1. آئیے اہم اسلامی کتب کو یونیکوڈ میں انٹرنیٹ پر پیش کرنے کے لئے مل جل کر آن لائن ٹائپنگ کریں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ کے ذریعے آپ روزانہ فقط دس پندرہ منٹ ٹائپنگ کر کے ہزاروں صفحات پر مشتمل اہم ترین کتب کو ٹائپ کرنے میں اہم کردار ادا کرکے صدقہ جاریہ میں شامل ہو سکتے ہیں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ میں شمولیت کے لئے یہاں کلک کریں۔
  2. آئیے! مجلس التحقیق الاسلامی کے زیر اہتمام جاری عظیم الشان دعوتی واصلاحی ویب سائٹس کے ساتھ ماہانہ تعاون کریں اور انٹر نیٹ کے میدان میں اسلام کے عالمگیر پیغام کو عام کرنے میں محدث ٹیم کے دست وبازو بنیں ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔

داعش والےنہ کبیرہ گناہوں پر تکفیر کرتے ہیں اور نہ سر منڈواتے ہیں تو خارجی کیسے ؟ایک شبہ کا ازالہ

'خوارج' میں موضوعات آغاز کردہ از Ibrahim Qasim, ‏مئی 15، 2016۔

  1. ‏مئی 17، 2016 #11
    خضر حیات

    خضر حیات علمی نگران رکن انتظامیہ
    جگہ:
    طابہ
    شمولیت:
    ‏اپریل 14، 2011
    پیغامات:
    8,756
    موصول شکریہ جات:
    8,332
    تمغے کے پوائنٹ:
    964

