1. آئیے اہم اسلامی کتب کو یونیکوڈ میں انٹرنیٹ پر پیش کرنے کے لئے مل جل کر آن لائن ٹائپنگ کریں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ کے ذریعے آپ روزانہ فقط دس پندرہ منٹ ٹائپنگ کر کے ہزاروں صفحات پر مشتمل اہم ترین کتب کو ٹائپ کرنے میں اہم کردار ادا کرکے صدقہ جاریہ میں شامل ہو سکتے ہیں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ میں شمولیت کے لئے یہاں کلک کریں۔
  2. آئیے! مجلس التحقیق الاسلامی کے زیر اہتمام جاری عظیم الشان دعوتی واصلاحی ویب سائٹس کے ساتھ ماہانہ تعاون کریں اور انٹر نیٹ کے میدان میں اسلام کے عالمگیر پیغام کو عام کرنے میں محدث ٹیم کے دست وبازو بنیں ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔

لغت میں درست کے معنی کا انتخاب کیسے کیا جائے ۔جواب درکار ہے

'ڈکشنری' میں موضوعات آغاز کردہ از ابن قدامہ, ‏ستمبر 02، 2015۔

  1. ‏ستمبر 02، 2015 #1
    ابن قدامہ

    ابن قدامہ مشہور رکن
    جگہ:
    درب التبانة
    شمولیت:
    ‏جنوری 25، 2014
    پیغامات:
    1,772
    موصول شکریہ جات:
    421
    تمغے کے پوائنٹ:
    198

    سوال؛ لغت ( القاموس الوحید) میں ایک لفظ کے کئی معنی ہوتے ہیں ۔اس میں کے درست معنی کا تعین کیسے کرؤ ۔جواب آسن فہم انداز میں درکار ہے
    مثلا ضرب کے کئی معنی ہیں
    [​IMG]
     
  2. ‏ستمبر 02، 2015 #2
    ابن قدامہ

    ابن قدامہ مشہور رکن
    جگہ:
    درب التبانة
    شمولیت:
    ‏جنوری 25، 2014
    پیغامات:
    1,772
    موصول شکریہ جات:
    421
    تمغے کے پوائنٹ:
    198

  3. ‏ستمبر 04، 2015 #3
    جوش

    جوش مشہور رکن
    شمولیت:
    ‏جون 17، 2014
    پیغامات:
    621
    موصول شکریہ جات:
    307
    تمغے کے پوائنٹ:
    127

    میرے بھائی ۔ ضرب ۔ کے مختلف معانی صلات کے بدلنے کی وجہ سے ہیں مثلا ضرب زید بکرا۔یہاں بّغیر صلہ کے ہے تو یہاں ۔مارنا۔کے معنی میں ہوگا۔اسی طرح ۔ضرب مثلا۔یہاں مثال بیان کرنا کے معنی میں ہے بہر حال صلات کے بدلنے سے معنی بدل جائیگا ۔آپ لغت کھول کر عبارت کے سیاق و سباق کو دیکھیں جو معنی موافق ہو اسے لے لیں ،عربی زبان میں صلات کا سمجھنا بہت ضروری ہے ۔اسی طرح حروف جر کے متعدد معانی آتے ہیں یہ معانی شرح ماۃ عامل میں تفصیل سے موجود ہیں اسے مطالعہ میں رکھیں اور کوشش کریں انشاءاللہ مسئلہ حل ہوجائیگا۔بارک اللہ فیک ۔
     
    • پسند پسند x 2
    • متفق متفق x 1
    • علمی علمی x 1
    • لسٹ
  4. ‏ستمبر 04، 2015 #4
    اسحاق سلفی

    اسحاق سلفی فعال رکن رکن انتظامیہ
    جگہ:
    اٹک ، پاکستان
    شمولیت:
    ‏اگست 25، 2014
    پیغامات:
    6,372
    موصول شکریہ جات:
    2,398
    تمغے کے پوائنٹ:
    791

