1. آئیے اہم اسلامی کتب کو یونیکوڈ میں انٹرنیٹ پر پیش کرنے کے لئے مل جل کر آن لائن ٹائپنگ کریں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ کے ذریعے آپ روزانہ فقط دس پندرہ منٹ ٹائپنگ کر کے ہزاروں صفحات پر مشتمل اہم ترین کتب کو ٹائپ کرنے میں اہم کردار ادا کرکے صدقہ جاریہ میں شامل ہو سکتے ہیں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ میں شمولیت کے لئے یہاں کلک کریں۔
  2. آئیے! مجلس التحقیق الاسلامی کے زیر اہتمام جاری عظیم الشان دعوتی واصلاحی ویب سائٹس کے ساتھ ماہانہ تعاون کریں اور انٹر نیٹ کے میدان میں اسلام کے عالمگیر پیغام کو عام کرنے میں محدث ٹیم کے دست وبازو بنیں ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔

تصوف کیا ہے

'صوفی' میں موضوعات آغاز کردہ از Aqeel Qureshi, ‏اکتوبر 29، 2011۔

  1. ‏جون 05، 2013 #51
    ارشد

    ارشد رکن
    شمولیت:
    ‏دسمبر 20، 2011
    پیغامات:
    44
    موصول شکریہ جات:
    150
    تمغے کے پوائنٹ:
    66

    جزاک اللہ۔

    شاکر بھای آپ نے تو اقیل صحاب کی ابتک کی ساری چالاکی اور فضول زد، بلا دلیل بحث کو بہترین انداز میں اجاگر کیا۔
    حقیقت میں اقیل صحاب منہج اور فکر اہلحدیث سے نہ واقف لگتے ہیں۔ورنہ علما اہلحدیث کی آڈ میں تصوف کو بلادلیل قران و سنت ثابت کرنے کی ناکام کوشش نہیں کرتے۔ اہلحدیث شخصیت پرست، آکابر پرست، علما پرست نہیں ہوتا۔
    تصوف کے موزوں پر اقیل صحاب کی تمام پوسٹ جن میں جناب سارے سوال ہزم کرجاتے ہیں اور انتظامیہ پر تنقیداورعلما اہلحدیث کی چندباتوں (جو کے حجت نہیں قران و صحیح حدیث کے مقابلے میں)کا سہارا لیتے ہیں، یہ سب پڑھ کر ہی تصوف اور اہل تصوف کی بے بسی کا اندازا ہوتا ہے۔اورتصوف کا اسلام سے غیر تعلٖق ہونا شدت سے ثابت ہوتا ہے۔
    ناراض نہ ہو اقیل بھای، ھماری اس تریڈ میں گفتگو نہیں ہورہی تھی، پھر بھی میں یہاں کچھ لکھ رہا ہو۔
     
    • متفق متفق x 3
    • شکریہ شکریہ x 1
    • لسٹ
  2. ‏جون 05، 2013 #52
    بابر تنویر

    بابر تنویر مشہور رکن
    جگہ:
    الریاض ، سعودی عرب
    شمولیت:
    ‏اکتوبر 02، 2011
    پیغامات:
    223
    موصول شکریہ جات:
    684
    تمغے کے پوائنٹ:
    104


    جناب عقیل صاحب مخل ہونے پر معافی چاہتا ہوں۔ آپ تصوف پر گفتگو کرنا چاہ رہے تھے۔ مگر یہاں پر آپ کی گفتگو پڑھ کر آپ کی دلائل کے معاملے میں یتیمی کا اندازہ ہوگیا۔ کیا عجیب منطق ہے آپ کی کہ جب عملی تصوف میں داخل ہوں گے تو اس تصوف کی حقیقت معلوم ہوگی۔ یہ تو اسی طرح ہے کہ دریا میں ڈوبیں تب ہی اس کی گہرائ کا اندازہ ہوگا۔ بہر حال نہ تو آپ نے ابن عربی کے وحدت ادیان کے بارے مین کچھ فرمایا اور نہ ہی بایزید بسطامی کے تزکیہ نفس پر کوئ اظہار خیال کیا۔ بہر حال اپنی گفتگو جاری رکھیۓ۔
     
    • زبردست زبردست x 3
    • شکریہ شکریہ x 1
    • لسٹ
  3. ‏جون 05، 2013 #53
    aqeel

    aqeel مشہور رکن
    جگہ:
    راولپنڈی
    شمولیت:
    ‏فروری 06، 2013
    پیغامات:
    299
    موصول شکریہ جات:
    307
    تمغے کے پوائنٹ:
    119