    ان باتوں پر ہم جیسے لوگوں کو توجہ کرنا پڑے گی ، جب کوئی متقی پرہیز گار ، صوم و صلوۃ کا پابند ، خوش الحان امام ، اور گرجدار خطیب موساد کا ایجنٹ ہوسکتا ہے ، تو پھر یہ فلاں و علان اس روپ میں کیوں نہیں ہوسکتے ؟
    انٹرنیٹ کی دنیا میں عیب و غریب اور مبہم ناموں کے سائے تلے ، لوگوں کے جذبات سے کھیلنے والے کسی ایجنسی کے کارکن کیوں نہیں ہوسکتے ؟
    خبریں سننے میں آتی ہیں کہ فلاں کو اٹھالیا گیا ہے ، فلاں سے تعلق کی بنیاد پر ؟ حیرانی کی بات یہ ہے کہ تعلق رکھنے والوں کو تو اٹھالیا جاتا ہے ، لیکن جن سے تعلق کی بنا پر اٹھایا گیا ، وہ وہیں کے وہیں ؟ اور معاشرے میں آزاد گھومتے نظر آتے ہیں ؟
    میں اسلام کے نام پر بنے اس ملک میں اسلامی نظام کے نفاذ کا خواہاں ہوں ، میں اپنے وطن کو ، اپنے گھر کو پر امن دیکھنا چاہتا ہوں ، لیکن مجھے شدید نفرت ہے ان لوگوں سے جو سادہ لوح عوام کے جذبات سے کھیل کر ، ان کے مستقبل تباہ کرنے پر لگے ہوئے ہیں ، وہ چاہیں اسلامی نظام کے نفاذ کے حامیوں میں سے ہوں ، یا پر امن پاکستان کے دعویداروں میں سے کوئی ہو ۔
    میرا ملک میری شکار گاہ بن گیا ، اور شکار گاہ بھی ایسی کہ شکار کے باہر آنے کا انتظار کرنے کی بجائے ، یہاں دانا ڈالا جاتا ہے ، مجبورا مجھے بولنے پر مجبور کیا جاتا ہے ، اور جونہی کوئی لفظ نکلا ، اس میں تیسری راہ کوئی نہیں ، یا میں کسی تنخواہ دار کا شکار ہوجاتا ہوں ، یا کسی فدائی کی یلغار کا نشانہ بن جاتا ہوں ۔
    حج کے موقعوں پر خصوصا عرفات وغیرہ میں اپنے اپنے گروپوں کو اکٹھا رکھنے کے لیے انہوں نے بڑے بڑے غبارے اوپر بلند کیے ہوتے ہیں ، گویا یہ غبارہ نشانی ہوتا ہے ، کہ فلاں گروپ فلاں جگہ پر موجود ہے ، اور اس سے متعلق لوگ سبھی وہیں ہوں گے ، ہمارے ملک میں بھی یہی حال ہے ، یہاں فتنے غبارے کی شکل میں اڑائے ہوئے ہیں ، تاکہ اس فتنے میں مبتلا لوگ اس غبارے کے تحت جمع ہوتے جائیں ، اور پکڑ دھکڑ کرنے کے لیے کہیں دور نہ جانا پڑے ، اور مارا مارا نہ پھرنا پڑے ۔
    سادہ لوح عوام اس بات سے دھوکا کھاجاتے ہیں کہ فلاں عبد اللہ ، عبد الرحمن صاحب انٹرنیٹ پر شناخت چھپا کر اداروں کی پہنچ سے دور ہیں ، تاکہ نفاذ اسلام کا زیادہ سے زیادہ کام کرسکیں ، اور انہیں کوئی روک ٹوک کرنے والا نہ ہو ۔
    حقیقت یہ ہے کہ خفیہ اداروں سے نہ کوئی نام چھپ سکتا ہے ، نہ ان پر آئی پی شائپی کا جادو چل سکتا ہے ، وہ سب ان لغویات کو اچھی طرح جانتے ہیں ، اس سے دھوکہ دینا مقصود صرف عوام کو ہے ، تاکہ کسی ملازم یا کسی مجاہد کو کسی خاص ذہنیت کا بندہ ڈھونڈنے میں دقت نہ ہو ، بلکہ وہ جب چاہیں ، فضا میں بلند ان مبہم و مجہول غباروں کے سائے تلے سے مطلوبہ افراد کو نکال لیں ۔
    میری فورم کے قارئین و اراکین سے گزارش ہے کہ اس طرح کے مباحث میں ایسی جگہوں پر پڑنے کی ضرورت ہی نہیں ، اگر کہیں ہو بھي تو فریقین میں سے کسی پر بھی ایک فیصد بھی اعتماد نہ کریں ، انہیں لوگوں کی بات پر اعتماد کریں ، جن کی شخصیت کو آپ اچھی طرح جانتے ہیں ، یہ فلاں ہے ، فلاں جگہ رہتا ہے ، فلاں ادارے سے منسلک ہے ، فلاں فلاں لوگ اس کو جانتے ہیں ۔
    ورنہ کوئی بعید نہیں جس پرچم کے سائے تلے آپ طاغوت کی سرکوبی کے لیے مصروف ہیں ، وہ خود کوئی طاغوتی پھندہ ہو ، جو ’ ہار ‘ کا نام دے کر آپ کے گلے میں ڈالا جارہا ہے ۔
    باقی اللہ تعالی اپنے مخلص بندوں کی حفاظت کرنے والا ہے ، اور انہیں فتنوں اور آزمائشوں سے بچانے والا ہے ، فاللہ خیر حافظا و ھو أرحم الراحمین ۔
     
    • زبردست زبردست x 4
    • پسند پسند x 1
    • متفق متفق x 1
    • مفید مفید x 1
    • لسٹ
  2. ‏مئی 17، 2016 #12
    ابو عبدالله

    ابو عبدالله مشہور رکن
    شمولیت:
    ‏نومبر 28، 2011
    پیغامات:
    720
    موصول شکریہ جات:
    447
    تمغے کے پوائنٹ:
    135

    ماشاء اللہ، خضر بھائی بہت عمدہ بات کی ہے آپ نے۔۔۔۔۔
    رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کی پیشن گوئی کے مطابق فتنے بارش کی طرح آسمانوں سے نازل ہورہے ہیں۔۔۔۔
    عافیت اسی میں ہے کہ اپنے مقامی اہلِ حق، اہلِ علم سے اپنا رشتہ استوار و مضبوط کیا جائے۔۔۔۔۔
    وہ وقت دور نہیں جب درختوں کی جڑیں کھانے ہی میں سب سے زیادہ عافیت ہوگی۔۔۔۔ واللہ اعلم
     
    • پسند پسند x 2
    • متفق متفق x 1
    • لسٹ
  3. ‏مئی 17، 2016 #13
    عبداللہ ہندی

    عبداللہ ہندی مبتدی
    جگہ:
    امرتسر پنجاب ہندوستان
    شمولیت:
    ‏فروری 04، 2016
    پیغامات:
    203
    موصول شکریہ جات:
    13
    تمغے کے پوائنٹ:
    27

