1. آئیے اہم اسلامی کتب کو یونیکوڈ میں انٹرنیٹ پر پیش کرنے کے لئے مل جل کر آن لائن ٹائپنگ کریں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ کے ذریعے آپ روزانہ فقط دس پندرہ منٹ ٹائپنگ کر کے ہزاروں صفحات پر مشتمل اہم ترین کتب کو ٹائپ کرنے میں اہم کردار ادا کرکے صدقہ جاریہ میں شامل ہو سکتے ہیں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ میں شمولیت کے لئے یہاں کلک کریں۔
  2. آئیے! مجلس التحقیق الاسلامی کے زیر اہتمام جاری عظیم الشان دعوتی واصلاحی ویب سائٹس کے ساتھ ماہانہ تعاون کریں اور انٹر نیٹ کے میدان میں اسلام کے عالمگیر پیغام کو عام کرنے میں محدث ٹیم کے دست وبازو بنیں ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔

کتابوں پر ایمان

'کتب وصحائف' میں موضوعات آغاز کردہ از محمد ارسلان, ‏اکتوبر 30، 2011۔

  1. ‏اکتوبر 30، 2011 #1
    محمد ارسلان

    محمد ارسلان خاص رکن
    شمولیت:
    ‏مارچ 09، 2011
    پیغامات:
    17,865
    موصول شکریہ جات:
    40,798
    تمغے کے پوائنٹ:
    1,155

    بسم اللہ الرحمن الرحیم​
    کتابوں پر ایمان

    کتب،کتاب کی جمع ہے جس کے معنی مکتوب (نوشتہ) کے ہیں۔یہاں "کتب" سے مراد وہ کتابیں ہیں جنہیں اللہ تعالیٰ نے مخلوق کی ہدایت کے لیے رسولوں پر نازل فرمایا تاکہ ان کے ذریعے وہ وہ دنیا و آخرت کی سعادت سے بہرہ وہ ہو سکیں۔
    کتابوں پر ایمان چار امور پر مشتمل ہے
    • اس بات پر ایمان کہ یہ کتابیں اللہ تعالیٰ کی جانب سے نازل ہوئیں اور برحق ہیں۔
    • ان آسمانی کتابوں پر ایمان جن کے نام ہمیں معلوم ہیں،مثلا قرآن کریم جو حضرت محمد ﷺ پر نازل ہوا،"تورات" کا نزول موسی علیہ السلام پر ہوا۔"انجیل" عیسی علیہ السلام پر نازل ہوئی اور "زبور" داودعلیہ السلام کو دی گئی۔ان سب پر مفصل ایمان لانا فرض ہے اور ان کے علاوہ جن صحیفوں اور کتابوں کے نام ہمیں معلوم نہیں،ان سب پر ہمارا ایمان مجمل ہو گا۔
    • قرآن کریم کی تصدیق کرنا اور ان سابقہ کتب سماوی کی ان خبروں اور آیات کی تصدیق بھی جزوایمان ہے جن میں کوئی تحریف نہیں کی گئی۔
    • ان کتابوں کے ان احکامات پر برضا و رغبت عمل کرنا بھی ایمان کا حصہ ہے جو منسوخ نہیں ہوئے۔خواہ ہم ان احکام کی حکمت کا ادراک کر سکے ہوں،یا ایسا کرنے سے قاصر رہے ہوں،یاد رہے کہ سابقہ تمام کتب سماوی قرآن کریم کے ذریعے سے منسوخ ہو چکی ہیں۔اللہ تعالیٰ کا ارشاد ہے:
    وَأَنزَلْنَآ إِلَيْكَ ٱلْكِتَٰبَ بِٱلْحَقِّ مُصَدِّقًۭا لِّمَا بَيْنَ يَدَيْهِ مِنَ ٱلْكِتَٰبِ وَمُهَيْمِنًا عَلَيْهِ ۖ
    یعنی قرآن مجید دیگر آسمانی کتابوں پر حاکم ہے،لہذا پہلی کتابوں کے احکام میں سے کسی حکم پر عمل کرررنا جائز نہٰن ہے سوائے اس کے کہ وہ یقینی طور پر درست ہو اور قرآن کریم نے اسے منسوخ نہ کیا ہو بلکہ (پہلی حالت پر)برقرار رکھا ہو۔