    بابر تبویر صاحب آپ کے اعتراض دیکھ کر خوب اندازہ ہو رہا ہے کہ آپ کی تصوف پر لاجواب تحقیق ہے ،اور ایسے محققین کو جواب دینا بہت مشکل کام ہے۔ یہاں پر بڑے محقق ہیں ایک محقق صاحب لکھتے ہیں
    ایک اور محقق فرماتےہیں
    اور اسی طرح کے محقق نہ جانے کیا کیا اعتراضات کے قلعے تعمیر کرتے رہتے ہیں،اسلئے میرے بھائی ایسے جائل کو سمجھانا جو ہو تو جائل مگر اپنے آپ کو محقق سمجھے،سمجھانا بہت مشکل ہے۔
    آپ فرما رہے کہ میں دلائل دوں اور ادھر مجھ پر پابندی ہے،اور اگر لکھوں تو تھریڈ ڈیلیٹ کیوں؟

    فی الحال مولانا میرٌ کی سراجآ منیرا کو میری طرف تصوف وطریقت پر دلیل سمجھے اور اگر آپ کو کوئی اعتراض ہے تو پیش کیجئے۔
    میری آپ کو یہ دعوت ہے کہ اس فورم پر اس موضوع پر کام کرنا مشکل کام ہے ،کوئی اور فورم آپ منتحب کریں یا پھر تھریڈ ڈیلیٹ نہ ہونے کی گارنٹی آپ دے ،یا پھر نئے فورم پر اور تھریڈ ڈیلیٹ نہ ہونے کی گارنٹی میں دوں گا اور تصوف کے تمام اختلافی پہلو پر سیر حاصل گفتگو ہو گی ۔یہ تو کوئی طریقہ نہیں ہے کہ تصوف پر تھریڈ نہیں بنا سکتے ،جبکہ کے دوسری طرف دیوبند ،بریلوی،اور فقہ حنفی پر جتنے مرضی تھریڈ بنا لے کوئی اعتراض نہیں۔
    مزید شاکر صاحب کے جواب میں ۔۔۔۔۔
     
  4. ‏جون 05، 2013 #54
    بابر تنویر

    بابر تنویر مشہور رکن
    جگہ:
    الریاض ، سعودی عرب
    شمولیت:
    ‏اکتوبر 02، 2011
    پیغامات:
    223
    موصول شکریہ جات:
    684
    تمغے کے پوائنٹ:
    104

    جی جناب عقیل صاحب آپ کا جواب دیکھ کر مجھے آپ کی قابلیت کا اندازہ ہو رہا ہے۔
    میں نے آپ سے دریافت کیا تھا۔
    کیا داڑھی منڈانا تزکیہ نفس کا طریقہ ہے؟ اور داڑھی منڈا کر کشکول گلے میں ڈال کر اس میں بادام رکھ کر ہر گھونسا مارنے والے کو ایک بادام تحفتا عطا کرنا کہاں کا تزکیہ نفس ہے؟
    اور آج مجھے یہ کہنے دیجیے کہ یہ آپ کے گلے کی ہڈی جسے آپ نہ تو اگل سکتے ہیں اور نہ ہی نگل۔
    نہ تو آپ اس طریقے کا کوئ تعلق اسلام سے ثابت کرسکتے ہیں اور نہ ایسا حکم دینے والے کی مذمت کر سکتے ہیں۔
     
  5. ‏جون 05، 2013 #55
    aqeel

    aqeel مشہور رکن
    جگہ:
    راولپنڈی
    شمولیت:
    ‏فروری 06، 2013
    پیغامات:
    299
    موصول شکریہ جات:
    307
    تمغے کے پوائنٹ:
    119

    محترم گذشتہ تھریڈ میں کچھ باتیں آپ سے کہی ہیں ،آپ اپنے تمام اعترضات ایک ایک کر کے پیش کرتے جائیں،کوشش کریں کے جزوی اختلاف کے بجائے اصل پر بحث کی جائے۔،اور تصوف دوٹوک موقف لے کر سامنے آئے کہ آیا آپ مطلق تصوف کو نہیں مانتے ،یا جزوی اختلاف ہے ،اور تھریڈ کوئی اور قائم کریں۔اور تھریڈ ڈیلیٹ نہ ہونے کی گارنٹی بھی ہو گئی۔
    بسم اللہ کی جئے دیکھتے ہڈی کس کے گلے میں منکرین تصوف کے یا مدعی کے۔
     
