1. آئیے اہم اسلامی کتب کو یونیکوڈ میں انٹرنیٹ پر پیش کرنے کے لئے مل جل کر آن لائن ٹائپنگ کریں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ کے ذریعے آپ روزانہ فقط دس پندرہ منٹ ٹائپنگ کر کے ہزاروں صفحات پر مشتمل اہم ترین کتب کو ٹائپ کرنے میں اہم کردار ادا کرکے صدقہ جاریہ میں شامل ہو سکتے ہیں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ میں شمولیت کے لئے یہاں کلک کریں۔
  2. آئیے! مجلس التحقیق الاسلامی کے زیر اہتمام جاری عظیم الشان دعوتی واصلاحی ویب سائٹس کے ساتھ ماہانہ تعاون کریں اور انٹر نیٹ کے میدان میں اسلام کے عالمگیر پیغام کو عام کرنے میں محدث ٹیم کے دست وبازو بنیں ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔

علمائےاہل حدیث کا ذوق تصوف

'عملی تصوف' میں موضوعات آغاز کردہ از عبقری ریڈر, ‏جنوری 14، 2014۔

  1. ‏فروری 03، 2014 #211
    محمد ارسلان

    محمد ارسلان خاص رکن
    شمولیت:
    ‏مارچ 09، 2011
    پیغامات:
    17,865
    موصول شکریہ جات:
    40,798
    تمغے کے پوائنٹ:
    1,155

    یہ ہے صوفیوں کی اوقات، جب ان سے دلیل مانگو تو الٹے الزامات اور بہتان لگا کر فرار کا راستہ ڈھونڈتے ہیں، مجھے اندازہ ہے تم کیا تمہارے سارے صوفی دلائل کے میدان سے نا آشنا ہو، لیکن لوگوں کو بھی تمہاری حقیقت پتہ چلے کہ اہلحدیث علماء کی آڑ میں اپنے گندے اور گھٹیا مقاصد کی کس طرح تکمیل کر رہے ہو۔
     
  2. ‏فروری 03، 2014 #212
    عامر رضا

    عامر رضا رکن
    شمولیت:
    ‏ستمبر 25، 2013
    پیغامات:
    138
    موصول شکریہ جات:
    34
    تمغے کے پوائنٹ:
    32

    یہ منکرین تصوف کی اوقات جب بات سمجھانے کی کوشش کی جائے یا دلائل دئیے جائے توسمجھنے کے بجائے بہتان لگا کر فرار کا راستہ ڈھونڈتے ہیں، مجھے اندازہ ہے تم کیا تمہارے سارے نام نہادا ہل حدیث منکر تصوف دلائل کے میدان سے نا آشنا ہو، لیکن لوگوں کو بھی تمہاری حقیقت پتہ چلے کہ اہلحدیث مسلک کی آڑ میں اپنے گندے اور گھٹیا مقاصد کی کس طرح تکمیل کر رہے ہو۔
     
  3. ‏فروری 03، 2014 #213
    محمد ارسلان

    محمد ارسلان خاص رکن
    شمولیت:
    ‏مارچ 09، 2011
    پیغامات:
    17,865
    موصول شکریہ جات:
    40,798
    تمغے کے پوائنٹ:
    1,155

    هاتو برهانكم ان كنتم صادقين
     
  4. ‏فروری 04، 2014 #214
    عبدہ

    عبدہ سینئر رکن رکن انتظامیہ
    جگہ:
    لاہور
    شمولیت:
    ‏نومبر 01، 2013
    پیغامات:
    2,038
    موصول شکریہ جات:
    1,160
    تمغے کے پوائنٹ:
    425

    بھائی میرا سوال اگر موجودہ موضوع سے ہٹ کر ہے تو بتا دیں آپ چونکہ یہاں علماء اہل حدیث کا نام لے کر تصوف کی دعوت دے ہیں تو میں نے اوپر کہا ہے کہ آپ اس متنازہ نام کی دعوت نہ دیں بلکہ قرآن و حدیث کی دعوت دیں
    اب آپ بتائیں کہ آپ کا مسئلہ موضوع سے ہٹ کر سوال کرنے کا ہے یا آپ جواب سے عاجز آ گئے ہیں
     
