1. آئیے اہم اسلامی کتب کو یونیکوڈ میں انٹرنیٹ پر پیش کرنے کے لئے مل جل کر آن لائن ٹائپنگ کریں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ کے ذریعے آپ روزانہ فقط دس پندرہ منٹ ٹائپنگ کر کے ہزاروں صفحات پر مشتمل اہم ترین کتب کو ٹائپ کرنے میں اہم کردار ادا کرکے صدقہ جاریہ میں شامل ہو سکتے ہیں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ میں شمولیت کے لئے یہاں کلک کریں۔
  2. آئیے! مجلس التحقیق الاسلامی کے زیر اہتمام جاری عظیم الشان دعوتی واصلاحی ویب سائٹس کے ساتھ ماہانہ تعاون کریں اور انٹر نیٹ کے میدان میں اسلام کے عالمگیر پیغام کو عام کرنے میں محدث ٹیم کے دست وبازو بنیں ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔

کیا ڈاکٹر فرحت ہاشمی صاحبہ سے علم حاصل کرسکتے ہیں؟؟

'متفرقات' میں موضوعات آغاز کردہ از ام حسان, ‏جون 03، 2015۔

  1. ‏جون 11، 2015 #51
    میرب فاطمہ

    میرب فاطمہ مشہور رکن
    جگہ:
    لاھور
    شمولیت:
    ‏جون 06، 2012
    پیغامات:
    195
    موصول شکریہ جات:
    214
    تمغے کے پوائنٹ:
    107

    چند اختلافات ہونے سے کوئی سلفیت سے خارج نہیں ہو سکتا۔ اور ہمیں تو بہت سے اہلحدیث کہلوانے والے علماء سے بھی اختلافات ہوتے ہیں۔
     
  2. ‏جون 12، 2015 #52
    خضر حیات

    خضر حیات علمی نگران رکن انتظامیہ
    جگہ:
    طابہ
    شمولیت:
    ‏اپریل 14، 2011
    پیغامات:
    8,763
    موصول شکریہ جات:
    8,333
    تمغے کے پوائنٹ:
    964

    شاہد نذیر بھائی ! آپ نے جن باتوں کا ذکر کیا ہے ، یہ کسی ایک مدرسے یا ادارے کی ’’ خصوصیت ‘‘ نہیں ، یہ خامیاں اوروں میں بھی ہوسکتی ہیں ۔
    یہ ایک وبا ہے ، جو معاشرے کے اندر آگ کی طرح پھیل رہی ہے ، اس اخلاقی گراوٹ میں تقریبا ہر طبقے اور ہر ذہن کے مرد و عورت شامل ہیں ، ایسے ’’ خبیثوں ، خبیثات ‘‘ کو ’’ روک ‘‘ لگانے کے لیے بڑے پیمانے پر سخت تحریک شروع کرنے کی ضرورت ہے ۔ ناد نہاد شرم و حیا کو بالائے طاق رکھتے ہوئے منبر و محراب ، گلی گوچے سے ہر پیر و جواں کو اس کے خلاف آواز بلند کرنی چاہیے ۔
     
    • متفق متفق x 4
    • شکریہ شکریہ x 1
    • پسند پسند x 1
    • لسٹ
  3. ‏جنوری 16، 2016 #53
    ام حسان

    ام حسان رکن
    شمولیت:
    ‏مئی 12، 2015
    پیغامات:
    56
    موصول شکریہ جات:
    30
    تمغے کے پوائنٹ:
    32

    ڈاکٹر فرحت ہاشمی صاحبہ کا ۱۴ سال کے بعد رجوع اور اسکا جواب

    http://ashabulhadith.com/main/wp-co...Hashmi_Ka_Apni_Ghalti_Sey_Rajoo_Ka_Jawaab.mp3
    ----------

    ڈاکٹر فرحت ہاشمی صاحبہ کی کہی ہوی چند باتیں۔۔۔

    قدیم مفسرین کی تفسیر سے چمٹے رہنا اور جدید تفسیر نہ کرنے سے مسلمانوں کو نقصان ہوا ہے۔ اور نوجوان دین سے دور ہو گئے ہیں۔ اور قرآن مجید کی قدیم تفاسیر اس ماحول و زمانہ کے اعتبار سے تھیں۔ نئی اور جدید تفسیر کرنے کی ضرورت ہے۔