    جہاں تک انٹرنیٹ پر اپنی شناخت چھپانے کی بات ہے تو ہم یہ صرف اِس لیے کرتے ہیں کہ freedom of speach کے دعوے داروں کے شر سے بچا جائے آپ کو بھی معلوم ہے کہ اگر ہم ایسا نہ کریں تو ہمارے ساتھ کیا ہو۔ قران میں بھی اللہ تعالٰی نے فرمایا ہے کہ کہ اپنی خفاظت کو پکڑو یعنی اپنی خفاظت کرو۔ اور ہم اللہ تعالٰی پر بھروسہ کرتے ہیں کہ وہ ہمیں اِن طاغوتوں کے شر سے بچائے گا۔ نبی ﷺ کی ایک حدیث کا بھی مفہوم ہے کہ پہلے اونٹ کو باندھو پر اللہ پر بھروسہ کرو۔
    اور جہاں تک آپ نے کہا ہے کہ عملی میدان میں نہیں اُترتے تو مجھے ایسا معلوم ہوتا ہے کہ آپ اپنی آرام دہ کرسی پر بیٹھ کر ہر وقت محدث فارم پر ہی لگے رہتے ہیں۔ اگر آپ باہر نکل کر دنیا میں ادھر اُدھر سیر کرتے تو شائد آپ کو بھی معلوم ہو جاتا کہ عمل میدان میں کون نکلا ہوا ہے۔
    اور آپ نے جو کہا ہے کہ ہم لوگ فتنہ کی سرکوبی کے لیے فتنہ ہی پھیلا رہے ہیں تو یہ بھی بتا دیتے کہ وہ فتنہ کیا ہے۔
    اور جہاں تک مسلمانوں کو زندانوں میں ڈالنے والی بات ہے۔ ایسا ہم نہیں کرتے۔ یہ تو فرعونوں اور طاغوتوں کی فطرت ہے کہ وہ ہمیشہ حق والوں کو طرح طرح کی اذیتیں دیتے ہیں۔ اور بے شک یہ اللہ تعالٰی کا اُن مسلمانوں کے لیے ایک امتحان ہے۔ اللہ سے دعا ہے کہ وہ اپنے امتحان میں کام یاب رہیں۔ ایسا تو ہر زمانے میں ہو چُکا ہے یہاں تک کے نبی ﷺ نے بھی صحابہ ؓ کو بتایا تھا کہ تم سے پہلے کچھ ایسے لوگ بھی گزر چُکے ہیں جس کو آدھا زمین میں دبا کر اُن کو آروں سے کاٹ دیا جاتا تھا۔ اور اِس بات میں بھی کوئی شک نہیں کے آج کے زمانے کے طاغوت بھی ویسے ہی اور شائد اُس سے بھی سخت ظلم مسلمانوں پر کر رہے ہیں۔
    اور اب یہ آپ نے نام نہاد جہادی کن کو کہا ہے۔ اگر ہم کو کہا ہے تو ایسا نہ ہی کہتے تو اچھا تھا کیوں کہ ہم تو مجاہد ہے ہی نہیں ہم تو صرف انٹرنیٹ پر دعوت کا کام کر رہے ہیں۔ دعوت اور جہاد میں بہت فرق ہوتا ہے۔ ان شاء اللہ ہم اللہ تعالٰی سے یہ اُمید رکھتے ہیں کہ وہ ہمیں بھی ایک دن جہاد کرنے کی توفیق دے گا۔
     
    • شکریہ شکریہ x 1
    • ناپسند ناپسند x 1
    • لسٹ
  4. ‏مئی 17، 2016 #14
    عبداللہ ہندی

    عبداللہ ہندی مبتدی
    جگہ:
    امرتسر پنجاب ہندوستان
    شمولیت:
    ‏فروری 04، 2016
    پیغامات:
    203
    موصول شکریہ جات:
    13
    تمغے کے پوائنٹ:
    27