    اسلام کے بنیادی عقائد از محمد بن صالح العثیمین​
     
    • شکریہ شکریہ x 8
    • پسند پسند x 2
    • لسٹ
  2. ‏دسمبر 25، 2011 #2
    طارق بن زیاد

    طارق بن زیاد مشہور رکن
    جگہ:
    saudi arabia
    شمولیت:
    ‏اگست 04، 2011
    پیغامات:
    324
    موصول شکریہ جات:
    1,718
    تمغے کے پوائنٹ:
    139

    جزاک اللہ خیر محترم محمد ارسلان صاحب
     
  3. ‏مارچ 29، 2012 #3
    محمد شاہد

    محمد شاہد سینئر رکن
    شمولیت:
    ‏اگست 18، 2011
    پیغامات:
    2,509
    موصول شکریہ جات:
    6,012
    تمغے کے پوائنٹ:
    447

    جزاک اللہ خیر محمد ارسلان بھائی
     
  4. ‏مارچ 29، 2012 #4
    محمد ارسلان

    محمد ارسلان خاص رکن
    شمولیت:
    ‏مارچ 09، 2011
    پیغامات:
    17,865
    موصول شکریہ جات:
    40,798
    تمغے کے پوائنٹ:
    1,155

    شکریہ طارق بھائی
     
  5. ‏مارچ 29، 2012 #5
    محمد ارسلان

    محمد ارسلان خاص رکن
    شمولیت:
    ‏مارچ 09، 2011
    پیغامات:
    17,865
    موصول شکریہ جات:
    40,798
    تمغے کے پوائنٹ:
    1,155

    شکریہ شاہد بھائی
     
  6. ‏مارچ 30، 2012 #6
    muslim

    muslim رکن
    جگہ:
    کراچی پاکستان
    شمولیت:
    ‏ستمبر 29، 2011
    پیغامات:
    467
    موصول شکریہ جات:
    567
    تمغے کے پوائنٹ:
    86


    السلام علیکم۔

    ارسلان بھائی کیا یہ دونوں باتیں آپ قران مجید سے ثابت کر سکتے ہیں؟
    میری بات کو منفی مت لیجیئے گا۔
    مقصد صرف قران میں غور و فکر اور تدبّر کی دعوت دینا ھے۔
     
  7. ‏مارچ 30، 2012 #7
    muslim

    muslim رکن
    جگہ:
    کراچی پاکستان
    شمولیت:
    ‏ستمبر 29، 2011
    پیغامات:
    467
    موصول شکریہ جات:
    567
    تمغے کے پوائنٹ:
    86


    ١- کیا قران مجید میں لکھا ھے کہ کتابیں آسمان سے نازل ہوئی ہیں؟
    ٢- کیا قران مجید میں لکھا ھے کہ حضرت موسٰی علیہ سلام پر توراۃ نازل ہوئی تھی؟
     
  8. ‏مارچ 30، 2012 #8
    محمد ارسلان

    محمد ارسلان خاص رکن
    شمولیت:
    ‏مارچ 09، 2011
    پیغامات:
    17,865
    موصول شکریہ جات:
    40,798
    تمغے کے پوائنٹ:
    1,155