    اگر ہم ان ہی تفاسیر کو چھانٹتے رہیں گے تو کبھی کامیاب نہ ہو پائیں گے۔

    ہمیں عقیدہ کے مسائل، نبی نور تھے یا بشر یا فقہی مسائل، آمین بلند آواز سے کہیں یا آہستہ، اسمیں نہیں پڑھنا چاہیے۔ قبر میں یہ سوالات نہیں ہونگے۔

    شرک پر بھی خاموشی اختیار کی جاسکتی ہے امت کی وحدت کے لیے۔
    (ہارون علیہ السلام بچھڑے کی عبادت پر خاموش رہے تو ہم کیوں خاموش نہیں رہ سکتے امت کی وحدت کے لیے۔)

    میں اہل حدیث نہیں ہوں ، یہ بھی ایک فرقہ ہے۔ اور میں کسی بھی فرقہ کو نہیں مانتی۔

    اللہ تعالی نے ہمیں مسلمان بننے کا حکم دیا ہے۔ وہابی بننے کا حکم نہیں دیا۔

    ایسے علماء جو جدید دور کے اعتبار سے تفسیر کر سکیں وہ میرے علم میں نہیں ہیں۔

    علماء اور مجھ میں ایک بنیادی فرق یہ ہے کہ میں جدید تفسیر اور آیت کا موجودہ دور میں کیا فائدہ ہے اس پر زور دیتی ہوں اور وہ قدیم تفاسیر ہی چھانتے رہتے ہیں۔

    جو کوئی بھی کچھ تبدیلی ، انقلاب یا جدیدیت لانا چاہتا ہے اسے ہمارے دینی عناصر کی طرف سے مذمت کا سامنا ہی کرنا پڑتا ہے اور علماء کفر کے فتوے لگادیتے ہیں۔

    اکثر علماء میرے خلاف ہیں لیکن مجھے کسی عالم سے احکامات لینے کی ضرورت نہیں کہ میں انکی مرضی کا اسلام پڑھاوں۔

    میرے خلاف بولنے والوں کی جنگ مجھ سے نہیں بلکہ اللہ تعالی سے ہے کیونکہ میں اسکا کلام پڑھاتی ہوں۔

    کسی فرقہ پر گمراہی کا حکم نہیں لگانا چاہیے یہ تو اللہ کا کام ہے۔

    مولانا مودودی کی اچھی باتیں لے لی جائیں اور غلط باتیں چھوڑدی جائیں۔


    اللہ تعالی ڈاکٹر صاحبہ کو، اور ہم سب کو حق کہنے کی، حق سمجھنے کی اور حق کی طرف رجوع کرنے کی توفیق عطا فرمائے۔ آمین۔
     
  4. ‏جنوری 16، 2016 #54
    اسحاق سلفی

    اسحاق سلفی فعال رکن رکن انتظامیہ
    جگہ:
    اٹک ، پاکستان
    شمولیت:
    ‏اگست 25، 2014
    پیغامات:
    6,366
    موصول شکریہ جات:
    2,395
    تمغے کے پوائنٹ:
    791

    اس آڈیو میں کوئی اور آدمی ڈاکٹر صاحبہ کا موقف بتا رہا ہے ۔
    اور ہمارے پاس اس بیان کی تصدیق کا کوئی ذریعہ نہیں ۔۔۔جب تک ان کی اپنی زبان و قلم سے مذکورہ باتیں سامنے نہ آئیں
     
    • متفق متفق x 2
    • شکریہ شکریہ x 1
    • لسٹ
  5. ‏جنوری 17، 2016 #55
    اسحاق سلفی

    اسحاق سلفی فعال رکن رکن انتظامیہ
    جگہ:
    اٹک ، پاکستان
    شمولیت:
    ‏اگست 25، 2014
    پیغامات:
    6,366
    موصول شکریہ جات:
    2,395
    تمغے کے پوائنٹ:
    791

