1. آئیے اہم اسلامی کتب کو یونیکوڈ میں انٹرنیٹ پر پیش کرنے کے لئے مل جل کر آن لائن ٹائپنگ کریں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ کے ذریعے آپ روزانہ فقط دس پندرہ منٹ ٹائپنگ کر کے ہزاروں صفحات پر مشتمل اہم ترین کتب کو ٹائپ کرنے میں اہم کردار ادا کرکے صدقہ جاریہ میں شامل ہو سکتے ہیں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ میں شمولیت کے لئے یہاں کلک کریں۔
  2. آئیے! مجلس التحقیق الاسلامی کے زیر اہتمام جاری عظیم الشان دعوتی واصلاحی ویب سائٹس کے ساتھ ماہانہ تعاون کریں اور انٹر نیٹ کے میدان میں اسلام کے عالمگیر پیغام کو عام کرنے میں محدث ٹیم کے دست وبازو بنیں ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔

محترم حافظ زبیر صاحب کی ایک فکر

'امت مسلمہ کے فکری مسائل' میں موضوعات آغاز کردہ از محمد فیض الابرار, ‏دسمبر 01، 2016۔

  1. ‏دسمبر 04، 2016 #21
    خضر حیات

    خضر حیات علمی نگران رکن انتظامیہ
    جگہ:
    طابہ
    شمولیت:
    ‏اپریل 14، 2011
    پیغامات:
    8,769
    موصول شکریہ جات:
    8,334
    تمغے کے پوائنٹ:
    964

    شیخ آپ کی سوچ بہترین ہے ۔ لیکن میں اس معاملے کو اس نظر سے نہیں دیکھتا ۔
    جس فکر پر ہزاروں صفحات بیسیوں علماء لکھ چکے ہیں . اس پر کسی ایک لکھاری کی ایک سطری تحریر کچھ نہیں بگاڑ سکتی ... إن شاءاللہ ۔
    اگر منہج و مسلک اہل حدیث کی روح کو سمجھ لیا جائے ، تو ایسی چیزیں اپنی حیثیت سے زیادہ خطر ناک نظر نہیں آتیں ، کسی ایک عالم دین کی تحریر سے وہی غلط فہمی میں مبتلا ہوں گے ، جو مسلک کا انحصار کسی ایک پر سمجھتے ہیں ، جو دیگر علماء کو پڑھتے ہیں ، وہ حقیقت سے آشنا ہوتے ہیں ۔
    اہل بدعت استعمال کرکے دیکھ لیں ، جس طرح ہم پہلے بہت سی باتوں کا اصولی جواب دے لیتے ہیں ، اس کا بھی دے سکتے ہیں ۔
     
  2. ‏دسمبر 04، 2016 #22
    ابن عثمان

    ابن عثمان رکن
    شمولیت:
    ‏نومبر 27، 2014
    پیغامات:
    221
    موصول شکریہ جات:
    59
    تمغے کے پوائنٹ:
    49

    محترم شیخ ۔ مضمون میں سب کچھ موجود ہے ۔
    آپ کچھ جملوں کا اثر لے کر ایک ہی طرف میں سوچ رہے ہیں۔ ورنہ آپ خود پہلی قسم سے ہیں ۔اور آپ نے اختلاف کے باوجود خود عملاََ اس کا اظہار کیا ہے ۔دوسری قسم کے حضرات کے بارے میں۔
    دوسری قسم کی مثال میں کچھ اس سے ملتی جلتی بات ہی موجود ہے ۔
     
  3. ‏دسمبر 04، 2016 #23
    محمد فیض الابرار

    محمد فیض الابرار سینئر رکن
    جگہ:
    کراچی
    شمولیت:
    ‏جنوری 25، 2012
    پیغامات:
    3,036
    موصول شکریہ جات:
    1,194
    تمغے کے پوائنٹ:
    402

    میں تنظیم اسلامی سے بخوبی واقف ہوں کہ ڈاکٹر اسرار رحمہ اللہ سے میری ذاتی ملاقاتیں ہیں اور مزید اس حلقے میں بہت سے ساتھیوں کو جانتا ہوں مشاہدات بھی اور تجربات بھی ہیں اس لیے یہ ایک حنفی الفکر تنظیم ہے تمام تر قرآن فہمی کے باوجود کتاب و سنت کے حقیقی منھج سے انحراف ہے
    باقی رہی مفتی تقی عثمانی حفطہ اللہ کی بات تو شاید آپ نے صرف سنا ہوا ہے میری ان سے ملاقات بھی ہے اور ایک ملاقات میں ان کے صاحبزادے بھی تھے وہ الگ قصہ ہے پھر سہی لیکن سر دست اس تقسیم کی بنیاد اس مضمون میں موجود نہیں ہے
    میں وسعت قلبی اور وسعت ظرفی دونوں کا قولی و عملی قایل ہوں لیکن اس صورت میں قطعی نہیں
    اپنی اصل نہیں ترک کرنی
    اپنی اصل کے تعارف کو تبدیل نہیں کرنا
    اپنی اصل کے ساتھ قولی و عملی ربط رکھنا
    میرے اس تبصرے سے یہ نہ سمجھا جایے کہ میں حافظ زبیر صاحب کا احترام نہیں کرتا
    ایسا نہیں میرے حلقہ احباب میں ہندو ، قادیانی ، یہودی، شیعہ وغیرہ بھی ہیں اور ان سے ملاقات کے اصول و ضوابط ہیں لیکن وہ سب جانتے ہیں کہ میں کون ہوں اور کیا ہوں اور میں حافظ زبیر صاحب کے بارے میں یہی حسن ظن رکھتا ہوں الحمدللہ
     
