1. آئیے اہم اسلامی کتب کو یونیکوڈ میں انٹرنیٹ پر پیش کرنے کے لئے مل جل کر آن لائن ٹائپنگ کریں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ کے ذریعے آپ روزانہ فقط دس پندرہ منٹ ٹائپنگ کر کے ہزاروں صفحات پر مشتمل اہم ترین کتب کو ٹائپ کرنے میں اہم کردار ادا کرکے صدقہ جاریہ میں شامل ہو سکتے ہیں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ میں شمولیت کے لئے یہاں کلک کریں۔
  2. آئیے! مجلس التحقیق الاسلامی کے زیر اہتمام جاری عظیم الشان دعوتی واصلاحی ویب سائٹس کے ساتھ ماہانہ تعاون کریں اور انٹر نیٹ کے میدان میں اسلام کے عالمگیر پیغام کو عام کرنے میں محدث ٹیم کے دست وبازو بنیں ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔

قاتل حسين يزيد نہيں بلکہ کوفي شيعہ ہيں , يزيد بريء ہے

'اہل تشیع' میں موضوعات آغاز کردہ از رفیق طاھر, ‏اپریل 02، 2012۔

  1. ‏جولائی 03، 2012 #21
    Abdulallam

    Abdulallam مبتدی
    شمولیت:
    ‏جون 06، 2012
    پیغامات:
    32
    موصول شکریہ جات:
    62
    تمغے کے پوائنٹ:
    0

    akhir billy thaele se bahar aa hi gai. Mera is forum par maojud tamam ahl-elm se sawal hai k kya wo kifayatullah sahab k is mawqaf se muttafaq hain agar han to main kuch arz karunga.
     
  2. ‏جولائی 03، 2012 #22
    کلیم حیدر

    کلیم حیدر رکن
    جگہ:
    لیہ
    شمولیت:
    ‏فروری 14، 2011
    پیغامات:
    9,403
    موصول شکریہ جات:
    25,973
    تمغے کے پوائنٹ:
    995

    محترم نوید عثمان صاحب آپ سے گزارش ہے کہ اخلاق کے دائرہ میں رہتے ہوئے بادلائل گفتگو کریں۔شکریہ
     
  3. ‏جولائی 03، 2012 #23
    حرب بن شداد

    حرب بن شداد سینئر رکن
    جگہ:
    اُم القرٰی
    شمولیت:
    ‏مئی 13، 2012
    پیغامات:
    2,149
    موصول شکریہ جات:
    6,249
    تمغے کے پوائنٹ:
    437

    صحیح مسلم:جلد سوم:حدیث نمبر 296

    حدثنا عبيد الله بن معاذ العنبري حدثنا أبي حدثنا عاصم وهو ابن محمد بن زيد عن زيد بن محمد عن نافع قال جا عبد الله بن عمر إلی عبد الله بن مطيع حين کان من أمر الحرة ما کان زمن يزيد بن معاوية فقال اطرحوا لأبي عبد الرحمن وسادة فقال إني لم آتک لأجلس أتيتک لأحدثک حديثا سمعت رسول الله صلی الله عليه وسلم يقوله سمعت رسول الله صلی الله عليه وسلم يقول من خلع يدا من طاعة لقي الله يوم القيامة لا حجة له ومن مات وليس في عنقه بيعة مات ميتة جاهلية
    عبیداللہ بن معاذ عنبری، ابن محمد بن زید، زید بن محمد، نافع، عبداللہ بن عمر، حضرت نافع رضی اللہ تعالیٰ عنہ سے روایت ہے کہ ابن عمر رضی اللہ تعالیٰ عنہ واقعہ حرہ کے وقت جو یزید بن معاویہ کے دور حکومت میں ہوا عبداللہ بن مطیع کے پاس آئے تو ابن مطیع نے کہا ابوعبدالرحمن کے لئے غالیچہ بچھاؤ تو ابن عمر رضی اللہ تعالیٰ عنہ نے کہا میں آپ کے پاس بیٹھنے کے لئے نہیں آیا میں تو آپ کے پاس اس لئے آیا ہوں کہ آپ کو ایسی حدیث بیان کروں جو میں نے رسول اللہ سے سنی آپ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا جس نے اطاعت امیر سے ہاتھ نکال لیا تو وہ قیامت کے دن اللہ سے اس حال میں ملاقات کرے گا کہ اسکے پاس کوئی دلیل نہ ہوگی اور جو اس حال میں مرا کہ اسکی گردن میں کسی کی بیعت نہ تھی وہ جاہلیت کی موت مرا۔
     
