1. آئیے اہم اسلامی کتب کو یونیکوڈ میں انٹرنیٹ پر پیش کرنے کے لئے مل جل کر آن لائن ٹائپنگ کریں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ کے ذریعے آپ روزانہ فقط دس پندرہ منٹ ٹائپنگ کر کے ہزاروں صفحات پر مشتمل اہم ترین کتب کو ٹائپ کرنے میں اہم کردار ادا کرکے صدقہ جاریہ میں شامل ہو سکتے ہیں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ میں شمولیت کے لئے یہاں کلک کریں۔
  2. آئیے! مجلس التحقیق الاسلامی کے زیر اہتمام جاری عظیم الشان دعوتی واصلاحی ویب سائٹس کے ساتھ ماہانہ تعاون کریں اور انٹر نیٹ کے میدان میں اسلام کے عالمگیر پیغام کو عام کرنے میں محدث ٹیم کے دست وبازو بنیں ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔

واقعہ حرہ میں خواتین کی عصمت دری ثابت نہیں

'تاریخی روایات' میں موضوعات آغاز کردہ از کفایت اللہ, ‏نومبر 14، 2013۔

موضوع کا سٹیٹس:
مزید جوابات پوسٹ نہیں کیے جا سکتے ہیں۔
  1. ‏نومبر 16، 2013 #11
    حامد ثناٰء

    حامد ثناٰء مبتدی
    جگہ:
    مقبوضہ کشمیر
    شمولیت:
    ‏ستمبر 25، 2013
    پیغامات:
    17
    موصول شکریہ جات:
    24
    تمغے کے پوائنٹ:
    9

    شیخ کفایت اللہ سنابلی -کیا آپ نے غیر مدارس کے طلباء کے دینی علم حاصل کرنے کے طریقے کے سلسلے میں کچھ لکھا ہے؟ برائے مہربانی رہنمایئ فرمایئں-نوازش ہوگی-
     
  2. ‏نومبر 16، 2013 #12
    کفایت اللہ

    کفایت اللہ عام رکن
    شمولیت:
    ‏مارچ 14، 2011
    پیغامات:
    4,915
    موصول شکریہ جات:
    9,778
    تمغے کے پوائنٹ:
    722

    نہیں بھائی میں نے اس بارے میں اب تک کچھ نہیں لکھا۔
     
  3. ‏نومبر 17، 2013 #13
    انصاری نازل نعمان

    انصاری نازل نعمان رکن
    شمولیت:
    ‏اگست 28، 2013
    پیغامات:
    163
    موصول شکریہ جات:
    121
    تمغے کے پوائنٹ:
    61

    جزاک اللہ خیر شیخ ـ اللہ آپ کے علم میں برکت عطا فرماے ـ الحمدلله باطل کی کمر ٹوڑ دی ـبس انکا ایک الظام رہ گیا ہے امید ہے اللہ کی مدد سے آپ اسکا بھی جواب دے کے ہمیں مطمئین کردیں گےـ الظام یہ ہے کے اگر یزید بن معاویة رحمة الله نیک سچے تھے تو محدثین نے ان سے روایت کیوں نہیں لی ـ
     
  4. ‏نومبر 18، 2013 #14
    کفایت اللہ

    کفایت اللہ عام رکن
    شمولیت:
    ‏مارچ 14، 2011
    پیغامات:
    4,915
    موصول شکریہ جات:
    9,778
    تمغے کے پوائنٹ:
    722

    اس کے لئے ہمارے مضمون ’’یزیدبن معاویہ رحمہ اللہ جرح وتعدیل کے میزان میں‘‘ کا انتظار کریں ۔
     
  5. ‏نومبر 18، 2013 #15
    انصاری نازل نعمان

    انصاری نازل نعمان رکن
    شمولیت:
    ‏اگست 28، 2013
    پیغامات:
    163
    موصول شکریہ جات:
    121
    تمغے کے پوائنٹ:
    61

    جزاک اللہ ـ بڑی شدت سے انتظار ہےـ
     
  6. ‏نومبر 18، 2013 #16
    محمد زاہد بن فیض

    محمد زاہد بن فیض سینئر رکن
    شمولیت:
    ‏جون 01، 2011
    پیغامات:
    1,957
    موصول شکریہ جات:
    5,774
    تمغے کے پوائنٹ:
    354

    جزاک اللہ خیرا شیخ صاحب اللہ تعالیٰ آپ کے علم وعمل میں برکت عطا فمرمائے۔آمین
     
  7. ‏نومبر 25، 2013 #17
    کفایت اللہ

    کفایت اللہ عام رکن
    شمولیت:
    ‏مارچ 14، 2011
    پیغامات:
    4,915
    موصول شکریہ جات:
    9,778
    تمغے کے پوائنٹ:
    722

    • زبردست زبردست x 2
    • پسند پسند x 1
    • لسٹ
  8. ‏جنوری 05، 2014 #18
    محمد عاصم انعام

    محمد عاصم انعام مبتدی
    شمولیت:
    ‏نومبر 16، 2013
    پیغامات:
    220
    موصول شکریہ جات:
    61
    تمغے کے پوائنٹ:
    29

