1. آئیے اہم اسلامی کتب کو یونیکوڈ میں انٹرنیٹ پر پیش کرنے کے لئے مل جل کر آن لائن ٹائپنگ کریں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ کے ذریعے آپ روزانہ فقط دس پندرہ منٹ ٹائپنگ کر کے ہزاروں صفحات پر مشتمل اہم ترین کتب کو ٹائپ کرنے میں اہم کردار ادا کرکے صدقہ جاریہ میں شامل ہو سکتے ہیں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ میں شمولیت کے لئے یہاں کلک کریں۔۔
  2. محدث ٹیم منہج سلف پر لکھی گئی کتبِ فتاویٰ کو یونیکوڈائز کروانے کا خیال رکھتی ہے، اور الحمدللہ اس پر کام شروع بھی کرایا جا چکا ہے۔ اور پھر ان تمام کتب فتاویٰ کو محدث فتویٰ سائٹ پہ اپلوڈ بھی کردیا جائے گا۔ اس صدقہ جاریہ میں محدث ٹیم کے ساتھ تعاون کیجیے! ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔ ۔

مذاہب اربعہ کا دنیا میں تناسب

'فقہ' میں موضوعات آغاز کردہ از عبدالرحمن بھٹی, ‏مارچ 22، 2016۔

  1. ‏نومبر 21، 2016 #151
    حافظ محمد یونس اثری

    حافظ محمد یونس اثری رکن
    جگہ:
    کراچی
    شمولیت:
    ‏جولائی 07، 2014
    پیغامات:
    150
    موصول شکریہ جات:
    48
    تمغے کے پوائنٹ:
    77

    آپ کو لکھ کر مجبوری کا اظہار کرنے کی ضرورت نہیں آپ کی مجبوری کا اندازہ آپ کی پوسٹس سے ہورہا ہے۔ اور صلاحیت کا تو ویسے ہی معلوم ہے۔
     
  2. ‏نومبر 21، 2016 #152
    حافظ محمد یونس اثری

    حافظ محمد یونس اثری رکن
    جگہ:
    کراچی
    شمولیت:
    ‏جولائی 07، 2014
    پیغامات:
    150
    موصول شکریہ جات:
    48
    تمغے کے پوائنٹ:
    77

    آمین یہ دعا اگرچہ آپ نے طنزاً کہی ہے لیکن حقیقت یہ ہے کہ بندہ اس دعا کا ہر حال محتاج کیونکہ ’’ عقل نہیں تے موجاں ہی موجاں ‘‘ جیسا کہ آپ کررہے ہیں۔
    لیکن جناب یہ میرے اعتراض کا جواب نہیں پہلے تو آپ آئیں بائیں شائیں کررہے تھے اب اس سے بھی گئے!!
     
    • شکریہ شکریہ x 1
    • متفق متفق x 1
    • لسٹ
  3. ‏نومبر 21، 2016 #153
    عبدالرحمن بھٹی

    عبدالرحمن بھٹی مشہور رکن
    جگہ:
    فی الارض
    شمولیت:
    ‏ستمبر 13، 2015
    پیغامات:
    2,435
    موصول شکریہ جات:
    281
    تمغے کے پوائنٹ:
    165

    جناب محدث فورم تے جیڑی بھی دلیل میں دتی اوہو قرآن تے حدیث توں ای دتی۔
    میں نے محدث فورم پر جو بھی دلائل دیئے قرآن و حدیث ہی سے دیئے۔
    جبکہ ”حدیث“ کے ٹھیکیدار اقوال پیش کرتے ہیں، بات کو گھماتے ہیں اور قع آن ان سے ”اہلِ قرآن“ نے چھین لیا ہے۔
     
  4. ‏نومبر 21، 2016 #154
    حافظ محمد یونس اثری

    حافظ محمد یونس اثری رکن
    جگہ:
    کراچی
    شمولیت:
    ‏جولائی 07، 2014
    پیغامات:
    150
    موصول شکریہ جات:
    48
    تمغے کے پوائنٹ:
    77

    جوبھی مراد لیں برابر سب کے لئے یا مختلف؟؟
    اللہ تعالیٰ فرماتا ہے : فاسئلوا اھل الذکر ان کنتم لا تعلمون اس آیت پر عمل کرے گا۔جوکہ تقلید نہیں ہے۔ بلکہ اس کی ضد ہے۔
    بہت نوازش اگر کہیں بھی تو خیال یہ رکھئے گا کہ مدلل ہو اور خلطِ مبحث نہ ہو۔ اور جس طرف ابھی بات جارہی ہے اصل تھریڈ کے موضود سے بہت دور چلی گئی ہے۔
     