    ہم تو اِس موضوع پر یہاں پر لکھنے سے بہت عرصہ سے رکے ہوتے تھے کیوں کہ یہ فارم کے قوانین کے خلاف تھا۔ لیکن کچھ ایسے لوگ ہیں کہ وہ اِس موضوع پر دوسری جگوں سے یہاں پر ایسا مواد نقل کر رہے ہیں جو یہاں پر نقل کرنا یا لکھا فورم کے قوانین کے خلاف ہے اور ہے بھی جھوٹ لیکن آپ اُن لوگوں کو کچھ نہیں کہتے لیکن جب ہم کچھ ایسا کرتے ہیں تو آپ کو بہت بُرا لگتا ہے۔ یاں تو آپ اُن لوگوں کو بھی منع کر دیں یا پھر ہمیں اجازت دے دیں۔ آپ نے کیا سمجھ رکھا ہے کہ ہم میں اتنی بھی غیرت نہیں رہی کہ کوئی مسلمانوں کی خلافت کے بارے میں طرح طرح کے جھوٹ اور افسانے کہتا رہے اور ہم خاموش تماشائی بن کر اُس کو دیکھتے رہے ۔ آپ کو ایسا نہیں کرنا چاہیے۔
     
    • شکریہ شکریہ x 1
    • پسند پسند x 1
    • لسٹ
  5. ‏مئی 17، 2016 #15
    عبداللہ ہندی

    عبداللہ ہندی مبتدی
    جگہ:
    امرتسر پنجاب ہندوستان
    شمولیت:
    ‏فروری 04، 2016
    پیغامات:
    203
    موصول شکریہ جات:
    13
    تمغے کے پوائنٹ:
    27

    یہ تو بلکل ایسا ہی ہے کہ کوئی بریلوی یا رافضی یہاں پر آ کر اہل سنت/حدیث کے بارے میں جھوٹ بولتا رہے اور اُن کے خلاف پروپوگنڈا کرتا رہے لیکن اہل سنت کو یہ اجازت نہ ہو کے وہ اُس کے خلاف بھی کچھ بول سکے۔
     
  6. ‏مئی 17، 2016 #16
    خضر حیات

    خضر حیات علمی نگران رکن انتظامیہ
    جگہ:
    طابہ
    شمولیت:
    ‏اپریل 14، 2011
    پیغامات:
    8,756
    موصول شکریہ جات:
    8,332
    تمغے کے پوائنٹ:
    964

    عبد اللہ ہندی صاحب !
    آپ صرف اتنا بتادیں کہ آپ کے دستیاب تعارف کے مطابق آپ کے اندر ایسی کون سی علامت ہے ، جس سے ایک عام آدمی کو اطمینان ہو جائے کہ آپ واقعتا امت کا درد رکھنے والے حقیقی مجاہد ہیں ، نہ کہ کسی ادارے کے تنخواہ دار ؟
    آپ کو ہماری باتیں بری لگی ہوں گی ، لیکن یہ ہمارے معاشرے کا المیہ بن چکا ہے ، اور اسے زیر بحث لانا ہی پڑے گا ۔
    میں ان تکنیکی معاملات کو زیادہ جانتا نہیں ، لیکن یہ بات عام ہے کہ انٹرنیٹ پر شناخت ، اور آئی پی وغیرہ چھپانے کے جتنے ذریعے ہیں ، وہ عام نیٹ صارفین کی حد تک تو مفید ہیں ، لیکن متعلقہ اداروں کے لیے ایسی چیزیں کوئی اہمیت نہیں رکھتیں ۔
    خیر اسی طرح لے لیجیے ، ہم نے کئی دفعہ گزارش کی کہ جس طرح آپ احباب احتیاطی تدابیر اختیار کرتے ہیں ، اسی طرح فورم کے لیے بہتر بھی یہی ہے کہ یہاں اس طرح کا بحث و مباحثہ نہ ہو ، اس پر کچھ اراکین نے طعنہ دیا کہ آپ بزدل ہیں ، فلانے کے ٹاؤٹ ہیں ، آپ حق بات نہیں کرنے دیتے ، وغیرہ وغیرہ ۔ میں نے عرض کی جناب محدث فورم کیا ہے ؟ اس کا مرکزی دفتر کہاں ہے ؟ یہ سب باتیں بالکل واضح ، اور مشہور و معروف ہیں ، اس سب کے باوجود محدث اور اس کی انتظامیہ بزدل ہے ، جبکہ آپ نام بدل کر ، آئی پی چھپا کر بھی بہادر ہیں ، اور ایسے کے دوسروں کو بزدلی کے طعنے بھی دے رہے ہیں ۔
    بس ہماری یہی پریشانی ہے ، جس پر ہم نا چاہتے ہوئے بھی برہم ہوجاتے ہیں ۔
     
