1. آئیے اہم اسلامی کتب کو یونیکوڈ میں انٹرنیٹ پر پیش کرنے کے لئے مل جل کر آن لائن ٹائپنگ کریں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ کے ذریعے آپ روزانہ فقط دس پندرہ منٹ ٹائپنگ کر کے ہزاروں صفحات پر مشتمل اہم ترین کتب کو ٹائپ کرنے میں اہم کردار ادا کرکے صدقہ جاریہ میں شامل ہو سکتے ہیں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ میں شمولیت کے لئے یہاں کلک کریں۔
  2. آئیے! مجلس التحقیق الاسلامی کے زیر اہتمام جاری عظیم الشان دعوتی واصلاحی ویب سائٹس کے ساتھ ماہانہ تعاون کریں اور انٹر نیٹ کے میدان میں اسلام کے عالمگیر پیغام کو عام کرنے میں محدث ٹیم کے دست وبازو بنیں ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔

مسئلہ تحکیم اور تکفیریوں کی تلبیسات کا علمی محاکمہ

'توحید حاکمیت' میں موضوعات آغاز کردہ از عبداللہ عبدل, ‏جنوری 25، 2012۔

  1. ‏نومبر 17، 2012 #21
    عبداللہ سلفی

    عبداللہ سلفی مبتدی
    شمولیت:
    ‏نومبر 07، 2012
    پیغامات:
    11
    موصول شکریہ جات:
    19
    تمغے کے پوائنٹ:
    0

    آپ کی سیاہ تحریروں سے آپ کے گمراہ کن نظریات کا اندازہ تو پہلے ہی ہوگیا تھا مگر آپ کا انداز بیان تو آپ کی تربیت کا منہ بولتا ثبوت ہے۔

    گویا آپ تسلیم کرتے ہیں کہ شیخ الاسلام آپ کے تحریف کردہ "اللہ کی طرف منسوب بھی کرے" والے مکروہ قاعدے کے قائل نہیں ہیں!!!

    اگر اللہ کی شریعت کو تبدیل کرکے اسے اللہ کی طرف منسوب بھی کرنے والی بات شیخ الاسلام کی طرف منسوب نہیں کی تو پھر اس اللہ کی طرف منسوب بھی کرنے والی ڈنڈی کی دلیل کیا ہے؟

    آپ کے مکروہ عظائم اور بے علمی نما علمی خیانتوں کو ہم نے خوب جان بھی لیا ہے اور پہچان بھی لیا ہے۔
    وللہ الحمد!
     
  2. ‏نومبر 18، 2012 #22
    عبداللہ عبدل

    عبداللہ عبدل مبتدی
    شمولیت:
    ‏نومبر 23، 2011
    پیغامات:
    493
    موصول شکریہ جات:
    2,196
    تمغے کے پوائنٹ:
    26

    ابتسامہ:

    اس لئے تو ہم نے آپ کو شروع میں ہی "مفتا" کا لقب عطا کر دیا تھا۔

    جب اللہ کی حرام کو حلال قرار دینا اور حلال کو حرام قرار دینا ہی کفر اکبر ہے تو آگے منسوب کرنے یا نہ کرنے والی "سازش" کی ضرورت ہی نہیں۔
    مگر حلال کو حرام اور حرام کو حلال کرنے کا پتا عمل سے نہیں عقیدہ سے لگے گا ۔ شکریہ

    جب ڈنڈی ماری نہیں تو دلیل کیسی مفتا صاحب؟

    آپکا رویہ تو اسی بات کا گماز ہے کہ آپ نے فور، جوائن ہی میرے لیا کیا ہے؟ ھھھھھ
    جی جی ، میں کاروبار شر کی راہ میں روڑے اٹکا رہا ہوں اس لئے ، اس روڑے پھنکنے والے کو جاننا اور پہچاننا آپ کے لئے اشد ضروری ہے۔
     
  3. ‏نومبر 22، 2012 #23
    عبداللہ سلفی

    عبداللہ سلفی مبتدی
    شمولیت:
    ‏نومبر 07، 2012
    پیغامات:
    11
    موصول شکریہ جات:
    19
    تمغے کے پوائنٹ:
    0

    اور چونکہ عقیدہ دل کا معاملہ ہے اور اس کا پتہ کبھی چل ہی نہیں سکتا لحاظہ تکفیر کا دروازہ ہمیشہ کیلئے بند! اس طرح عبداللہ عبدل اور اس کے ساتھیوں کا منصوبہ کامیاب! ملوک بھی خوش، حکام بھی خوش اور عبداللہ عبدل بھی خوش۔ لگتا ہے آپ کا بھی کفریہ قوانین نافذ کرنے والوں سے دل کا معاملہ ہے۔

