1. آئیے اہم اسلامی کتب کو یونیکوڈ میں انٹرنیٹ پر پیش کرنے کے لئے مل جل کر آن لائن ٹائپنگ کریں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ کے ذریعے آپ روزانہ فقط دس پندرہ منٹ ٹائپنگ کر کے ہزاروں صفحات پر مشتمل اہم ترین کتب کو ٹائپ کرنے میں اہم کردار ادا کرکے صدقہ جاریہ میں شامل ہو سکتے ہیں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ میں شمولیت کے لئے یہاں کلک کریں۔
  2. آئیے! مجلس التحقیق الاسلامی کے زیر اہتمام جاری عظیم الشان دعوتی واصلاحی ویب سائٹس کے ساتھ ماہانہ تعاون کریں اور انٹر نیٹ کے میدان میں اسلام کے عالمگیر پیغام کو عام کرنے میں محدث ٹیم کے دست وبازو بنیں ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔

اہلحدیث کے اصول فقہ

'اصول فقہ' میں موضوعات آغاز کردہ از Hasan, ‏جولائی 14، 2012۔

  1. ‏اگست 25، 2012 #11
    ابوالحسن علوی

    ابوالحسن علوی علمی نگران رکن انتظامیہ
    جگہ:
    لاہور
    شمولیت:
    ‏مارچ 08، 2011
    پیغامات:
    2,524
    موصول شکریہ جات:
    11,483
    تمغے کے پوائنٹ:
    641

    اس دعوی سے تو آپ یہ ثابت کر رہے ہیں کہ اہل حدیث کی ابتداء امام شوکانی رحمہ اللہ کے بعد ہوئی ہے جبکہ یہ سوچ غلط ہے۔ مالکیہ، شوافع، حنابلہ اور اہل الظاہر اہل حدیث ہی کے متفرق مسالک ہیں۔ تفصیل کے لیے یہ لنک دیکھیں:
    http://www.kitabosunnat.com/forum/%D8%AA%D9%82%D8%A7%D8%A8%D9%84-%D9%85%D8%B3%D8%A7%D9%84%DA%A9-145/%D8%A7%DB%81%D9%84-%D8%A7%D9%84%D8%AD%D8%AF%DB%8C%D8%AB-%D8%A7%D9%88%D8%B1-%D8%A7%DB%81%D9%84-%D8%A7%D9%84%D8%B1%D8%A7%D8%A6%DB%92-%D8%A7%DB%8C%DA%A9-%D8%AA%D9%82%D8%A7%D8%A8%D9%84%DB%8C-%D8%AC%D8%A7%D8%A6%D8%B2%DB%81-3142/

    ابتدائی درجات کے لیے شیخ عاصم الحداد کی اصول فقہ پر ایک نظر اور انتہائی درجات کے لیے ڈاکٹر عبد الکریم زیدان کی کتاب الوجیز وفاق کے نصاب میں شامل ہے۔
     
    • شکریہ شکریہ x 8
    • پسند پسند x 2
    • لسٹ
  2. ‏اگست 25، 2012 #12
    Hasan

    Hasan مبتدی
    شمولیت:
    ‏جون 02، 2012
    پیغامات:
    103
    موصول شکریہ جات:
    426
    تمغے کے پوائنٹ:
    0

    ناچیز اتنا علم نہیں رکھتا کہ ان مسائل میں کوئی دعوی کرے- ہاں جتنا پڑھا ہے اس سے وہی کچھ سمجھا ہے جو آپ نے بیان فرمایا- البتہ ذیادہ تر اہلحدیث مالکیہ، شوافع، حنابلہ اور اہل الظاہر کی نسبتیں سنتے ہی تقلید جامد اور فقہ اہل الرائے کا تصور ذہن میں لے آتا ہیں- آپ کا مضمون اس سوچ کا تدارک کرتا ہے-

    میرا مقصود یہ تھا کہ شوکانی اور ہمارے علماء کی طرح وہ اہلحدیث جو مالکیہ، شوافع، حنابلہ اور اہل الظاہر کی طرف منسوب نہیں ان کی کتب کا پتہ چلے- شوکانی سے پہلے ایسے لوگ نسبتا بہت کم گزرے ہیں- اس لیے ان کے بعد کا حوالہ دیا-

    جزاک اللہ خیرا- درمیانے درجات میں کون سی کتابیں شامل کی گئی ہیں ؟
     
    • شکریہ شکریہ x 4
    • پسند پسند x 1
    • لسٹ
  3. ‏اگست 25، 2012 #13
    سرفراز فیضی

    سرفراز فیضی سینئر رکن
    جگہ:
    ممبئی۔
    شمولیت:
    ‏اکتوبر 22، 2011
    پیغامات:
    1,091
    موصول شکریہ جات:
    3,772
    تمغے کے پوائنٹ:
    376

    شیخ زکریا پاکستانی کی کتاب کا نام من اصول الفقہ علیٰ منہج اہل الحدیث ہے.
    اس کے مقدمہ کے بعض حصوں کا ترجمہ فورم پر موجود ہے.