  4. ‏جولائی 03، 2012 #24
    حرب بن شداد

    حرب بن شداد سینئر رکن
    جگہ:
    اُم القرٰی
    شمولیت:
    ‏مئی 13، 2012
    پیغامات:
    2,149
    موصول شکریہ جات:
    6,249
    تمغے کے پوائنٹ:
    437

    حدثنا موسیٰ بن إسماعيل حدثنا أبو عوانة عن أبي بشر عن يوسف بن ماهک قال کان مروان علی الحجاز استعمله معاوية فخطب فجعل يذکر يزيد بن معاوية لکي يبايع له بعد أبيه فقال له عبد الرحمن بن أبي بکر شيئا فقال خذوه فدخل بيت عائشة فلم يقدروا فقال مروان إن هذا الذي أنزل الله فيه والذي قال لوالديه أف لکما أتعدانني فقالت عائشة من ورائ الحجاب ما أنزل الله فينا شيئا من القرآن إلا أن الله أنزل عذري
    صحیح بخاری:جلد دوم:حدیث نمبر 1972
    موسی بن اسماعیل، ابوعوانہ، ابوبشر، یوسف بن ماہک سے روایت کرتے ہیں انہوں نے بیان کیا کہ مروان حجاز کا حاکم تھا جس کو حضرت معاویہ رضی اللہ تعالیٰ عنہ نے مقرر کیا تھا اس نے خطبہ پڑھا تو یزید بن معاویہ کا ذکر کرنے لگا تاکہ (معاویہ رضی اللہ تعالیٰ عنہ) کے بعد اس کی بیعت کی جائے تو عبدالرحمن بن ابی بکر نے اس سے کچھ کہا مروان نے کہا ان کو پکڑ و وہ حضرت عائشہ رضی اللہ تعالیٰ عنہا کے گھر میں گھس گئے اور یہ لوگ انہیں نہ پکڑ سکے مروان نے کہا کہ یہی وہ شخص ہے جس کے بارے میں اللہ تعالیٰ نے آیت (وَالَّذِيْ قَالَ لِوَالِدَيْهِ اُفٍّ لَّكُمَا اَتَعِدٰنِنِيْ ۔ الخ) 46۔ الأحقاف : 17) نازل فرمائی حضرت عائشہ رضی اللہ تعالیٰ عنہا نے پردے کے پیچھے سے جواب دیا کہ اللہ تعالیٰ نے ہمارے متعلق کوئی آیت نازل نہیں فرمائی بجز اس کے جو اللہ تعالیٰ نے میری برات میں نازل فرمائی۔ (آیت) ترجمہ پس جب انہوں نے اس کو اپنی وادیوں کے آگے آتا ہوا دیکھا تو کہنے لگے یہی بادل ہے جو ہم پر بارش برسائے گا بلکہ یہ وہ چیز ہے جس کی تم جلدی مچاتے تھے یعنی ہوا جس میں درد ناک عذاب ہے۔ ابن عباس رضی اللہ تعالیٰ عنہ نے کہا کہ " عارض" سے مراد بدلی ہے۔

    کہ اپنی اولاد کو خلیفہ بنانا قیصر وکسری کی سنت ہے
    یہ الفاظ اس روایت میں کہاں ہے عربی متن اوپر موجود ہے... جواب کا انتظار رہے گا؟؟؟....
    اور فاش غلطی ان اضافی الفاظوں میں کے قیصر وکسری کے عمل کو سنت سے تعبیر کیا جارہا ہے...
     
  5. ‏جولائی 03، 2012 #25
    lovelyalltime

    lovelyalltime سینئر رکن
    جگہ:
    سعودی عرب
    شمولیت:
    ‏مارچ 28، 2012
    پیغامات:
    3,735
    موصول شکریہ جات:
    2,842
    تمغے کے پوائنٹ:
    436


    پلیز آپ یہ بتا دیں کہ عبدالرحمن بن ابی بکر نے اس سے کچھ کہا کا کیا مطلب ہے ۔ جو وہ حضرت عائشہ راضی اللہ کے گھر جا کر گھسے
     
  6. ‏جولائی 04، 2012 #26
    حرب بن شداد

    حرب بن شداد سینئر رکن
    جگہ:
    اُم القرٰی
    شمولیت:
    ‏مئی 13، 2012
    پیغامات:
    2,149
    موصول شکریہ جات:
    6,249
    تمغے کے پوائنٹ:
    437

    مسکراہٹ
     
  7. ‏جولائی 04، 2012 #27
    نوید عثمان

    نوید عثمان رکن
    شمولیت:
    ‏جنوری 24، 2012
    پیغامات:
    181
    موصول شکریہ جات:
    119
    تمغے کے پوائنٹ:
    53