    سچ کہا کسی نے دين المرجئة الدين الذى يفرح به الملوك یعنی مرجئیہ کا دین وہ دین ہے جس سے ملوک (حکام) خوش ہوتے ہیں۔
     
  4. ‏نومبر 30، 2012 #24
    توحید

    توحید مبتدی
    شمولیت:
    ‏نومبر 25، 2012
    پیغامات:
    16
    موصول شکریہ جات:
    25
    تمغے کے پوائنٹ:
    13

    معذرت کے ساتھ! اور جب تکفیر کا دروازہ بند ہوجائے تو پھر اسلامی معاشرے میں ایسے لوگوں کا وجود بہت زیادہ بڑھ جاتا ہے:آپ بھی اس حقیقت حال والی ویڈیوں سے محفوظ ہوں اور عبرت حاصل کریں جیسا کہ میں نے اس ویڈیو کو دیکھ کر سناٹے میں آگیا ہوں، یا اللہ! یہ کیا ماجرا ہے، یہ کیسا اسلام ہے،یہ شخص کیا کہہ رہا ہے۔ میں تو حیران ہوں:آپ بھی حیران ہو یہ دیڈیو کسی سعید گجر نامی کے بارے میں ہے ، اس ویڈیو کا عنوان ہے :
    سعید گجر ایک نیا روپ اور وہ بھی حقیت !
    ویڈیو دیکھنے کے لیے اس لنک پر کلک کر ویڈیو دیکھیں
    ‫طاغوتی نظام سے فیصلہ کرنے والا سعید گجر | Facebook‬طاغوتی نظام سے فیصلہ کرنے والا سعید گجر​
     
  5. ‏نومبر 30، 2012 #25
    محمد ارسلان

    محمد ارسلان خاص رکن
    شمولیت:
    ‏مارچ 09، 2011
    پیغامات:
    17,865
    موصول شکریہ جات:
    40,798
    تمغے کے پوائنٹ:
    1,155

    جماعت الدعوۃ واقعی ایک فلاحی تنظیم ہے اور اس تنظیم میں جو مسلکا اہلحدیث ہے میں موجود علماء نے بہت اچھی کتابیں بھی لکھی ہیں، جیسے "شاہراہ بہشت" اور "آسمانی جنت اور درباری جہنم" وغیرہ
    لیکن جب سے ان علماء اور اس تنظیم کے سربراہ نے چند ایسے کام کیے ہیں کہ میرا دل بھی بہت کٹھا ہو گیا ہے۔ جیسے:
    امیر حمزہ صاحب کا "گدی نشینو کے جھرمٹ میں" کالم لکھنا
    اپنی مجالس میں قبر پرست علماء کو دعوت دینا۔
    میں نے کہیں ایک واقعہ پڑھا ہے کہ ایک بار جماعت الدعوۃ میں اپنی ایک تقریب میں "حافط صلاح الدین یوسف حفظہ اللہ" کو دعوت دی اور اس تقریب میں قبر پرست اور مشرک علماء کو بھی مدعو کیا ہوا تھا،تو ایک قبر پرست مولوی نے اپنے شرکیہ انداز سے تقریر شروع کی، اور پھر جب حافظ صلاح الدین یوسف حفظہ اللہ کی باری آئی تو انہوں نے اس تقریب کا صاف بائیکاٹ کر دیا جس پر بعد میں جماعت الدعوۃ کے علماء کو شرمندگی کے ساتھ معذرت کرنا پڑی۔
    اور حافظ سعید صاحب کے اس قسم کے بیانات۔

    اللہ تعالیٰ ہمیں ہر قسم کے شرور و فتن سے محفوظ رکھے آمین
     
  6. ‏نومبر 30، 2012 #26
    محمد ارسلان

    محمد ارسلان خاص رکن
    شمولیت:
    ‏مارچ 09، 2011
    پیغامات:
    17,865
    موصول شکریہ جات:
    40,798
    تمغے کے پوائنٹ:
    1,155