    آج اس تھریڈ کو اول تا آخر توجہ سے پڑھا ،کافی فکر انگیز اور حساس تھریڈ ہے ؛
    اور بصد ادب گذارش ہے کہ :
    کسی کے منہج و مسلک کے متعلق سوال نہ صرف جائز بلکہ ضروری ہے ،بالخصوص اس دور فتن میں ۔۔
    لیکن کسی پر دینی لحاظ سے جرح ۔۔ثبوت و دلیل ۔۔کی بنیاد پر ہونی چاہئے ۔
    ــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــ
    اور میں نے ڈاکٹر صاحبہ کو تفصیل سے تو نہیں سنا ۔۔کہ ان کے افکار و منہج کے متعلق کوئی رائے دے سکوں ،
    لیکن ان کی دعوت اور تعلیم کی وجہ سے جن لوگوں نے اپنی زندگی اور عقیدہ و فکر کا رخ بدلا ،
    ان میں دو خواتین (جن کا تعارف یہاں نہیں کروا سکتا ) کے احوال جان کر دل سے ڈاکٹر صاحبہ کیلئے دعاء نکلی ۔

    والله اعلم
     
    Last edited: ‏جنوری 17، 2016
    • شکریہ شکریہ x 1
    • پسند پسند x 1
    • زبردست زبردست x 1
    • لسٹ
  6. ‏دسمبر 11، 2016 #56
    muftiabdullah

    muftiabdullah رکن
    جگہ:
    Karachi, Pakistan
    شمولیت:
    ‏مارچ 06، 2014
    پیغامات:
    7
    موصول شکریہ جات:
    3
    تمغے کے پوائنٹ:
    44

    اللہ تعالی رحم فرماے انسان کبھی انسان کو معاف نہیں کرتا
    رجوع نامکمل ہے اب اس کے لیے دلایل ؟؟؟؟؟؟؟؟؟
     
  7. ‏دسمبر 11، 2016 #57
    muftiabdullah

    muftiabdullah رکن
    جگہ:
    Karachi, Pakistan
    شمولیت:
    ‏مارچ 06، 2014
    پیغامات:
    7
    موصول شکریہ جات:
    3
    تمغے کے پوائنٹ:
    44

    یہ وضاحت آچکا ہے ایڈٹ بھی ہوچکا ہے ڈاکٹر صاحبہ کی نیکیاں الحمدللہ بہت زیادہ ہیں اور ان الحسنات یذھبن ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
     
  8. ‏دسمبر 11، 2016 #58
    muftiabdullah

    muftiabdullah رکن
    جگہ:
    Karachi, Pakistan
    شمولیت:
    ‏مارچ 06، 2014
    پیغامات:
    7
    موصول شکریہ جات:
    3
    تمغے کے پوائنٹ:
    44

    توبہ استغفار
    وَقَالَتِ الْيَهُودُ لَيْسَتِ النَّصَارَى عَلَى شَيْءٍ وَقَالَتِ النَّصَارَى لَيْسَتِ الْيَهُودُ عَلَى شَيْءٍ وَهُمْ يَتْلُونَ الْكِتَابَ كَذَلِكَ قَالَ الَّذِينَ لا يَعْلَمُونَ مِثْلَ قَوْلِهِمْ فَاللَّهُ يَحْكُمُ بَيْنَهُمْ يَوْمَ الْقِيَامَةِ فِيمَا كَانُوا فِيهِ يَخْتَلِفُونَ ( 113 )

    آج کل مسلمانوں کی فرقوں کی علماء بھی یہی کہتے ہیں
     
  9. ‏دسمبر 11، 2016 #59
    مفتی عبداللہ

    مفتی عبداللہ مشہور رکن
    جگہ:
    کراچی
    شمولیت:
    ‏جولائی 21، 2011
    پیغامات:
    518
    موصول شکریہ جات:
    2,176
    تمغے کے پوائنٹ:
    171


    ڈاکٹر ذاکر نایک صاحب حفظہ اللہ تعالی کی رای محترمہ ڈاکٹر فرحت ہاشمی صاحبہ کی متعلق
     
  10. ‏دسمبر 11، 2016 #60
    مفتی عبداللہ

    مفتی عبداللہ مشہور رکن
    جگہ:
    کراچی
    شمولیت:
    ‏جولائی 21، 2011
    پیغامات:
    518
    موصول شکریہ جات:
    2,176
    تمغے کے پوائنٹ:
    171

    پھر تو اہل حدیث سے بہتر لفظ اہل قرآن ہے یا پھر اہل القرآن واہل الحدیث
     
لوڈ کرتے ہوئے...

اس صفحے کو مشتہر کریں