  6. ‏جون 05، 2013 #56
    بابر تنویر

    بابر تنویر مشہور رکن
    جگہ:
    الریاض ، سعودی عرب
    شمولیت:
    ‏اکتوبر 02، 2011
    پیغامات:
    223
    موصول شکریہ جات:
    684
    تمغے کے پوائنٹ:
    104

    بھائ عقیل صاحب صوفیاء کے عقائد کے حوالے سے بسم اللہ تو میں کرچکا۔ پہلے میرے مندرجہ بالا سوال کا جواب تو دے دیجیۓ۔ اور مجھ سے گفتگو کرنی ہے تو مشہور صوفیاء کے عقائد کے حوالے سے کیجیۓ۔ آپ مجھے بتائے کہ جو صوفی یہ فرماۓ کہ کوہ قاف کو کسی بیل نے سینگ پر اٹھا رکھا ہے۔ اسے آپ تصوف کے کس درجے میں رکھیں گے۔ اور ہاں آپ تاریخ کے بڑے بڑے اور مشہور صوفیاء کے نام گنوا دیجیۓ اور یہ بتا دیجیۓ کہ ان میں اہلحدیث کتنے تھے ؟ اگر کسی اہل حدیث بھائ کس اس بارے میں کوئ معلومات ہوں تو وہ بھی رہنمائ فرما دے۔
     
  7. ‏جون 06، 2013 #57
    ارشد

    ارشد رکن
    شمولیت:
    ‏دسمبر 20، 2011
    پیغامات:
    44
    موصول شکریہ جات:
    150
    تمغے کے پوائنٹ:
    66

    میں معذرت کہ ساتھ ہی کود پڑا تھا، کیونکہ شاکر بھای نے آپ کے شخصیت کو بہت عمدہ اور صحیح لفظوں میں بیان کیا تھا۔پتہ نہیں آپ کو تصوف قران و صحیح حدیث سے ثابت کرنے میں کیا آڈ اور مشکل پیش آتی ہے، اور منھج و فکر اہلحدیث آپ کے تصوف زدہ دماغ میں گھستا کیوں نہیں۔۔۔۔
     
  8. ‏جون 06، 2013 #58
    تلمیذ

    تلمیذ مشہور رکن
    جگہ:
    کراچی
    شمولیت:
    ‏ستمبر 12، 2011
    پیغامات:
    765
    موصول شکریہ جات:
    1,503
    تمغے کے پوائنٹ:
    191

