1. آئیے اہم اسلامی کتب کو یونیکوڈ میں انٹرنیٹ پر پیش کرنے کے لئے مل جل کر آن لائن ٹائپنگ کریں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ کے ذریعے آپ روزانہ فقط دس پندرہ منٹ ٹائپنگ کر کے ہزاروں صفحات پر مشتمل اہم ترین کتب کو ٹائپ کرنے میں اہم کردار ادا کرکے صدقہ جاریہ میں شامل ہو سکتے ہیں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ میں شمولیت کے لئے یہاں کلک کریں۔
  2. آئیے! مجلس التحقیق الاسلامی کے زیر اہتمام جاری عظیم الشان دعوتی واصلاحی ویب سائٹس کے ساتھ ماہانہ تعاون کریں اور انٹر نیٹ کے میدان میں اسلام کے عالمگیر پیغام کو عام کرنے میں محدث ٹیم کے دست وبازو بنیں ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔

حلالہ ایک لعنت !چھ بار حلالہ کروایا گیا ۔واہ رے آل تقلید بدکاری سے کتنی محبت !؟؟

'فقہ اہل الرائے' میں موضوعات آغاز کردہ از ابن بشیر الحسینوی, ‏مارچ 16، 2012۔

  1. ‏مارچ 16، 2012 #1
    ابن بشیر الحسینوی

    ابن بشیر الحسینوی رکن مجلس شوریٰ رکن انتظامیہ
    جگہ:
    Pakistan
    شمولیت:
    ‏اپریل 14، 2011
    پیغامات:
    1,066
    موصول شکریہ جات:
    4,413
    تمغے کے پوائنٹ:
    376

    حلالہ ایک لعنت !چھ بار حلالہ کروایا گیا ۔واہ رے آل تقلید کی بدکاری سے کتنی محبت !؟؟
    کیا یہ فقہ ہے ؟جو بدکاری کی دعوت دے ؟!!
    سنیں یہ خؤد اور غیرت دلائیں آل تقلید کو !؟
    Pakistan 6 Halala Nikah&#39s of a Mosque Imam&#39s wife - YouTube
     
  2. ‏جون 08، 2012 #2
    arshedali

    arshedali مبتدی
    شمولیت:
    ‏جون 08، 2012
    پیغامات:
    10
    موصول شکریہ جات:
    22
    تمغے کے پوائنٹ:
    0

    يا ويلكم فان المغلظة بالثلاث محرمة بالاجماع و لا سبيل اليها الا بالنكاح مع الزوج الثاني لقوله تعالي حتي تنكح زوجا غيره و قد احللتموها بعد الطلاقات الثلاث مخالفا للقران و اما ما ينكها الزوج الثاني فهو لكونه نكاحا منعقدا حلال وقد حرمتموه فيا اسفا علي من احل ما حرم الله وحرم ما احل الله و مع هذا تسخرون بالمقلدين مع ان الالزام وارد عليكم يا غير المقلدين و من يكسب خطيئة او اثما ثم يرم به بريئا فقد احتمل بهتانا و اثما مبينا تاملوا هذه الآية فانها جدير بكم
     
  3. ‏جون 09، 2012 #3
    محمد بن محمد

    محمد بن محمد مشہور رکن
    جگہ:
    كراتشى
    شمولیت:
    ‏مئی 20، 2011
    پیغامات:
    106
    موصول شکریہ جات:
    223
    تمغے کے پوائنٹ:
    114

    بل ویل لکم یا اہل التقلید تقولون اقوالا فی تفسیر القرآن من عندکم بدون دلیل۔ تنطبقون الحلالہ المروجہ علی امر اللہ ’’حتی تنکح زوجا غیرہ‘‘ و تنکحون نکاحا موقتا مشروطا تجیزونہ لکم و تحرمون للشیعہ علی سبیل المتعۃ۔ ماالفرق بین المتعۃ و الحلالۃ المروجۃ؟ فقط المہر؟اف لکم ولما تقولون ۔تخالفون احکام القرآن و تخلافون الاحادیث النبویۃ ایضا حیث تقولون فی قول النبی صلی اللہ علیہ وسلم’’لعن اللہ المحلل والمحلل لہ‘‘ لعل المراد من ہذہ اللعنۃ الرحمۃ
    من قال ہذا ان المراد من اللعنۃ ارحمۃ؟اف لکم و لما تقولون۔
    و فعلا اذتطلقون انتم العلماء منکم تاخذون الفتوی من اہل الحدیث و تراجعونہا ۔ کم لہا امثلۃ
    ۔۔۔لِمَ تَقُولُونَ مَا لَا تَفْعَلُونَ (2) كَبُرَ مَقْتًا عِنْدَ اللَّهِ أَنْ تَقُولُوا مَا لَا تَفْعَلُونَ
     
  4. ‏جون 10، 2012 #4
    عبدالعلام

    عبدالعلام رکن
    جگہ:
    Aurangabad
    شمولیت:
    ‏مارچ 15، 2012
    پیغامات:
    153
    موصول شکریہ جات:
    478
    تمغے کے پوائنٹ:
    95

    جزاک اللہ فی الدنیا والآخرۃ عیسی بھای
     
لوڈ کرتے ہوئے...

اس صفحے کو مشتہر کریں