1. آئیے اہم اسلامی کتب کو یونیکوڈ میں انٹرنیٹ پر پیش کرنے کے لئے مل جل کر آن لائن ٹائپنگ کریں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ کے ذریعے آپ روزانہ فقط دس پندرہ منٹ ٹائپنگ کر کے ہزاروں صفحات پر مشتمل اہم ترین کتب کو ٹائپ کرنے میں اہم کردار ادا کرکے صدقہ جاریہ میں شامل ہو سکتے ہیں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ میں شمولیت کے لئے یہاں کلک کریں۔
  2. آئیے! مجلس التحقیق الاسلامی کے زیر اہتمام جاری عظیم الشان دعوتی واصلاحی ویب سائٹس کے ساتھ ماہانہ تعاون کریں اور انٹر نیٹ کے میدان میں اسلام کے عالمگیر پیغام کو عام کرنے میں محدث ٹیم کے دست وبازو بنیں ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔

ما مصدریہ ظرفیہ اور غیر ظرفیہ میں فرق کرنے کا ذریعہ

'عربی سیکھیں' میں موضوعات آغاز کردہ از ابو جماز, ‏جنوری 18، 2015۔

  1. ‏جنوری 27، 2015 #11
    جوش

    جوش مشہور رکن
    شمولیت:
    ‏جون 17، 2014
    پیغامات:
    620
    موصول شکریہ جات:
    307
    تمغے کے پوائنٹ:
    127

    سورۃ المزمل میں ،، واصبرعلی ما یقولون۔۔میں ۔ما موصولہ ہے اور۔یقولون۔ اس کا صلہ۔اصل عبارت یوں ہوگی ۔ما یقولونہ۔۔ ہ ضمیر محذوف ما کیطرف لوٹے گی۔ اور معنی ہوگا ۔ اور تم صبر کرو ان باتوں پر جسکو وہ لوگ کہتے ہیں۔ اب یہاں آپ ما کو مصدریہ بھی مان سکتے ہیں۔ پہر عبارت یوں ہوگی۔۔واصبر علی قولھم۔،،،کبھی کبھار ایسا ہوتا ہے کہ مصدریہ ہونے کے ساتھ ساتھ اس میں وقت ملحوظ ہوتا ہےاس وقت اسے مصدریہ ظرفیہ کہتے ہیں جیسے۔اوصانی بالصلوۃ والزکوۃما دمت حیا۔یعنی مدۃ دوامی حیا۔ ھذا ما عندی واللہ اعلم بالصواب۔
     
  2. ‏جنوری 27، 2015 #12
    جوش

    جوش مشہور رکن
    شمولیت:
    ‏جون 17، 2014
    پیغامات:
    620
    موصول شکریہ جات:
    307
    تمغے کے پوائنٹ:
    127

    عربی قواعد الگ ہیں اور انگریزی قواعد الگ دونوں کا ایک دوسرے سے کویی تعلق نہیں اسلیے عربی قواعد سمجھاتے وقت انگریزی قواعد کا سہارا لینا درست نہیں ۔ پہلے خود اچھی طرح سمجھ لیں پہر سمجھاییں گے تو اچھا رہے گا ، ورنہ ادھر ادھر بھٹکنے سے کویی فایدہ نہ ہوگا ۔
     
لوڈ کرتے ہوئے...

اس صفحے کو مشتہر کریں