1. آئیے اہم اسلامی کتب کو یونیکوڈ میں انٹرنیٹ پر پیش کرنے کے لئے مل جل کر آن لائن ٹائپنگ کریں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ کے ذریعے آپ روزانہ فقط دس پندرہ منٹ ٹائپنگ کر کے ہزاروں صفحات پر مشتمل اہم ترین کتب کو ٹائپ کرنے میں اہم کردار ادا کرکے صدقہ جاریہ میں شامل ہو سکتے ہیں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ میں شمولیت کے لئے یہاں کلک کریں۔
  2. آئیے! مجلس التحقیق الاسلامی کے زیر اہتمام جاری عظیم الشان دعوتی واصلاحی ویب سائٹس کے ساتھ ماہانہ تعاون کریں اور انٹر نیٹ کے میدان میں اسلام کے عالمگیر پیغام کو عام کرنے میں محدث ٹیم کے دست وبازو بنیں ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔

جگنو شاہ

'مجذوب' میں موضوعات آغاز کردہ از aqeel, ‏مارچ 10، 2013۔

  1. ‏مارچ 13، 2013 #11
    aqeel

    aqeel مشہور رکن
    جگہ:
    راولپنڈی
    شمولیت:
    ‏فروری 06، 2013
    پیغامات:
    299
    موصول شکریہ جات:
    307
    تمغے کے پوائنٹ:
    119

    الحمد اللہ ہمارے ہاں اور ہمارے اکابرین اہلحدیث کے ہاں کوئی تصوف اسلامی اور شریعت میں کوئی تضاد نہیں،اور جن لوگوں کو اللہ نے دین کے صیح فہم سے نوازا ہے وہ فرماتے ہیں:۔
    دوسرا آپ نے فرمایا:۔
    بھائی اسطرح کے واقعات معاشرہ میں پیش آتے ہیں اب انکی حقیقت کیا ہے کہ ایک مجذوب رہنمائی کرے کہ شیخ الکلٌ سے علم حدیث سیکھو ،اس پر غور تو کرنا پڑے گا۔
    یہ واقعہ مختلف کتابوں میں مل جائے گا ،اس واقعہ کے راوی مولانا غلام رسول ٌ کے فرزند گرامی مولانا عبد القادر صاحب ٌ خود ہیں ،اور بھی واقعات ہیں جو پھر کبھی لکیھیں گے ،فی الحال خود کو شیخ االکل س،مفسر ومحدث ،ا ور اپنی رائے کو حرف آخر سمجنبے والے مادر پدر آزاد ،سلف و حلف کو علم تصوف وسلوک کو مطلق جاہل سمجھنے والے،ذرا بتائے کہ ان واقعات کی حقیقت کیا ہے؟
    بھائی جو جھوٹ بھولے گا وہ رسوا ہوگا ،ہمیں یقین ہے کہ ہمارے اکابرین اہلحدیث سچے ہیں اور یہ واقعہ بھی سچا ہے ، اور انکے کشف وکرامات کے واقعات سچے ہیں۔اور ہمارے اکابرین چونکہ اولیا ء اللہ کی ضماعت سے تعلق رکھتے تھے اسلئے انکو کشف بھی ہوتا تھا اور الہام بھی۔
    آپ نے جو ابتسامہ لکھا ہے وہ ابستامہ نہین بلکہ حقیت بھی ہے۔
    یہاں اکثر منکرین تصوف کشف الہام کے خلاف بڑا لکھتے ہیں
    اور آپ نے بھی فرمایا ہے
    میں یہ بات کہتا ہوں کشف و الہام من اللہ اللہ کا انعام ہے اور صرف صرف اللہ کے بندوں کوہوتا ہے،اس سے رہنمائی من جانب اللہ ملتی ہے،اگر کوئی منکرین تصوف میری اس بات سے اختلاف رکھتا ہے تو قرآن و حدیث اس پر دلائل دے۔ان شاء اللہ میں کشف و الہام کو اللہ کا انعام ثابت کرونگا ۔اور یہ بھی ثابت کروں گا کہ انعام یافتہ گرو کو نصیب ہوتا ہے۔
    اندھیری شب ہےجدا اپنےکافلے سے تو
    تیرے لئے ہے میری شعلہ نوا قندیل
    ( بس تھریڈ ڈیلیٹ نہ کرنے کی گرنٹی دینا لازمی ہے)
     
