1. آئیے اہم اسلامی کتب کو یونیکوڈ میں انٹرنیٹ پر پیش کرنے کے لئے مل جل کر آن لائن ٹائپنگ کریں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ کے ذریعے آپ روزانہ فقط دس پندرہ منٹ ٹائپنگ کر کے ہزاروں صفحات پر مشتمل اہم ترین کتب کو ٹائپ کرنے میں اہم کردار ادا کرکے صدقہ جاریہ میں شامل ہو سکتے ہیں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ میں شمولیت کے لئے یہاں کلک کریں۔
  2. آئیے! مجلس التحقیق الاسلامی کے زیر اہتمام جاری عظیم الشان دعوتی واصلاحی ویب سائٹس کے ساتھ ماہانہ تعاون کریں اور انٹر نیٹ کے میدان میں اسلام کے عالمگیر پیغام کو عام کرنے میں محدث ٹیم کے دست وبازو بنیں ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔

ایک سوال سب مقلدین سے ؟ سوچئے گا ضرور

'تقابل مسالک' میں موضوعات آغاز کردہ از محمد عامر یونس, ‏مارچ 15، 2014۔

  1. ‏جنوری 29، 2016 #51
    محمدارسلان سلفی

    محمدارسلان سلفی رکن
    شمولیت:
    ‏جنوری 16، 2012
    پیغامات:
    60
    موصول شکریہ جات:
    163
    تمغے کے پوائنٹ:
    49

    پگڑی کا ذکر کیا ہے کپڑے کا نہیں۔۔۔
    پگڑی ہرے ربگ کی لازم کروں گے تو پھر یہی سے تو فرقے بنیں گے ہری پگڑی والے علیحدہ بن گئے الگ نام ہوگیا ہری پگڑی اب دوسرا دیکھا دیکھی سفید پھر کالی پہنے گا۔اب جو شخص کسی رنگ کی پگڑی نہ پہنے کسی سے اپنی نسبت نہ دے اُس پر الزام دے دو کہ وہ فرقہ ہے واہ جی واہ
    ماشاء اللہ سے آپ کے علم کو سب مان گئے کیا شاندار دلیل دیتے ہیں کہ مسجدوں اور مدرسوں کا نام رکھنے سے فرقہ واریت اور نسبت پیدا ہورہی ہے۔بس کچھ تو لکھنا ہے عالم جو ہوئے۔آٹھ سال جو لگائے ہیں۔مسجدوں یا مدرسوں کا نام رکھنے سے فرقے پیدا ہو رہے ہیں یہ ایک عام دین کے علم سے ناواقف شخص بھی کبھی نہیں کہہ سکتا۔۔۔اس کا جواب آپ کو خود بھی آتا ہے۔
    ہمت کرو جواب دے دو ابوحنیفہ نے کب کہا تھا کہ میرے مقلد بنو۔
    صحابہ مقلد تھے واہ جی واہ آپ یہ ثابت کریں کے صحابہ نبی کی تقلید کرتے تھے یا اطاعت کرتے تھے۔جب کوئی مقلد نہ ہوا تو وہ غیر مقلد ہی ہوتا ہے اسلیے آپ ثابت کریں کے صحابہ مقلد تھے
     
  2. ‏فروری 01، 2016 #52
    محمدارسلان سلفی

    محمدارسلان سلفی رکن
    شمولیت:
    ‏جنوری 16، 2012
    پیغامات:
    60
    موصول شکریہ جات:
    163
    تمغے کے پوائنٹ:
    49

    اب ذرا رحمانی صاحب کی بات دیکھیں کہتے ہیں مقلد مقلد بھائی بھائی۔ یہ جو 600سال خانہ کعبہ میں چار مُسلے بِچھتے رہے وہی ثبوت ہے بھائی بھائی ہونے کا کہ خانہ کعبہ میں بھی چار مُسَلے بِچھائے جارہے ہیں۔ایک دوسرے کے پیچھے نماز نہیں پڑھ رہے اپنے اپنے فقہ والے امام کے پیچھے نماز ہورہی ہے۔اتنی برداشت نہیں ہے بھائیوں میں۔بھائیوں کا پیار تو دیکھو۔
     
  3. ‏فروری 04، 2016 #53
    رحمانی

    رحمانی رکن
    شمولیت:
    ‏اکتوبر 13، 2015
    پیغامات:
    382
    موصول شکریہ جات:
    102
    تمغے کے پوائنٹ:
    77

    بقیہ باتیں تو آپ کی پادر ہوااوربے بنیاد ہیں، صرف اس تحریر کا جواب دے رہاہوں۔
    اولاًتو مصلی لکھناچاہئے ص کے ساتھ ،س کے ساتھ جوآپ نے لکھاہے وہ مسلے ہوجاتے ہیں جو ہندوتحقیرامسلمانوں کو کہتے ہیں۔قران وحدیث کی پیروی کے خودساختہ ٹھیکیدار اوردعویدار کو کفار سےلفظی مشابہت میں بھی بچناچاہئے اور لاتقولواراعناکے حکم کو پیش نظررکھناچاہئے۔