    • پسند پسند x 3
    • شکریہ شکریہ x 1
    • متفق متفق x 1
    • زبردست زبردست x 1
    • لسٹ
  7. ‏مئی 17، 2016 #17
    محمد طارق عبداللہ

    محمد طارق عبداللہ سینئر رکن
    جگہ:
    ممبئی - مہاراشٹرا
    شمولیت:
    ‏ستمبر 21، 2015
    پیغامات:
    2,341
    موصول شکریہ جات:
    714
    تمغے کے پوائنٹ:
    224

    عبداللہ بهائی

    بزرگوں کی نصیحتیں ملت کے نوجوانوں کی راہ نما ہوتی ہیں ۔ ہم کسی قیمت پر ضیاع پسند نہیں کر سکتے ۔ یہ مواضیع خطرناک ہیں ۔
    اللہ ملت اسلام کے نوجوانوں کی حفاظت فرمائے ۔ آمین
     
  8. ‏مئی 17، 2016 #18
    عبداللہ ہندی

    عبداللہ ہندی مبتدی
    جگہ:
    امرتسر پنجاب ہندوستان
    شمولیت:
    ‏فروری 04، 2016
    پیغامات:
    203
    موصول شکریہ جات:
    13
    تمغے کے پوائنٹ:
    27

    میں نے تو پہلے ہی کہا ہے کہ آپ مجھے مجاہد نہ کہیں کیوں کہ میں مجاہد نہیں ہوں۔ اور دوسری بات یہ ہے کہ انٹرنیٹ پر بیٹھ کر کوئ کس طرح بتائے کہ کے دل میں امت کا کتنا درد ہے۔
    اور یہ بھی کہنا چاہوں گا کہ میں بھی اِس فارم پر اِس موضوع پر کچھ نہیں لکھنا چاہتا کیوں کے مجھے بھی معلوم ہے کہ آپ پر بہت پریشر ہے۔ لیکن آپ کو بھی چاہیے کہ جماعت الدعوۃ والے اِس فارم پر خلافت کے خلاف جو فتنہ پھیلا رہے ہیں اُس کو ختم کریں اور اِن کے ایسے مراسلے جو فتنہ پھیلا رہے ہیں اور جو یہ اپنے الفتن یعنی فتنوں والی ویب سائیٹ سے نقل کرتے ہیں اُن کو بھی اپروو نہ کیا جائے۔ اور اُن کا یہ کام تو بلکل فارم کے قوانین کے بھی خلاف ہے۔ لیکن پھر بھی آپ اُن کی فتنہ فساد والی پوسٹ اپروو کر دیتے ہیں۔
     
    • متفق متفق x 3
    • پسند پسند x 1
    • لسٹ
  9. ‏مئی 19، 2016 #19
    عمر اثری

    عمر اثری سینئر رکن
    جگہ:
    نئی دھلی، انڈیا
    شمولیت:
    ‏اکتوبر 29، 2015
    پیغامات:
    4,350
    موصول شکریہ جات:
    1,077
    تمغے کے پوائنٹ:
    398

    متفق.
    کچھ تو کرنا ھی چاہیۓ اس سلسلے میں. یہ بات میں بھی نوٹس کرتا ھوں.
    جزاک اللہ خیر محترم بھائ۔
     
  10. ‏مئی 19، 2016 #20
    اشماریہ

    اشماریہ سینئر رکن
    جگہ:
    کراچی
    شمولیت:
    ‏دسمبر 15، 2013
    پیغامات:
    2,684
    موصول شکریہ جات:
    740
    تمغے کے پوائنٹ:
    290

    ایک چھوٹا سا سوال ہے۔ بے شک یہ موضوع دینی اور قانونی ہر لحاظ سے حساس ہے لیکن اگر اہل علم بھی اس موضوع سے دور بھاگیں گے تو عوام کو شر پسندوں کے جال میں پھنسنے سے کون بچائے گا؟
    اسی دور ہٹنے اور خاموش رہنے سے تو گزشتہ سالوں میں اتنا فساد کھڑا ہوا ہے۔
     
لوڈ کرتے ہوئے...

اس صفحے کو مشتہر کریں