    ہدایت کی پیروی کرنے والے پر سلامتی ہو۔
    آپ مختلف موضوعات میں مکالمہ کرتے رہتے ہیں،اور حدیث کا انکار کرنا آپ کا مقصد ہے۔آپ سے ہمارا بنیادی اختلاف ہی یہی ہے کہ آپ قرآن مجید کے علاوہ احادیث مبارکہ کا انکار کرتے ہیں اور ہم قرآن و حدیث دونوں کو وحی مانتے ہیں،ایک وحی متلو اور ایک وحی غیر متلو۔
    لیکن آپ سمجھنے کی اور غوروفکر کی صورت حال سے باہر نظر ہی آتے ہیں۔میں نے کئی بار آپ سے "چار سوالات کے جوابات" کی طرف توجہ دلائی تھی،لیکن چونکہ آپ یا دنیا کا کوئی منکر حدیث ان چار سوالوں کے جواب اپنے پاس نہیں رکھتا،اس لیے آپ مسلسل میری اُن پوسٹوں سے روگردانی کرتے نظر آئے۔
    اوپر کہی گئی بات محض پچھلے مکالمات کا ایک مختصر سا حال تھا اب چونکہ آپ نے مجھ سے مکالمہ شروع کیا ہے اور شروع بھی اسی موضوع پر کیا ہے جس پر میں چاہ رہا تھا کہ آپ سے بات چیت ہو تو اب وہ گفتگو شروع ہو گئی ہے۔آئیے آپ کی باتوں کا دلائل سے جائزہ لیں۔
    آپ نے پہلا سوال کیا کہ کیا میں یہ بات قرآن سےثابت کر سکتا ہوں کہ آسمانی کتابیں نازل ہوئی،جی بالکل کر سکتا ہوں،لیکن اُس سے پہلے آپ اس کتاب جس کا نام (منکرین حدیث سے چار سوالات) ہے میں اٹھائے گئے چار سوالات کے بادلائل جواب مہیا کر سکتے ہیں؟
    بے فکر رہیں،میں نے آپ کی باتوں کو مثبت ہی لیا ہے۔آپ بھی ہماری باتوں سے مثبت انداز سے غوروفکر کرنے کی کوشش کیجیئے گا۔ان شاءاللہ
    قرآن و حدیث میں غوروفکر کرنا اور دوسروں کو اس بات کی تلقین کرنا ہی اہلحدیث کا منہج ہے۔
     
  9. ‏مارچ 30، 2012 #9
    محمد ارسلان

    محمد ارسلان خاص رکن
    شمولیت:
    ‏مارچ 09، 2011
    پیغامات:
    17,865
    موصول شکریہ جات:
    40,798
    تمغے کے پوائنٹ:
    1,155

    وَٱلَّذِينَ يُؤْمِنُونَ بِمَآ أُنزِلَ إِلَيْكَ وَمَآ أُنزِلَ مِن قَبْلِكَ وَبِٱلْءَاخِرَةِ هُمْ يُوقِنُونَ ﴿٤﴾
    ترجمہ: اور جو ایمان لاتے ہیں اس پر جو اتارا گیا آپ پراور جو آپ سے پہلے اتارا گیا اور آخرت پر بھی وہ یقین رکھتے ہیں (البقرۃ،٤)
    تو گویا تم اس بات کے انکاری ہو کہ موسی علیہ السلام پر توراۃ نازل نہیں ہوئی؟(نعوذباللہ)
     
  10. ‏مارچ 30، 2012 #10
    muslim

    muslim رکن
    جگہ:
    کراچی پاکستان
    شمولیت:
    ‏ستمبر 29، 2011
    پیغامات:
    467
    موصول شکریہ جات:
    567
    تمغے کے پوائنٹ:
    86

    آیت مبارکہ میں آسمان کا زکر کہاں ھے؟

    مجھے اس بات کا پہلے ہی سے خدشہ تھا کہ آپ اس کو کہیں منفی نہ لے لیں۔
    میں تو صرف اس بات کا ریفرینس، آیت سے مانگ رہا ہوں۔
    جو باتیں آپ لکھ رہے ہیں ان کا جواز پیش کریں۔ بغیر ناراض ہوئے۔
     
لوڈ کرتے ہوئے...

اس صفحے کو مشتہر کریں