    کوئی بھی شخص تب تک مومن ہو ہی نہیں سکتا جب تک وہ طاغوت سے کفر نہ کرے۔اللہ تعالیٰ کا فرمان ہے:
    فَمَن يَكْفُرْ‌ بِٱلطَّـٰغُوتِ وَيُؤْمِنۢ بِٱللَّهِ فَقَدِ ٱسْتَمْسَكَ بِٱلْعُرْ‌وَةِ ٱلْوُثْقَىٰ لَا ٱنفِصَامَ لَهَا ۗ وَٱللَّهُ سَمِيعٌ عَلِيمٌ ﴿٢٥٦﴾۔۔۔ البقرۃ
    غور کیجئے کوئی بھی شخص مومن تب ہوا جب اس نے دو کام کیے۔ (1) طاغوت سے کفر (2) اللہ پر ایمان
    پہلے طاغوت سے کفر ذکر کیا گیا ہے،کیونکہ اگر کوئی طاغوت سے کفر کیے بغیر اللہ پر ایمان رکھے تو اس کے ایمان لانے کا کوئی فائدہ نہیں،اسلام ایک مکمل ضابطہ حیات ہے،لہذا اسلام کے ماننے والوں کو ہرگز یہ زیبا نہیں کہ وہ اپنے روشن دین کو چھوڑ کر تاریک تر طاغوت سے فیصلے کروائیں اور طاغوت بھی ایسا جو مسلمانوں کا ازلی دشمن اور مسلمانوں کے ساتھ برسرپیکار ہے۔
     
  7. ‏نومبر 30، 2012 #27
  8. ‏دسمبر 02، 2012 #28
    شکاری آن لائن

    شکاری آن لائن مبتدی
    شمولیت:
    ‏نومبر 04، 2012
    پیغامات:
    6
    موصول شکریہ جات:
    20
    تمغے کے پوائنٹ:
    0

    توحید حضرت کی ملفوظات:
    انا اللہ و انا الیہ راجعون
    حافظ صاحب کے ان الفاظ پر نہ تو کسی عالم نے تکفیر کی ہے اور نہ ہی ہو سکتی ہے قابل تاویل الفاظ ہیں ۔ ذو دمعنی اور محتمل الفاظ پر سلف امت تکفیر نہیں کرتے ۔ جبکہ حافظ صاحب نے میں گزارش کر چکا ہوں خاص معنوں میں کہا ہے کہہ ان پر جو مقدمہ یا الزام لگایا گیا ہے اس بارے میں ان نے کہا ہے کہ عالمی قوانین اور پاکستانی قوانین کو میں تسلیم کرتا ہوں ۔مطلب یہی کہ وہ مجھے انصاف دیں گے ۔ تو اس میں کوئی حرج نہیں شریعت اپنا حق لینے کی خاطر ان عدالتوں میں فیصلہ کروانے کی اجازت دیتی ہے ۔ یہ بہرحال فراسانی میڈیا کا ڈھونگ ہے۔ اور ان کو کسی کی مخالفت میں آ کر حق سے ہٹی ہوئی بات نہیں کرنی چاہیے ۔ تکفیر بڑا نازک مسئلہ ہے ۔
     
  9. ‏دسمبر 02، 2012 #29
    شکاری آن لائن

    شکاری آن لائن مبتدی
    شمولیت:
    ‏نومبر 04، 2012
    پیغامات:
    6
    موصول شکریہ جات:
    20
    تمغے کے پوائنٹ:
    0

    السلام علیکم۔
    میرے کومنٹ ڈلیٹ کئے گئے ہیں؟؟؟
    وہ بھی بلا کسی وجہ بیان کیئے؟
    کیوں؟
     
  10. ‏دسمبر 02، 2012 #30
    توحید

    توحید مبتدی
    شمولیت:
    ‏نومبر 25، 2012
    پیغامات:
    16
    موصول شکریہ جات:
    25
    تمغے کے پوائنٹ:
    13

    شکاری بھیا متوجہ ہوں

    شکاری بھیا آپ تو ناراض ہوگئے ہم نے یہ پوسٹ جس پر آپ نے ناراضگی کا اظہار کیا ہے اس کو فیس بک پر دیکھا تھا۔ تو ہم بہت حیران ہوئے اس ویڈیو کو دیکھ، تو ہم نے فیصلہ کیا کہ اس ویڈیو کے متعلق محدث فورم پر گفتگو کرکے دیکھتے ہیں وہاں سے کیا جواب آتا ہے ۔ بس یہ وجہ تھی اس کو پوسٹ کرنے کی۔ لیکن جب ہم نے ایک اور فورم کو وزٹ کیا تو ہمیں وہاں سے بھی کچھ معلومات کا حصول ہوا میں وہ یہاں شئیر کیے دیتا ہوں تاکہ بات اچھی طرح سمجھ میں آجائے اور اس میں کسی بھی قسم کا ابہام نہ رہے۔کیونکہ عبداللہ عبدل بھائی جو اس معاملے میں جواب دینے میں کافی مہارت رکھتے ہیں کافی عرصے سے غائب ہیں۔ تو اس لیے میں ان سے بھی معلوم نہ کرسکا۔
     
لوڈ کرتے ہوئے...

اس صفحے کو مشتہر کریں