    • شکریہ شکریہ x 1
    • غیرمتفق غیرمتفق x 1
    • لسٹ
  5. ‏نومبر 21، 2016 #155
    عبدالرحمن بھٹی

    عبدالرحمن بھٹی مشہور رکن
    جگہ:
    فی الارض
    شمولیت:
    ‏ستمبر 13، 2015
    پیغامات:
    2,435
    موصول شکریہ جات:
    281
    تمغے کے پوائنٹ:
    165

    خیر کوئی بات نہیں۔
     
  6. ‏نومبر 21، 2016 #156
    عبدالرحمن بھٹی

    عبدالرحمن بھٹی مشہور رکن
    جگہ:
    فی الارض
    شمولیت:
    ‏ستمبر 13، 2015
    پیغامات:
    2,435
    موصول شکریہ جات:
    281
    تمغے کے پوائنٹ:
    165

    خوش رہیں ۔۔۔۔ ابتسامہ
     
  7. ‏نومبر 26، 2016 #157
    رحمانی

    رحمانی رکن
    شمولیت:
    ‏اکتوبر 13، 2015
    پیغامات:
    268
    موصول شکریہ جات:
    75
    تمغے کے پوائنٹ:
    52

    ہرغیرمقلد اس لعنۃ ربنا کا ورد کرتا نظرآتاہے لیکن کسی میں شاید یہ صلاحیت نہیں ہے کہ اس قول کو سنجیدگی سے سمجھ سکے اور نہ ہی اتنی وسعت نظر ومطالعہ ہے کہ وہ دیکھ سکے کہ وہ خود کو جن محدثین کی جانب منسوب کرتے ہیں اورجن کا وہ رات دن نام لیتے ہیں ان سے بھی کچھ ایساہی منقول ہے۔اب یہ تو بڑی بری بات ہوگی کہ اپنے لئے کچھ اور دوسروں کیلئے کچھ اور،اگر لعنت کے قول کی وجہ سے بے چارے احناف مطعون ہوتے ہیں تو آپ کے ممدوح کیوں نہیں ہوں گے؟

    قال يعقوب الفسوي - وبلغه قول يحيى: من فضل عبد الرحمن على وكيع، فعليه اللعنة(سیر اعلام النبلاء 9؍153)

    بات واضح ہے
    یحیی بن معین کہتے ہیں کہ جو وکیع پر ابن مہدی کو ترجیح دے فضیلت دے اس پر لعنت ہو۔
    اب محدثین میں بہت سارے حضرات ہیں جو ابن مہدی کو وکیع سے بہتر مانتے ہیں،اب سوال ہے کہ کیاایسے لوگوں کو بقول ابن مہدی ملعون کہاجائے ،یااس قول کی وجہ سے ابن معین پر لعن طعن کیاجائے؟

    قال خلف بن محمد: سمعت أبا عمرو أحمد بن نصر الخفاف يقول: محمد بن إسماعيل أعلم بالحديث من إسحاق بن راهويه وأحمد بن حنبل وغيرهما بعشرين درجة، ومن قال فيه شيئا فمني عليه ألف لعنة.(سیر اعلام النبلاء۱۰؍۱۰۲)


    احمد بن نصر الخفاف کہتے ہیں کہ جو محمد بن اسماعیل کے بارے میں کچھ کہے تو اس پر ہزار لعنت ہو۔
    اب امام بخاری کے بارے میں ابوحاتم اورابوزرعہ متروک کہتے ہیں تویہ اس لعنت کے حقدار ہوئے یانہیں ہوئے، یاپھر اس قول کی وجہ سے احمد بن نصر الخفاف مطعون ہوتے ہیں یانہیں ہوتے ہیں؟
    ان دونوں حوالوں کے بارے میں جو بھی توجیہ غیرمقلدین حضرات کریں گے وہی توجیہ
    لعنۃ ربمنا اعداد رمل
    کی کرلیں۔
     
    Last edited: ‏نومبر 26، 2016
  8. ‏نومبر 26، 2016 #158
    رحمانی

    رحمانی رکن
    شمولیت:
    ‏اکتوبر 13، 2015
    پیغامات:
    268
    موصول شکریہ جات:
    75
    تمغے کے پوائنٹ:
    52