    [
    آپ کے سینے میں جو بغض علی رض و اہل بیت تھا اب وہ کھل کے سامنے آ گیا ہے۔
    آپ اس بات کا جواب ہمارے منہ سے نہ سنیں تو بہتر ہو گا کیونکہ اس فورم پر موجود اکثر کو یہ سچائی ھضم نہیں ہو گی ۔اگر پھر بھی آپ کو جواب چاہیے ہو تو خادم حاضر ہے۔




    باٖغی لوگوں کی سرکوبی کے لئے بھی علی رضی اللہ عنہ کے پاس طاقت تھی لیکن قاتلین عثمان سے قصاص لینے کی قوت نہ تھی۔



    اوریہ بھی کیا انصاف ہے کہ:

    وہ کثیر تعداد کن لوگوں کی تھی کیا ان میں صحابہ کرام بھی تھے مستند حوالہ سے ثابت کریں۔

    لیکن یزیدرحمہ اللہ کی خلافت جسے پوری امت بشمول صحابہ کرام نے تسلیم کرلیا اس سے نہ صرف اختلاف کرنے والے بلکہ اس کے خلاف خروج کرنے والے بھی باغی نہیں ! اور یزید رحمہ اللہ کو کوئی حق نہیں ان کے خلاف کاروائی کرے۔


    اگریزیدرحمہ اللہ کے مخالفین باغی نہیں ہیں۔
    تو علی رضی اللہ عنہ کے مخالفین بھی قطعا باغی نہیں ہیں۔

    نیز

    اگراہل شام کے خلاف کاروائی کرنے میں علی رضی اللہ عنہ حق پرتھے ۔
    تو اہل مدینہ ومکہ کے خلاف کاررائی کرنے میں یزید رحمہ اللہ بھی حق پرتھے ۔[/QUOTE]
    شرم آنی چاہیے کہ خلیفہ راشد کا مقابلہ ایک فاسق و فاجر بادشاہ کے ساتھ کر رہے ہیں اگر دیکھا جائے تو حضرت علی رض اور معاویہ کے درمیان بھی موازنہ نہیں بنتا کیونکہ حضرت علی رض کے جو مناقب و فضائل ہیں ان کے عشر عشیر کو معاویہ پہنچ نہیں سکتے۔ھاتو برھانکم ان کنتم صادقین ۔اب مجھ پہ سستے کفر کے فتوے لگانے کی بجائے دلائل پیش کرنا ۔
     
  8. ‏جولائی 04، 2012 #28
    کلیم حیدر

    کلیم حیدر رکن
    جگہ:
    لیہ
    شمولیت:
    ‏فروری 14، 2011
    پیغامات:
    9,403
    موصول شکریہ جات:
    25,973
    تمغے کے پوائنٹ:
    995

    اب جب آپ کی دفعہ یاد آ ہی گئی ہیں تو اس پر عمل کریں۔والسلام
     
  9. ‏جولائی 04، 2012 #29
    حرب بن شداد

    حرب بن شداد سینئر رکن
    جگہ:
    اُم القرٰی
    شمولیت:
    ‏مئی 13، 2012
    پیغامات:
    2,149
    موصول شکریہ جات:
    6,249
    تمغے کے پوائنٹ:
    437

    چلیں ہم یہ بھی کر لیتے ہیں۔۔۔ یعنی شرم جس کا احساس آپ ہم کو دلا رہے ہیں اور افسوس کے خود اس نعمت سےمحروم ہیں۔۔۔ اب ذرا اس بات کا بھی جواب دے دیں کے امیر معاویہ رضی اللہ تعالٰی عنہ جو کاتب وحی بھی تھے کو آپ نے فاسق وفاجز کن بنیادوں پر اور کیوں کہا؟؟؟۔۔۔ آپ کا یہ الزام لگانے کا دوسرا مقصد کیا ہے؟؟؟۔۔۔ جیسا میں نے کہا کے کاتب وحی۔۔۔ سمجھدار لوگوں کے لئے اشارے کافی ہوتے ہیں۔۔۔ لیکن شرط وہ یہ کے اللہ نے سمجھ دی ہو۔۔۔ چلیں آب آتے ہیں آپ کی بات کی طرف جو آپ نے فرمائیں۔۔۔ یہ بتائیں کے اسلام میں مناقب اور فضائل کی تقسیم کا سلسلہ کیا ہے ؟؟؟۔۔۔ تاکہ آپ کی پیش کی گئی بات پر ہی بات کی جائے۔۔۔ آدھی بات یاد رکھیں ہمیشہ جھوٹ ہوتی ہے یہ ذہن میں رکھئے گا۔۔۔ اب یہ آپ کی ذمہ داری ہے کے بات کو مکمل کیجئے اور اُس الزام سے خودکو بچائیئے جوآپ اندھا دھند دوسروں پرلگاتے چلے آرہے ہیں۔۔۔ویسے ایک کام بڑا ہی زبردست ہورہا ہے ایک عامی جو پہلے رافض اور اہل تشیع کے درمیان فرق کا تعین کرنے میں تذبذب کا شکار تھا اس طرح کی گفتگو نے اس کے ذہن کے اُن بند دریچوں کو کھول کر رکھ دیا ہے یعنی پہلے عام افراد اس طرح کے بحث مباحثوں سے کتراتے تھے مگر اب ظاہر ہے ہر شخص اس بات میں دلچسپی لے رہا ہے کے صدیوں پر محیط جو یہ سازش ہے اس کی وجہ کیا؟؟؟۔۔۔ مملکت خداداد پاکستان میں بہادری کا اعلٰی اورآخری تمغہ نشان حیدر ہی کیوں ہے؟؟؟۔۔۔ چیدہ چیدہ باتوں اور امیجیز سے حق ثابت نہیں ہوا کرتے حق کو ثابت صرف وہی کرسکتا ہے جو خود حق پر ہو۔۔۔ اور جو حق پر ہو اسے حق ثابت کرنے کی ضرورت نہیں۔۔۔ جیسا کے آپ کا شیعہ ہونا ثابت ہوگیا۔۔۔ آپ کے اپنے گفتگو کے ڈھنگ سے۔۔۔ لہذا باقی کا جو حق اور سچ ہے وہ بھی ان شاء اللہ ثابت ہوتا رہے گا۔۔۔
     
