیے جا سکتے ہیں۔

اس صفحے کو مشتہر کریں