    کثرت حق کی دلیل ہے یانہیں،اس سے قطع نظر بہت سارے غیرمقلدین ضروراپنی بڑھتی تعداد کو اپن حق پر ہونے کی دلیل سمجھتے ہیں، جب بڑھتی تعداد حق پر ہونے کی کوئی دلیل بناسکتاہے تو پھر کثرت توبہرحال اس سے بہتر ہے، کیونکہ بڑھتی تعداد کا انجام بھی کثرت ہی ہے۔
    کچھ سوچئے شاید کچھ سمجھ میں آجائے۔
     
  9. ‏نومبر 26، 2016 #159
    رحمانی

    رحمانی رکن
    شمولیت:
    ‏اکتوبر 13، 2015
    پیغامات:
    268
    موصول شکریہ جات:
    75
    تمغے کے پوائنٹ:
    52

    کچھ مطالعہ وسیع کریں، آپ حضرات ایک جانب رات دن اس کی تکرار کررہے ہوتے ہیں اور خوداسی فورم پر بہت سے قابل اورفاضل حضرات (آپ کے خیال میں)لکھ رکھاہے کہ امام ابوحنیفہ سے کوئی کتاب ثابت نہیں ،امام ابوحنیفہ کی کوئی کتاب نہیں اور جب ضرورت آن پڑی تو پھر وہی فقہ اکبر امام ابوحنیفہ کی کتاب ہوگئی۔فقہ اکبر میں یہ بات موجود ہے لیکن اس کو آپ حضرات نہیں مانتے ،امام طحاوی نے اپنے عقیدہ میں اس طرح کی کوئی بات نہیں لکھی اور ابن ابی العز کا حال یہ ہے کہ وہ اس کا فقہائے احناف میں کہیں کوئی تذکرہ نہیں ملتا،ان کا حال کسی حد تک شاید آپ کے مولوی اسحاق جھال والا کی طرح ہے،وہ بھی خود کو اہل حدیث کہتے ہیں مگر آپ حضرات ان کو اہل حدیث نہیں مانتے اوراگرکوئی اس کی بات سے استشہاد کرے تواس کی بات بھی تسلیم نہیں کرتے ۔
    اگرکسی حد تک ابن ابی العز کوحنفی مان بھی لیں توان کی اس بات کا ماخذ کیاہے وہی فقہ اکبر جس کو آپ پہلےبھی ناقابل تسلیم اورناقابل اعتبار قراردے چکے ہیں۔
    آپ کہیں گے کہ تم تومانتے ہو تواس کے دو جواب ہیں،ایک تو یہ کہ یہ الزامی جواب ہے اور الزامی جواب سے کوئی بات ثابت نہیں ہوتی،تحقیقی جواب سے بات ثابت ہوتی ہے۔
    دوسری بات یہ ہے کہ فقہ اکبر کے امام ابوحنیفہ کی کتاب ہونے میں علمائے احناف میں زبردست اختلاف ہے، بہت سارے حضرات بشمول علامہ انورشاہ کشمیری اس کو امام ابوحنیفہ کی تصنیف نہیں بلکہ ابومطیع بلخی کی تصنیف مانتے ہیں،لہذا الزامی دلیل میں بھی کوئی ایسی چیز پیش کیجئے جو احناف کیلئے متفقہ ہو۔
    کچھ سوچئے شاید کچھ سمجھ میں آجائے۔
     
  10. ‏نومبر 26، 2016 #160
    عبدالرحمن بھٹی

    عبدالرحمن بھٹی مشہور رکن
    جگہ:
    فی الارض
    شمولیت:
    ‏ستمبر 13، 2015
    پیغامات:
    2,435
    موصول شکریہ جات:
    281
    تمغے کے پوائنٹ:
    165

    کچھ لوگوں کا دن رات کا وظیفہ ابوحنیفہ رحمۃ اللہ کی تحقیر سے سروکار رکھنا ہے۔ آپ انہیں مجتہد فقیہ نہ بھی مانیں مسلم تو یقین رکھتے ہو کہ نہیں؟ اب رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کا فرمان سنیئے؛
    صحيح البخاري (3 / 20):
    فَمَنْ أَخْفَرَ مُسْلِمًا فَعَلَيْهِ لَعْنَةُ اللَّهِ وَالمَلاَئِكَةِ وَالنَّاسِ أَجْمَعِينَ، لاَ يُقْبَلُ مِنْهُ صَرْفٌ، وَلاَ عَدْلٌ
     
لوڈ کرتے ہوئے...

اس صفحے کو مشتہر کریں