    میری صوفیت کے بارے میں علم بہت کم ہے اس لئیے میں اس بحث میں پڑنے سے گریز کروں گا ۔ بس مختصرا کچھ عرض کرنا چاہوں گآ
    صوفیت کے حوالہ سے یہاں کچھ بے معنی اعتراضات سامنے آرہے ہیں ۔
    مثلا قطب ، ابدال کی حیثیت قرآن و حدیث سے ثابت کرو ۔ ابھی ایک تھریڈ میں کفایت اللہ صاحب نے امام بخاری کے متعلق کہا تھا کہ امام بخاری سمیت دوسرے ناقدین کو یہ اتھارٹی حاصل ہے اگر وہ دو راویوں کے سماع یا عدم سماع کی بات کریں تو دلیل نہیں مانگی جائے گي بلکہ امام بخاری اور دیگر ناقدین کا قول ہی حجت ہے
    اگر اب یہ سوال کیا جائے کہ امام بخاری کی اس اتھارٹی کو قرآن و حدیث سے ثابت کرو یا ديگر ناقدین کی اتھارٹی کو قرآن و حدیث سے ثابت کرو تو آپ بھی کہیں گے یہ سوال عبث ہے۔ اسی طرح قطب ابدال کی حیثیت کو قرآن و حدیث سے ثابت کرنے کے متعلق قرآن و حدیث سے ثابت کرنے کا سوال عبث ہے
    اسی طرح اگر کوئی کسی ناقد کی اتھارٹی کو تسلیم نہیں کرتا تو ہم اس کو اسلام سے خارج نہیں کرسکتے تو اگر کوئی کس قطب یا ابدال کی حیثیت کو نہیں تسلیم کرتا تو اس پر کوئی الزام تو نہیں آئے گا لیکن جو ان سے عقیدت رکھ رہا ہے اس پر بھی کوئي اعتراض نہیں آنا چاہئیے
    جو اعمال یا اوراد صوفیا اصلاح نفس کے لئیے بتاتے ہیں ان کی حیثیت انتظامی امر کی سے ہے اور اصل اصلاح نفس ہے جو اصل مقصود ہے ۔جیسے اصل حکم علم حاصل کرنا ہے لیکن مدارس کا مختلف مضامین کے لئیے پیریڈ مختص کرنا اور امتحانات لینا اور اس پر ڈگری عطا کرنا انتظامی امور میں سے ہے اگر کوئی اس ڈگری کی حیثیت قرآن و حدیث سے ثابت کرنے کا کہے تو ہم اس کی عقل پر صرف ماتم کرنے کے اور کچھ نہیں کرسکتے ، کیوں ڈگری دینا اور عہدہ دینا کہ مثلا فلاں نے عالم کا کورس کر لیا ہے یا فلآن نے مفتی کا کورس کرلیا ہے یہ صرف انتظامی امور کے لخاظ سے ہے ۔ اصل حکم علم حاصل کرنا ہے جو قرآن و حديث سے ثابت ہے۔ اب اگر کوئی کہے مفتی یا عالم کا عہدہ کی حیثیت قرآن و حدیث سے بتائو تو ہم اس کو صرف وإذا خاطبهم الجاهلون قالوا سلاما کے مصداق صرف سلام ہی کریں گے
    صوفیا کرام میں بھی قطب ، ابدال کی حیثیت میرے نذیک ایسی ہی جیسے عالم یا مفتی کا عھدہ
    جہاں تک بعض جاہل صوفیاء کا دین میں غلو یا دین سے دوری کا تعلق ہے تو ایسی جہالت دین کے دوسرے شعبہ جات میں میں بھی ہے تو اس کا یہ مطلب نکالنا کہ دین کا پورا شعبہ ہی جہالت ہے تو ہم ایسے کہنے والے کے سامنے صرف اپنا سر ہی پیٹ سکتے ہیں۔ جیسے آج کل بعض خوارج نے جہاد کے نام پر دہشت گردی پھیلا رکھی ہے تو کیا پورا جھاد کی غلط ہو گيا مَا لَكُمْ كَيْفَ تَحْكُمُونَ
    عقیل صاحب
    میری تصوف کے متعلق معلومات بہت کم ہیں لیکن آپ کے مضامین پڑھ کر مجھے واقعی میں تصوف کی متعلق تفصیل سے جاننے کا شوق بڑھا ہے ۔ کیا آپ مجھے تصوف کے حوالہ سے کچھ کتب کی طرف راہنمائی کرسکتے ہیں خصوصا اہل حدیث علماء کی کتب
    جزاک اللہ خیرا
     
  9. ‏جون 06، 2013 #59
    محمد علی جواد

    محمد علی جواد سینئر رکن
    شمولیت:
    ‏جولائی 18، 2012
    پیغامات:
    1,986
    موصول شکریہ جات:
    1,495
    تمغے کے پوائنٹ:
    304

    بھیا- اگر اس انتظامی امر کو جو اصلاح نفس کے لئے اختیار کیا جاتا ہے "دین" قرار دے دیا جائے تو پھر آپ اس بارے میں کیا کہیں گے؟؟؟ - کیوں کہ جہاں بھی تصوف کی بات ہوتی ہے تو اس کو "دین تصوف " که کر بیان کیا جاتا ہے - اس کا مطلب ہے کہ دین اسلام کے متوازی آپ ایک اور دین (تصوف ) لوگوں کے سامنے پیش کر رہے ہیں -
     
    • شکریہ شکریہ x 2
    • زبردست زبردست x 1
    • لسٹ
  10. ‏جون 06، 2013 #60
    aqeel

    aqeel مشہور رکن
    جگہ:
    راولپنڈی
    شمولیت:
    ‏فروری 06، 2013
    پیغامات:
    299
    موصول شکریہ جات:
    307
    تمغے کے پوائنٹ:
    119

    بابر تنویر !بھائی اب آپ ہی بتائیں اس پوسٹ کے جواب میں میں نے صبح ہی ایک پوسٹ کی تھی،مگر افسوس کہ پانچ گھنٹے نہیں گزرے اور وہ ڈیلیٹ ہو چکی ہے،اب آپ ہی بتائیں کیا ان حالات کوئی بات کی جا سکتی ہے۔
     
لوڈ کرتے ہوئے...

اس صفحے کو مشتہر کریں