    اس موضوع پر منفرد اور زبردست کتاب ہے.
     
    • شکریہ شکریہ x 5
    • پسند پسند x 1
    • لسٹ
  4. ‏اگست 25، 2012 #14
    ابوالحسن علوی

    ابوالحسن علوی علمی نگران رکن انتظامیہ
    جگہ:
    لاہور
    شمولیت:
    ‏مارچ 08، 2011
    پیغامات:
    2,524
    موصول شکریہ جات:
    11,483
    تمغے کے پوائنٹ:
    641

    ابتدائی درجات کو ثانویہ کہتے ہیں اور یہ چار سال ہیں جبکہ انتہائی درجات کو کلیہ کہتے ہیں اور یہ بھی چار سال ہیں۔ درمیانے درجات کی اصطلاح فی الحال مروج نہیں ہے۔
     
    • شکریہ شکریہ x 5
    • پسند پسند x 1
    • زبردست زبردست x 1
    • لسٹ
  5. ‏اگست 25، 2012 #15
    ھارون عبداللہ

    ھارون عبداللہ رکن
    شمولیت:
    ‏اگست 08، 2012
    پیغامات:
    115
    موصول شکریہ جات:
    514
    تمغے کے پوائنٹ:
    57

    اھلحدیث کے منہج پر ، اصول فقہ کی کتاب " الواضح فی اصول الفقہ" تالیف، سلیمان عبداللہ الاشقر ، جو مشہور عالم دین ، امام شنقیطی کے شاگرد ہیں، بہترین کتاب ہے۔
    اس کتاب کا ایک حوالہ ،شیخ الحدیث حافظ ثناءاللہ مدنی ، نے اپنے فتاوی "ثنائیہ" میں بھی دیا ہے ۔

    اسی طرح مشہور عالم دین ، شیخ ابو زھرہ مصری کی " اصول فقہ" لابی زھرہ ، اھلحدیث منہج پر ، بہترین کتاب ہے ۔

    اگر ان ٢ کتابوں ،کا بھی اچھی طرح مطالعہ کرلیا جاے ، تو اھلحدیث کے اصول سے کافی واقفیت ہوجاتی ہے ۔
     
    • شکریہ شکریہ x 4
    • پسند پسند x 1
    • زبردست زبردست x 1
    • لسٹ
  6. ‏اگست 25، 2012 #16
    Hasan

    Hasan مبتدی
    شمولیت:
    ‏جون 02، 2012
    پیغامات:
    103
    موصول شکریہ جات:
    426
    تمغے کے پوائنٹ:
    0

    میں یہ جاننا چاہتا تھا کہ یہی دو کتابیں اصول الفقہ سے متعلق ہمارے ہاں نصاب میں ہیں یا کوئی اور بھی ہیں ؟
     
  7. ‏اگست 25، 2012 #17
    ابوالحسن علوی

    ابوالحسن علوی علمی نگران رکن انتظامیہ
    جگہ:
    لاہور
    شمولیت:
    ‏مارچ 08، 2011
    پیغامات:
    2,524
    موصول شکریہ جات:
    11,483
    تمغے کے پوائنٹ:
    641

    وفاق کے نصاب میں یہی دو کتب ہیں۔ مزید بعض مدارس اپنے ذوق اور مزاج کے مطابق بھی کچھ اضافی کتب مقرر کر لیتے ہیں جیسا حافظ ثناء اللہ زیدی صاحب کی کتب بعض مدارس میں پڑھائی جاتی ہیں یا اصول الشاشی یعنی حنفی اصول فقہ کی کتاب بھی بعض مدارس میں پڑھائی جاتی ہے۔ کچھ مدارس میں الوجیز کی حنفی شرح جامع الاصول بھی پڑھائی جاتی ہے وغیرہ ذلک۔
     
    • شکریہ شکریہ x 3
    • پسند پسند x 1
    • لسٹ
  8. ‏اگست 26، 2012 #18
    عبدالرحمن لاہوری