    السلام علیکم:
    اگر وقت ہو تو اس موضوع پر مزید تفصیل ،اور امثلہ پیش کریں ۔
    جزاکم اللہ تعالی خیرا
    ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
    مثلاً
    (جبر)
    جبرا وجبورا صلح يُقَال جبر الْعظم الكسير وجبر الْفَقِير واليتيم والعظم الكسير جبرا وجبورا وجبارة أصلحه وَوضع عَلَيْهِ الْجَبِيرَة وَيُقَال جبر عظمه أصلح شؤونه وَعطف عَلَيْهِ وجبر الْفَقِير واليتيم كَفاهُ حَاجته
    وَفِي حَدِيث الدُّعَاء (اللَّهُمَّ اجبرني واهدني)
    وَيُقَال جبر مَا فَقده عوضه وَالْأَمر جبرا أصلحه وَقَومه وَدفع عَنهُ وَفُلَانًا على الْأَمر قهره عَلَيْهِ وأكرهه
    (أجْبرهُ) على الْأَمر جبره وَفُلَانًا نسبه إِلَى مَذْهَب الجبرية
    (جبر) الْعظم جبره
    (اجتبر) الْعظم جبر والعظم جبره وَيُقَال اجتبر فلَان غَنِي بعد فقر وانتعش
    (انجبر) الْعظم جبر وَيُقَال انجبر الْفَقِير واليتيم
    (تجبر) تكبر والعظم الكسير وَالْفَقِير واليتيم جبر وَالشَّيْء أَخذ فِي سَبِيل صَلَاحه يُقَال تجبر النبت وَالشَّجر أَخذ يخضر بعد يبس وتجبر الْكلأ أَخذ يَنْمُو بعد أَن أَكلته الْمَاشِيَة وتجبر الْمَرِيض صلحت حَاله وَفُلَان عَاد إِلَيْهِ من مَاله بعض مَا ذهب وَالرجل مَالا أَصَابَهُ
    (استجبر) الْفَقِير صلحت حَاله بِالْإِحْسَانِ إِلَيْهِ وَفُلَانًا بَالغ فِي تعهده بِالْإِحْسَانِ إِلَيْهِ وَإِصْلَاح حَاله
    (التجبار) التكبر
    (الْجَبَّار) الهدر وَهُوَ مَا لَا قصاص فِيهِ وَلَا غرم يُقَال ذهب دَمه جبارا وَيُقَال حَرْب جَبَّار لَا دِيَة فِيهَا وَلَا قصاص والبريء يُقَال أَنا مِنْهُ جَبَّار وَاسم يَوْم الثُّلَاثَاء فِي الْجَاهِلِيَّة
    (الجبارة) حِرْفَة الْمُجبر وَمَا يشد على الْعظم المكسور لينجبر (ج) جبائر
    (الْجَبَّار) من أَسْمَائِهِ تَعَالَى والمتكبر والقاهر العاتي المتسلط وَيُقَال قلب جَبَّار لَا تدخله الرَّحْمَة وَلَا يقبل الموعظة (ج) جبابرة وَالنَّخْل يطول ويفوت الْيَد
    (الجبير) الشَّديد التجبر
    (الْجَبْر) الشجاع وَالْعود تجبر بِهِ الْعِظَام (ج) جَبَّار وَمذهب الْجَبْر مَذْهَب يرى أَصْحَابه أَن الْعباد مَجْبُورُونَ على أفعالهم لَا اخْتِيَار لَهُم فِيهَا وَعلم الْجَبْر فرع من فروع الرياضة يقوم على إحلال الرموز مَحل الْأَعْدَاد المجهولة أَو المعدومه (مج)
    (الجبري) التسعير الجبري أَن تحدد الدولة بِمَا لَهَا من السُّلْطَان ثمنا رسميا للسلع لَا يجوز للْبَائِع أَن يتعداه (وَهُوَ مَنْسُوب إِلَى الْجَبْر بِمَعْنى الْإِكْرَاه) (مج)
    (الجبرياء) الْكِبْرِيَاء
     