  4. ‏دسمبر 04، 2016 #24
    محمد فیض الابرار

    محمد فیض الابرار سینئر رکن
    جگہ:
    کراچی
    شمولیت:
    ‏جنوری 25، 2012
    پیغامات:
    3,036
    موصول شکریہ جات:
    1,194
    تمغے کے پوائنٹ:
    402

    ابن عثمان بھایی افراد میں عیب کو مسلک کے ساتھ نہ جوڑیں
    میں مانتا ہوں کہ ایسا ہے لیکن مسلک وہی ہے جو قرون اولی میں تھا وہی آج بھی ہے جس رویہ کی طرف آپ اشارہ کر رہے ہیں وہ رویہ تو قرون اولی میں بھی تھا تو پھر آپ کیا کہیں گے ؟
     
  5. ‏دسمبر 04، 2016 #25
    ابن عثمان

    ابن عثمان رکن
    شمولیت:
    ‏نومبر 27، 2014
    پیغامات:
    221
    موصول شکریہ جات:
    59
    تمغے کے پوائنٹ:
    49

    مجھے تو جو نظر آتا ہے ۔۔۔وہ یہی ہے کہ۔۔۔۔۔ انہوں نے بس تشدد یا سختی اور وہ بھی تدریجاََ ہونا ۔۔۔ذکر کیا ہے ۔
    فکری اہل حدیث کوئی اٹل قرآن و حدیث کی اصطلاح نہیں ہے۔۔اقسام میں بیشک نہ تقسیم کریں ۔ بس ان کے نزدیک جو متشدد یا سخت ہے ۔وہ فکری نہیں ہے ۔
     
  6. ‏دسمبر 04، 2016 #26
    محمد فیض الابرار

    محمد فیض الابرار سینئر رکن
    جگہ:
    کراچی
    شمولیت:
    ‏جنوری 25، 2012
    پیغامات:
    3,036
    موصول شکریہ جات:
    1,194
    تمغے کے پوائنٹ:
    402

    بالکل اگر عیوب کی نشاندہی کی جایے تو یہ ایک مستحسن امر ہے
     
  7. ‏دسمبر 04، 2016 #27
    رحمانی

    رحمانی رکن
    شمولیت:
    ‏اکتوبر 13، 2015
    پیغامات:
    382
    موصول شکریہ جات:
    102
    تمغے کے پوائنٹ:
    77

     
  8. ‏دسمبر 05، 2016 #28
    محمد فیض الابرار

    محمد فیض الابرار سینئر رکن
    جگہ:
    کراچی
    شمولیت:
    ‏جنوری 25، 2012
    پیغامات:
    3,036
    موصول شکریہ جات:
    1,194
    تمغے کے پوائنٹ:
    402

    جی جب رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کے یہود سے تعلقات تھے جو دعوت دین اور دینی خیر خواہی کی بنیاد پر تھے تو اب کویی کیوں نہیں رکھ سکتا
     
  9. ‏دسمبر 05، 2016 #29
    رحمانی

    رحمانی رکن
    شمولیت:
    ‏اکتوبر 13، 2015
    پیغامات:
    382
    موصول شکریہ جات:
    102
    تمغے کے پوائنٹ:
    77

    میرا یہ مطلب نہیں تھا،میں تو صرف یہ جانناچاہتاتھاکہ پاکستان میں کوئی یہودی بھی موجود ہےاپنی یہودیت کی شناخت کے ساتھ،نیٹ پر تو کسی کے بھی کسی بھی فرقے سے تعلق ہوسکتے ہیں، میں توصرف یہی جانناچاہتاہوں کہ کیاپاکستان میں کوئی یہودی اپنی یہودی شناخت کے ساتھ موجود ہے؟
     
  10. ‏دسمبر 05، 2016 #30
    محمد فیض الابرار

    محمد فیض الابرار سینئر رکن
    جگہ:
    کراچی
    شمولیت:
    ‏جنوری 25، 2012
    پیغامات:
    3,036
    موصول شکریہ جات:
    1,194
    تمغے کے پوائنٹ:
    402

    ویسے تو آپ کو پاس حق ہے کسی بھی بات کو پسند کرنے اور نہ کرنے کا لیکن کیا یہ پوچھ سکتا ہوں کہ اس میں ایسی کیا بات ہے جو درست نہیں ہے ؟
     
لوڈ کرتے ہوئے...

اس صفحے کو مشتہر کریں