    عبدالرحمن لاہوری رکن
    جگہ:
    لاهور
    شمولیت:
    ‏جولائی 06، 2011
    پیغامات:
    126
    موصول شکریہ جات:
    456
    تمغے کے پوائنٹ:
    81

    بیشک اھل الحدیث کا مسلک بہت قدیم ہے اور ہم جانتے ہیں کہ ائمہ کرام مالک، شافعی اور احمد بن حنبل رحمھم اللہ کا تعلق اسی مسلک سے ہے اور اسی طرح ان کے بیشتر تلامذہ محدثین و فقھاء بھی اھل الحدیث کے مذھب ہی سے منسلک ہیں۔ اپنے آپ کو مالکیہ، شافعیہ یا حنابلہ وغیرہ سے منسوب کرنے میں نہ تو کوئی قباحت ہے اور نہ ہی اس سے کسی قسم کی کوئی تقلید یا تعصب لازم آتی ہے۔ تاریخ اسلامی گواہ ہے کہ امت کے کبار فقھاء و محدثین کا کسی نہ کسی فقھی مذھب کی طرف میلان اور رجحان رہا ہے (جیسے امام ابن حجر اور امام نووی دونوں شافعیہ کے کبار فقھاء میں سے ہیں) لیکن وہ مقلد نہ تھے بلکہ مجتھدین میں سے تھے اور کئی مقامات پر دلیل کی بنا پر اپنے مذھب کے خلاف فتوی دیتے تھے۔ لحاظہ فقھی مذاھب کا نام سنتے ہی تقلید کا تصور ذہن میں لانا کم علمی کا ثبوت ہے اس لئے ہمیں عوام کی رہنمائی کرنی چاہیے۔

    امام شوکانی رحمہ اللہ کے بعد اصول فقہ پر پیشتر کتب لکھی گئی ہیں اور ماشاء اللہ ساتھیوں نے چند کے نام یہاں لکھے بھی ہیں۔

    نصاب میں تو الوجیز اور اصول شاشی (حنفی) ہی شامل ہے لیکن علمی اعتبار سے اس سے بہت عمدہ کتب موجود ہیں۔ مجھے تو ذاتی طور پر امام جوینی کی الورقات فی اصول الفقہ، امام ابن قدامہ کی روضة الناظر وجنة المناظر اور امام شوکانی کی ارشاد الفحول پڑھ کر بہت نفع ہوا ہے اگرچہ میں نے ابھی تک تمام ابواب نہیں پڑھے۔ اگر آپ علم اصول فقہ میں دلچسپی رکھتے ہیں اور ساتھ میں عربی بھی سمجھ لیتے ہیں تو میں آپ کو یہ مشورہ دوں گا کہ ان کتب میں سے الورقات کی عمدہ سی شرح ڈاونلوڈ کرلیں اور اسکی قرات یا سماعت شروع کرلیں۔ یقین جانئیے مدرسے سے کہیں زیادہ نفع مجھے اس کتاب کی شرح پڑھنے سے ہوا ہے۔ اللہ عزوجل قبول فرمائے۔
     
    • شکریہ شکریہ x 5
    • پسند پسند x 1
    • زبردست زبردست x 1
    • لسٹ
  9. ‏اگست 26، 2012 #19
    عبدالرحمن لاہوری

    عبدالرحمن لاہوری رکن
    جگہ:
    لاهور
    شمولیت:
    ‏جولائی 06، 2011
    پیغامات:
    126
    موصول شکریہ جات:
    456
    تمغے کے پوائنٹ:
    81

    • شکریہ شکریہ x 4
    • پسند پسند x 1
    • لسٹ
  10. ‏اگست 27، 2012 #20
    ندوی

    ندوی رکن
    شمولیت:
    ‏نومبر 20، 2011
    پیغامات:
    152
    موصول شکریہ جات:
    328
    تمغے کے پوائنٹ:
    57

    مالکیہ شافعیہ اورحنابلہ کواگراہل حدیث میں شمار کرتے ہیں تو وہ تو تقلید کے جواز کے قائل ہیں صرف ظاہریوں کا فرقہ اس سے مستثنی ہیں توکیاہم مانیں کہ اہل حدیث کا بیشتر حصہ تقلید کے جواز کا قائل ہے اورایک شرذمہ قلیلہ اس کا انکار کررہاہے؟
     
لوڈ کرتے ہوئے...

اس صفحے کو مشتہر کریں