    ایسامعلوم ہوتاہے کہ تاریخ اسلام کا مطالعہ نہایت کمزور ہے۔
    یہ بات معلوم کرنی چاہئے کہ یہ چارمصلیٰ کیاعلماء کی فرمائش پر حکومت نے نافذ کیاتھایااپنی صوابدید سے نافذ کیاتھا اور جوچلاآرہاتھا،600سال سے خانہ کعبہ میں چار مصلیٰ قائم رہا، کس اہل حدیث نے اس کو بند کرنے کی حکومت سے گذارش کی،اس کی اطلاع مجھے دے دیجئے گا،کیونکہ اگریہ ایک انتہائی براکام تھاتواس کو روکناکیااہل حدیث حضرات کی ذمہ داری تھی یانہیں تھی؟اگرتھی توانہوں نے کس حد تک پوری کی اور اگر نہیں کی تو کیاوہ بھی دیگر افراد کے ساتھ اس جرم میں برابر کے شریک نہیں ہیں۔؟

    خانہ کعبہ میں چارمصلی پر اعتراض کرنے بھول جاتے ہیں کہ ایک محلہ میں مسجد ہونے کے باوجود نماز نہیں پڑھتے، مختلف حیلوں بہانوں سے الگ مسجد بناتے ہیں،اس کی قباحت پر کبھی غورکیاہے، جب کہ وہاں اس مسجد کی حقیقت میں کوئی ضرورت نہیں ہوتی،سوائے روپے کے ضیاع کے اور اپنے مسلک کے ایک مسجد ہونے کی خواہش کی تکمیل کے۔

    حقیقت یہ ہے کہ خانہ کعبہ کا امام ہوناکسی بھی شخص اورگروہ کیلئے بڑی عزت کی بات ہے،اورہرشخص اورہرگروہ اورجماعت یہ شرف حاصل کرناچاہتی ہے،اسی نزاع کے خاتمہ کیلئے چاروں مسلک کے ائمہ کی تقرری عمل میں لائی گئی ہوگی،اوریہ فطری بات ہے کہ ہرشخص اپنے مسلک اورگروہ کو زیادہ پسند کرتاہے ،نماز اپنے مسلک سے وابستہ عالم کے پیچھے اداکرناچاہتاہے، غیرمقلدین بھی اس فطری جذبہ سے بری نہیں ہیں، اگرکسی مسجد میں ایک مقلد کی مسجد ہو اورایک غیرمقلد کی تو اس کارجحان اپنے مسلک سے وابستہ مسجد کی طرف ہوتاہے اوریہ ایک فطری جذبہ ہے۔

    شرف وعزت کے حصول میں بھائیوں کے درمیان مسابقت بھی ہوتی رہتی ہے، آپس میں کھٹ پٹ بھی ہوجاتی ہے اورکبھی چپقلش ورنجش بھی پیداہوجاتی ہے،لیکن کیااس سے بھائی چارگی ختم ہوجاتی ہے؟

    دوسری بات یہ ہے کہ اگرغیرمقلد غیرمقلد بھائی ہوتے ہیں تومقلد مقلد بھائی کیوں نہیں ہوں گے؟ہاں بعض امور میں آپس میں اختلاف ہوسکتاہے اورہوناچاہئے،کیونکہ فطرت انسانی ہی ایسی ہے۔
     
  4. ‏فروری 04، 2016 #54
    محمد عامر یونس

    محمد عامر یونس خاص رکن
    جگہ:
    karachi
    شمولیت:
    ‏اگست 11، 2013
    پیغامات:
    16,968
    موصول شکریہ جات:
    6,506
    تمغے کے پوائنٹ:
    1,069

    بھائی کیا کہے گے آپ اس بارے میں

    دیوبند حیاتی کی نماز دیوبند مماتی کے پیچھے نہیں ہوتی، الیاس گھمن


     
  5. ‏فروری 04، 2016 #55
    محمد عامر یونس

    محمد عامر یونس خاص رکن
    جگہ:
    karachi
    شمولیت:
    ‏اگست 11، 2013
    پیغامات:
    16,968
    موصول شکریہ جات:
    6,506
    تمغے کے پوائنٹ:
    1,069

    حیاتی دیوبندی نے مماتی دیوبندی کو اہل سنت و جماعت سے خارج کر دیا
    [​IMG]
     
  6. ‏فروری 04، 2016 #56
    محمدارسلان سلفی

    محمدارسلان سلفی رکن
    شمولیت:
    ‏جنوری 16، 2012
    پیغامات:
    60
    موصول شکریہ جات:
    163
    تمغے کے پوائنٹ:
    49

    چار مصلے اللہ کے فضل و کرم سے اہلحدیث نے ہی ہٹائے ہیں ورنہ مقلدین تو اختلاف رحمت ہے کی رٹ لگائے ہوئے اپنے اپنے مسلک کے پیچھے کعبہ میں بھی نماز پڑھ رہے ہیں۔
    آج اہلحدیث نے کسی بھی مسلک سے نہ تعلق ہونے پر ان بھائیوں کو ایک کردیا سب اہلحدیث کے پیچھے نماز پڑھتے ہیں اگر یہاں کوئی مسلکی کھڑا ہوجائے تو پھر وہی مسئلہ شروع ہوجائے گا۔
    آپ چالاکی کرتے ہوئے بات کو الجھا کر آگے پیچھے مت کریں میرا مقصد صرف اتنا بتانا تھا کہ بھائیوں میں پیار کتنا ہے کہ خانہ کعبہ میں جا کر تو اپنے اختلاف کو بھول جانا بھی گوارہ نہیں ہے جہاں جانے سے پہلے دشمن بھی ایک دوسرے سے معافی مانگ کر جاتے ہیں۔
    بھائیوں کے پیار کی مثالیں ہزاروں دی جاسکتی ہیں۔لیکن بھائی بھائی کا موضوع یہاں ہے ہی نہیں۔
     
لوڈ کرتے ہوئے...

اس صفحے کو مشتہر کریں