    السلام علیکم : کفایت بھائی کیسے ہو: آپ کا پرانا ساتھی ہی ہوں ،پاکستان راولپنڈی سے ، آپ کو یاد آیا ہوگا :
    یار : یہ تاریخی واقعات میں سند کی بحث ، اس وجہ سے کسی واقعہ کو من گھڑت ماننا ، یہ ایک الگ مستقل بحث ہے، کہ اس طرح کرنے سے آپ اپنی تاریخ کے کتنے بڑے حصے سے محروم ہوسکتے ہیں، اور اکابر امت کا تعامل اس طرح نہیں تھا ، جیساکہ مندرجہ ذیل ایک نکتہ سے واضح ہو جائے گا :
    یہ حافظ ابن تیمیہ رضی اللہ عنہ کی ایک عبارت ہے : غورسے ملاحظہ ہو کہ آپ کی سب بحثوں کے باوجود انہوں نے کیا فرمایا ہے :
    وَأَمَّا الْأَمْرُ الثَّانِي : فَإِنَّ أَهْلَ الْمَدِينَةِ النَّبَوِيَّةِ نَقَضُوا بَيْعَتَهُ وَأَخْرَجُوا نُوَّابَهُ وَأَهْلَهُ فَبَعَثَ إلَيْهِمْ جَيْشًا ؛ وَأَمَرَهُ إذَا لَمْ يُطِيعُوهُ بَعْدَ ثَلَاثٍ أَنْ يَدْخُلَهَا بِالسَّيْفِ وَيُبِيحَهَا ثَلَاثًا فَصَارَ عَسْكَرُهُ فِي الْمَدِينَةِ النَّبَوِيَّةِ ثَلَاثًا يَقْتُلُونَ وَيَنْهَبُونَ وَيَفْتَضُّونَ الْفُرُوجَ الْمُحَرَّمَةَ . ثُمَّ أَرْسَلَ جَيْشًا إلَى مَكَّةَ الْمُشَرَّفَةِ فَحَاصَرُوا مَكَّةَ وَتُوُفِّيَ يَزِيدُ وَهُمْ مُحَاصِرُونَ مَكَّةَ وَهَذَا مِنْ الْعُدْوَانِ وَالظُّلْمِ الَّذِي فُعِلَ بِأَمْرِهِ . وَلِهَذَا كَانَ الَّذِي عَلَيْهِ مُعْتَقَدُ أَهْلِ السُّنَّةِ وَأَئِمَّةِ الْأُمَّةِ أَنَّهُ لَا يُسَبُّ وَلَا يُحَبُّ قَالَ صَالِحُ بْنُ أَحْمَدَ بْنِ حَنْبَلٍ " قُلْت لِأَبِي : إنَّ قَوْمًا يَقُولُونَ : إنَّهُمْ يُحِبُّونَ يَزِيدَ . قَالَ : يَا بُنَيَّ وَهَلْ يُحِبُّ يَزِيدَ أَحَدٌ يُؤْمِنُ بِاَللَّهِ وَالْيَوْمِ الْآخِرِ ؟ فَقُلْت : يَا أَبَتِ فَلِمَاذَا لَا تلعنه ؟ قَالَ : يَا بُنَيَّ وَمَتَى رَأَيْت أَبَاك يَلْعَنُ أَحَدًا ؟ . وَرُوِيَ عَنْهُ قِيلَ لَهُ : أَتَكْتُبُ الْحَدِيثَ عَنْ يَزِيدَ بْنِ مُعَاوِيَةَ ؟ فَقَالَ : لَا ، وَلَا كَرَامَةَ أَوَلَيْسَ هُوَ الَّذِي فَعَلَ بِأَهْلِ الْمَدِينَةِ مَا فَعَلَ ؟
    حوالہ : الكتاب : مجموع الفتاوى : جلد 3:صفحہ : 412
    المؤلف : تقي الدين أحمد بن عبد الحليم بن تيمية الحراني ، أبو العباس
    المحقق : أنور الباز - عامر الجزار
    الناشر : دار الوفاء
    الطبعة : الثالثة ، 1426 هـ / 2005 م
     
  9. ‏جنوری 05، 2014 #19
    محمد عاصم انعام

    محمد عاصم انعام مبتدی
    شمولیت:
    ‏نومبر 16، 2013
    پیغامات:
    220
    موصول شکریہ جات:
    61
    تمغے کے پوائنٹ:
    29

    وَيَفْتَضُّونَ الْفُرُوجَ الْمُحَرَّمَةَ . اس عبارت کو غور سے ملاحظہ کریں ۔
     
  10. ‏جنوری 05، 2014 #20
    کفایت اللہ

    کفایت اللہ عام رکن
    شمولیت:
    ‏مارچ 14، 2011
    پیغامات:
    4,915
    موصول شکریہ جات:
    9,778
    تمغے کے پوائنٹ:
    722

    وعلیکم السلام ورحمۃ اللہ وبرکاتہ
    الحمدللہ بخیرہوں !
    بھائی یاد آیا۔ آپ کا مقالہ پورا ہوگیا ہو تو مجھے بھیج دیجئے گا۔
     
لوڈ کرتے ہوئے...
موضوع کا سٹیٹس:
مزید جوابات پوسٹ نہیں کیے جا سکتے ہیں۔

اس صفحے کو مشتہر کریں