  10. ‏جولائی 05، 2012 #30
    نوید عثمان

    نوید عثمان رکن
    شمولیت:
    ‏جنوری 24، 2012
    پیغامات:
    181
    موصول شکریہ جات:
    119
    تمغے کے پوائنٹ:
    53

    اگر ہوش و حواس قائم ہوتےتو میرے پوسٹ کو دھیان سے پڑھتے لیکن لگتا ہے حب بنو امیہ نے ہر چیز سے بے نیاز کر دیا آپ کو ۔ یا آپ کو اردو پڑھنے کا موقع نہیں ملا نہیں تو دوسری کلاس کا طالب علم میری پوسٹ پڑھ کے بتا دیتا کہ اس میں کیا بیان کیا گیا ہے ۔

    آپ نے اپنی سابقہ پوسٹ میں پھول بکھیرے تھے کہ اگریزیدرحمہ اللہ کے مخالفین باغی نہیں ہیں۔
    تو علی رضی اللہ عنہ کے مخالفین بھی قطعا باغی نہیں ہیں۔


    اگراہل شام کے خلاف کاروائی کرنے میں علی رضی اللہ عنہ حق پرتھے ۔
    تو اہل مدینہ ومکہ کے خلاف کاررائی کرنے میں یزید رحمہ اللہ بھی حق پرتھے
    اس بات کو جواب آپ کو دیا ہے کہ آپ یزید جیسے فاسق و فاجر جس پر امت کا اجماع ہے کا موازنہ خلیفہ راشد سے کر رہے ہو


    تھوڑی سی اردو سیکھیں فائدے مند رہے گی۔
    کاتب وحی تو بہت سارے لوگ تھے تو کیا ان کو سب کھلی چھٹی تھی وہ جو چاہے کرتے؟؟ ویسے بھی ایک شخص فتح مکہ کے بعد مسلمان ہوا اور اس کے بعد کتنی کی وحی نازل ہوئی ہے جس کی کتابت معاویہ نے کی۔اس سے پہلے کی ساری نازل شدہ وحی بھی لکھی جا چکی تھی۔


    گا۔۔۔[/QUOTE]
    میں نے کوئی آدھی بات نہیں کی اگر کی ہے تو سامنے لائیں اور دوسری بات اپنے منہ سے میاں مٹھو بننے سے کوئی حق پر نہیں ہو سکتا بلکہ حق پر وہ ہے جو قران و سنت کے مطابق حق پر ہے۔۔۔۔میں تو شیعہ نہیں ہوں ۔ میں تو اللہ کی رحمت سے اہل حدیث ہوں کوئی مانے نہ مانے کون سا کسی نے میرے حصے کا حساب دینا ہیے
    آپ پوسٹ لکھتے وقت بہت الجھن کا شکار تھے ایسا محسوس ہوتا ہے کیونکہ آپ نے لکھا ہے کہ حق کو ثابت صرف وہی کرسکتا ہے جو خود حق پر ہو۔۔۔ اور جو حق پر ہو اسے حق ثابت کرنے کی ضرورت نہیں۔ اس عبارت کا کوئی آسان سا اردر ترجمہ کر کے بتا دیں کہ آپ کیا کہنا چاہتے ہیں۔
     
لوڈ کرتے ہوئے...

اس صفحے کو مشتہر کریں