  2. ‏مارچ 14، 2013 #12
    ذکی الرحمان

    ذکی الرحمان مبتدی
    شمولیت:
    ‏فروری 26، 2013
    پیغامات:
    55
    موصول شکریہ جات:
    100
    تمغے کے پوائنٹ:
    0

    بھائی کوئی ان تمام "شاہوں" کا تعارف کروا سکتا ہے کہ یہ شاہ اور ان کی قبریں کہاں پائی جاتی ہیں کیونکہ تصوف کے خلاف ایک مضمون کیلئے مجھے یہ معلومات درکار ہیں
    جزاک اللہ خیرا
     
  3. ‏مارچ 14، 2013 #13
    خضر حیات

    خضر حیات علمی نگران رکن انتظامیہ
    جگہ:
    طابہ
    شمولیت:
    ‏اپریل 14، 2011
    پیغامات:
    8,763
    موصول شکریہ جات:
    8,333
    تمغے کے پوائنٹ:
    964

    علامہ ابن تیمیہ رحمہ اللہ کے بارےمیں کہا جاتا ہے کہ انہوں نے علم المنطق کے بارے میں کہا تھا :
    لایحتاج إلیہ الذکی ، ولم یستفد منہ الغبی
    ذہین آدمی کو اس کی ضرورت نہیں جبکہ کندذہن اس کو سمجھ ہی نہیں سکتا ۔

    اسی سے ملتی جلتی بات آپ کے طریقت و شریعت والے فلسفے کے بارے میں کہی جا سکتی ہے کہ :
    دیندار آدمی کو اس طریقت کی ضرورت نہیں (نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم اور صحابہ کرام کی زندگیوں میں ایسا کچھ نہیں تھا ) جبکہ بے دین کو یہ دیندار بنا نہیں سکتی ۔( جیساکہ آج کل کے صوفی ہیں جتنا بڑا بے دین ہوتا ہے اتن بڑا صوفی خیال کیا جاتا ہے ۔ )

    ہمارے نزدیک ان کی جو حقیقت ہے ہماری بالا مشارکت سے اس کا اندازہ لگایا جا سکتا ہے ۔۔۔۔۔۔ آپ کشف و الہام سے اس کا کوئی کھوج لگا سکتے ہیں تو ہمت کر کے دکھائیں ۔

    اب سارے واقعات ان لوگوں کے لکھتے ہیں جواس دنیا سے جا چکے ہیں کشف و الہامات و کرامات والے کسی زندہ شخص کو ڈھونڈیں تاکہ ان سے کچھ پوچھ گچھ کی جائے کہ ہمیں بھی حقیقت (!) کا کچھ پتہ چلے ؟
    اگر زندہ لوگوں کی باتیں سمجھ میں آ گئیں تو اموات کو اسی پر قیاس کر لیں گے کیاخیال ہے ؟
     
  4. ‏مارچ 14، 2013 #14
    خضر حیات

    خضر حیات علمی نگران رکن انتظامیہ
    جگہ:
    طابہ
    شمولیت:
    ‏اپریل 14، 2011
    پیغامات:
    8,763
    موصول شکریہ جات:
    8,333
    تمغے کے پوائنٹ:
    964

    یہ عقیل قریشی بھائی ان شیاہ کے بارے میں کافی معلومات رکھتے ہیں یہ کچھ بتا سکیں گے اور کچھ نہیں تو کم ازکم جگنوشاہ کی قبر تو جانتے ہوں گے ۔ انہی سے رابطہ رکھیں ان کے پاس بڑے طریقے ہیں مثلا کشف ، الہام ، مراقبہ وغیرہ وغیرہ ۔
     