  5. ‏فروری 04، 2014 #215
    محمد فیض الابرار

    محمد فیض الابرار سینئر رکن
    جگہ:
    کراچی
    شمولیت:
    ‏جنوری 25، 2012
    پیغامات:
    3,039
    موصول شکریہ جات:
    1,194
    تمغے کے پوائنٹ:
    402

    آپ قرآن وحدیث سے ثابت کریں دینی امور میں اصطلاح قائم کرنے کا کیا طریقہ ہے۔نیز فقہا محدثین اور مفسرین ،متکلمین کی جو اصطلاحات ہیں ،اس پر قرآن و حدیث سے نص پیش کریں۔؟۔ نیز لفظ تصوف یا اصطلاح تصوف پر متقدمین کے جو اعتراضات پیش کریں؟
    عامر صاحب آپ سوال پر سوال کرتے رہتے ہیں اور اعتراض پر اعتراض اور کسی ایک سوال یا اعتراض کا جواب نہیں دیا۔
    دینی امور میں اصطلاح قائم کرنے کا طریقہ کار پر میں جو کچھ لکھوں گا آپ اس پر بھی اعتراض کرتے رہو گے اور بات کہیں کی کہیں نکل جائے گی لیکن پھر بھی میں اختصار کے ساتھ اتنا ضرور کہوں گا کہ اس کی اصل کتاب و سنت سے ضرور ثابت ہونی چاہیے اور اس کے مشتملات غیر اسلامی نظریات کے ساتھ مشابہت نہ رکھتے ہوں تو ایسی اصطلاحات وضع کی جا سکتی ہیں اور اصول حدیث، اصول تفسیر اور اصول فقہ کی اصطلاحات اس کی واضح اور بین مثالیں ہیں کسی بھی مکتبہ فکر کا عالم دین ان کے وجود پر اعتراضات نہیں کرتا اگر ہے بھی تو جزوی طور پر اس کی تشریحات پر لیکن جیسا تصوف کے ساتھ ہے ویسا معاملہ نہیں ہے اور جس طرح میں تصوف پر اعتراض کر رہا ہوں اس طرح آپ محدثین یا مفسرین یا متکلمین کی کسی اصطلاح پر اعتراض کریں تو اس کا جواب میں دوں گا۔
    آپ ادھر ادھر کی باتیں کرنے کے بجائے صرف تصوف کی اصطلاح کو ثابت کریں باقی باتیں بعد میں مجھے اگر لفظ تصوف پر آپ کا کوئی معقول جواب ملا تو میں بات کروں گا ورنہ یہ میری آخری پوسٹ ہے اس موضوع پر ۔ کیوں کہ آپ اصل موضوع پر بات کرنے کے بجائے ادھر ادھر کے اعتراضات ہی نقل کر رہے ہیں یا کم ازکم اصطلاح تصوف پر ہی کوئی معقول جواب نقل کیا ہوتا تو پھر بھی بات تھی میں بات کر رہا ہوں بنیاد کی اور آپ کبھی ابن القیم رحمہ اللہ کے صوفی ہونے کا دعوی کرتے ہیں تو کبھی شیخ نذیر حسین رحمہ اللہ کو صوفیاء کا سرخیل ہونے کا دعوی ۔ خدا کے لیے میرے بھائی اللہ آپ کو اپنی امان اور عافیت میں رکھے اصل موضوع کی طرف آیئے تو پھر ایک ایک موضوع پر بات ہو سکتی ہے آپ کی سب باتوں کے جواب میرے پاس ہیں لیکن میں چاہتا ہوں کہ سب سے پہلے آپ اس لفظ کو ثابت کریں ۔
    اور سوال کا آخری حصہ تو صرف بحث برائے بحث یا مخالفت برائے مخالفت کا ہی مظہر ہے ارے میرے بھائی آپ ہر اعتراض کا خاتمہ اس سوال پر کیوں کرتے ہیں کہ لفظ تصوف یا اصطلاح تصوف پر اعتراضات پیش کریں سابقہ 100 پوسٹ کیا آپ نے پڑھی ہی نہیں سب کچھ اس میں لکھا ہوا ہے
    اور میرے بھائی مجھے بار بار یہ لکھتے ہوئے اچھا نہیں لگ رہا کہ مشتملات تصوف پر بات بعد میں کیجیے گا سب سے پہلے اس لفظ کو ثابت کریں
     