    Last edited: ‏اگست 20، 2018
    • شکریہ شکریہ x 1
    • پسند پسند x 1
    • لسٹ
  5. ‏ستمبر 04، 2015 #5
    جوش

    جوش مشہور رکن
    شمولیت:
    ‏جون 17، 2014
    پیغامات:
    621
    موصول شکریہ جات:
    307
    تمغے کے پوائنٹ:
    127

    محترم سلفی صاحب آپ تو خود ماہر لغت ہیں اور ۔جبر۔ کے مختلف مشتقات اور انکے معانی کا تذکرہ کردیا ہے ،اب اس سے زیادہ میں تو نہیں بتا سکتا۔البتہ جس طرح آپ نے عربی میں معانی لکھا ہے اسی طرح اردو میں بھی لکھ دیجئے تاکہ سب کو معلوم ہوجاے جزاک اللہ ۔
     
    • پسند پسند x 1
    • متفق متفق x 1
    • لسٹ
  6. ‏اگست 20، 2018 #6
    محمد فیض الابرار

    محمد فیض الابرار سینئر رکن
    جگہ:
    کراچی
    شمولیت:
    ‏جنوری 25، 2012
    پیغامات:
    3,036
    موصول شکریہ جات:
    1,194
    تمغے کے پوائنٹ:
    402

    عربی زبان میں افعال کو سمجھنے کے لیے اگر دو یا تین بنیادی باتوں کو سمجھ لیا جائے تو عربی لغات و کلمات کا سمجھنا بہت آسان ہو جاتا ہے
    اول : فعل مجرد و مزید کے اوزان کے ابتدائی و بنیادی خواص (تمام خواص سمجھنا تو نا ممکن ہے لیکن ابتدائی چند سمجھ لیے جائیں مثال کے طور پر فعل مجرد نصر اور مزید ناصر ، تناصر میں فرق باعتبار اوزان سمجھ لیا جائے تو ان اوزان کے تمام افعال کے مفاہیم آسان ہو جائیں گے )
    دوم : افعال کے ساتھ حروف جارہ کا استعمال یعنی حروف جارہ کے استعمالات سمجھ لیے جائیں کیونکہ یہ جب افعال کے ساتھ استعمال ہوتے ہیں تو مکمل مفہوم بدل دیتے ہیں جیسا
    دعا : پکارنا، دعا علیہ : بددعا کرنا، دعا لہ : دعا ئے خیر کرنا (و قس علی ھذا)
    سوم : لازم و متعدی کی بحث کو سمجھ لیا جائے
    ان تین امور کے سمجھنے سے افعال و مفردات کی فہم بہت آسان ہو جاتی ہے گو کہ بسا اوقات اسماء بھی مشکل میں ڈال دیتے ہیں جیسا
    نفاق: منافقت، نفق: سرنگ، انفاق: اللہ کی راہ میں خرچ کرنا (ان تینوں کی اصل ن ف ق ہے )
     
    • پسند پسند x 2
    • زبردست زبردست x 1
    • مفید مفید x 1
    • لسٹ
  7. ‏اگست 20، 2018 #7
    محمد فیض الابرار

    محمد فیض الابرار سینئر رکن
    جگہ:
    کراچی
    شمولیت:
    ‏جنوری 25، 2012
    پیغامات:
    3,036
    موصول شکریہ جات:
    1,194
    تمغے کے پوائنٹ:
    402

    اگر عربی زبان آتی ہے تو سب سے بہترین عربی لغت جو لا جواب ہے جس کا کوئی مثیل نہیں وہ معجم المقاییس فی اللغۃ لابن الفارس ہے
     
    • پسند پسند x 3
    • مفید مفید x 1
    • لسٹ
لوڈ کرتے ہوئے...

اس صفحے کو مشتہر کریں