  5. ‏مارچ 14، 2013 #15
    گڈمسلم

    گڈمسلم سینئر رکن
    شمولیت:
    ‏مارچ 10، 2011
    پیغامات:
    1,407
    موصول شکریہ جات:
    4,907
    تمغے کے پوائنٹ:
    292

    آج صبح آفس آتے ہوئے ایک اور شاہ کا اضافہ ہوا۔۔۔ ایک گاڑی (کرولا کار) کے پیچھے لکھا ہوا تھا
    فیضان بابا گھنگ شاہ
     
  6. ‏مارچ 14، 2013 #16
    ذکی الرحمان

    ذکی الرحمان مبتدی
    شمولیت:
    ‏فروری 26، 2013
    پیغامات:
    55
    موصول شکریہ جات:
    100
    تمغے کے پوائنٹ:
    0

    کیا کوئی کسی ننگے پیر کا پتہ بتا سکتا ہے ؟
     
  7. ‏مارچ 14، 2013 #17
    عبدالحميد سيال

    عبدالحميد سيال مبتدی
    جگہ:
    نيو سعيدآباد سنده
    شمولیت:
    ‏مارچ 14، 2013
    پیغامات:
    5
    موصول شکریہ جات:
    25
    تمغے کے پوائنٹ:
    0

    اس طرح كے بابے پاکستان میں بہت ہیں
     
  8. ‏مارچ 14، 2013 #18
    گڈمسلم

    گڈمسلم سینئر رکن
    شمولیت:
    ‏مارچ 10، 2011
    پیغامات:
    1,407
    موصول شکریہ جات:
    4,907
    تمغے کے پوائنٹ:
    292

    آپ اس دھاگے کا مطالعہ فرمائیں
     
  9. ‏مارچ 14، 2013 #19
    عبدالحميد سيال

    عبدالحميد سيال مبتدی
    جگہ:
    نيو سعيدآباد سنده
    شمولیت:
    ‏مارچ 14، 2013
    پیغامات:
    5
    موصول شکریہ جات:
    25
    تمغے کے پوائنٹ:
    0

    ننگا پیر کنڈیارو شہر سندھ میں واقع ہے
     
  10. ‏مارچ 14، 2013 #20
    aqeel

    aqeel مشہور رکن
    جگہ:
    راولپنڈی
    شمولیت:
    ‏فروری 06، 2013
    پیغامات:
    299
    موصول شکریہ جات:
    307
    تمغے کے پوائنٹ:
    119

    قوموں پر بڑے بڑے عجیب وقت آتے ہیں جب جاہل رہنما بن جاتے ہیں
    درج ذیل کے متعلق آپکا کیا خیال ہے؟
    ولانا حنیف ندویؒ فرماتے ہیں:۔
    رنگ لائے گی فاقہ مستی ایک دن​
    مزید انکے متعلق آپ کا کیا خیال رہے گا،
    یا تو منکرین تصوف کند ذہین ہیں یا پھر صو فیاء اہلحدیث کی جماعت جاہل تھی
    رہے ابن تیمیہ تو وہ خود صوفی کی حمایت میں جہلا سے کفر کا فتوی لے چکے ہیں
    جی بلی تھیلے سے باہر ا گئی ہے

    ا
    ہم تو کشف و الہام من اللہ کو اللہ کا انعام سمجھتے ہیں اگر آپ سمجھتے تو میدان حاضر ہے۔
    باقی لو گ مختلف لوگ شاہوں کے پیچھے پڑے ہیں میری طرف سے انکو مبارک ہو،شغل جاری رکھے
    دل کو بہلانے کا غالب خیال اچھا ہے​
     
لوڈ کرتے ہوئے...

اس صفحے کو مشتہر کریں