  6. ‏فروری 04، 2014 #216
    محمد فیض الابرار

    محمد فیض الابرار سینئر رکن
    جگہ:
    کراچی
    شمولیت:
    ‏جنوری 25، 2012
    پیغامات:
    3,039
    موصول شکریہ جات:
    1,194
    تمغے کے پوائنٹ:
    402

    وضع اصطلاحات کا موضوع الگ عنوان کا متقاضی ہے لیکن میں پھر بھی آپ کی تسلی کے لیے کچھ باتیں لکھ رہا ہوں
    اصطلاحات دراصل اشارے ہیں جو خیالات کے مجموعوں کی طرف ذہن کو فورا منتقل کر دیتے ہیں اور یہ امر واضح ہے کہ جس فن سے متعلقہ اصطلاح سازی کی جا رہی ہے تو اس بات کا خیال رکھا جائے کہ اگر اصل اصطلاح موجود ہو تو اور وہ جامع بھی ہو تو اس کے لیے کسی دوسری اصطلاح کا وضع کرنا شاذ کہلاتا ہے کیونکہ اس سے اصطلاح اول کا نقص اور عیب لازم آتا ہے ۔
    اس اعتبار سے تصوف کا جائزہ لیں تو وہ تمام کیفیات جن کی طرف تصوف میں دعوت دی جاتی ہے ان میں سے اکثریت کا تعلق غیر اسلامی پس منظر سے ہے اور جن اعمال کو تصوف سے موسوم کیا جاتا ہے وہ تمام تعلیمات اسلام میں اخلاقیات کے باب میں بیان کی جاتیں ہیں اس کی دلیل "ریاض الصالحین" ہے۔
    اس حوالے سے مولوی وحید الدین کی کتاب وضع اصطلاحات کا مطالعہ کافی مفید رہے گا اگر ہو سکے تو
     
  7. ‏فروری 04، 2014 #217
    محمد فیض الابرار

    محمد فیض الابرار سینئر رکن
    جگہ:
    کراچی
    شمولیت:
    ‏جنوری 25، 2012
    پیغامات:
    3,039
    موصول شکریہ جات:
    1,194
    تمغے کے پوائنٹ:
    402

    قصہ مختصر جس فن میں اصطلاح وضع کرنی ہو نئی اصطلاح اس فن کی بنیادی روح اور تعلیمات سے تصادم نہ ہو
     
  8. ‏فروری 04، 2014 #218
    محمد فیض الابرار

    محمد فیض الابرار سینئر رکن
    جگہ:
    کراچی
    شمولیت:
    ‏جنوری 25، 2012
    پیغامات:
    3,039
    موصول شکریہ جات:
    1,194
    تمغے کے پوائنٹ:
    402

    المعاجم اللغوية وأهميتها في وضع المصطلحات د. ممدوح محمد خسارة
    اس کا بھی مطالعہ کریں
     
  9. ‏فروری 04، 2014 #219
    محمد فیض الابرار

    محمد فیض الابرار سینئر رکن
    جگہ:
    کراچی
    شمولیت:
    ‏جنوری 25، 2012
    پیغامات:
    3,039
    موصول شکریہ جات:
    1,194
    تمغے کے پوائنٹ:
    402

    1) صناعة المعجم وعلم المصطلح
    2) القاسمي، علي. (علم المصطلح) النظرية العامة لوضع المصطلحات وتوحيدها وتوثيقها، اللسان العربي، 1980، المجلد 18، ج1، ص 9-12.

    اور اگر کہیں گے تو مزید بھی حوالے لکھ دوں گا
     
  10. ‏فروری 04، 2014 #220
    محمد فیض الابرار

    محمد فیض الابرار سینئر رکن
    جگہ:
    کراچی
    شمولیت:
    ‏جنوری 25، 2012
    پیغامات:
    3,039
    موصول شکریہ جات:
    1,194
    تمغے کے پوائنٹ:
    402

    علم المصطلح وطرائق وضع المصطلحات في العربية ، المؤلف: ممدوح خسارة
     
لوڈ کرتے ہوئے...

اس صفحے کو مشتہر کریں