1. آئیے اہم اسلامی کتب کو یونیکوڈ میں انٹرنیٹ پر پیش کرنے کے لئے مل جل کر آن لائن ٹائپنگ کریں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ کے ذریعے آپ روزانہ فقط دس پندرہ منٹ ٹائپنگ کر کے ہزاروں صفحات پر مشتمل اہم ترین کتب کو ٹائپ کرنے میں اہم کردار ادا کرکے صدقہ جاریہ میں شامل ہو سکتے ہیں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ میں شمولیت کے لئے یہاں کلک کریں۔
  2. آئیے! مجلس التحقیق الاسلامی کے زیر اہتمام جاری عظیم الشان دعوتی واصلاحی ویب سائٹس کے ساتھ ماہانہ تعاون کریں اور انٹر نیٹ کے میدان میں اسلام کے عالمگیر پیغام کو عام کرنے میں محدث ٹیم کے دست وبازو بنیں ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔

یادگار سلف مولانا عبد اللہ غازی پوری

'تعارف کتاب' میں موضوعات آغاز کردہ از خضر حیات, ‏اگست 01، 2019۔

  1. ‏اگست 01، 2019 #1
    خضر حیات

    خضر حیات علمی نگران رکن انتظامیہ
    جگہ:
    طابہ
    شمولیت:
    ‏اپریل 14، 2011
    پیغامات:
    8,754
    موصول شکریہ جات:
    8,330
    تمغے کے پوائنٹ:
    964

    یادگارِ سلف۔۔۔!
    بر صغیر پاک و ہند میں جن اصحابِ عزیمت نے عمر بھر گلشنِ توحید و سنت کی آبیاری کی اور بزمِ تدریس کو رونق بخشی، ان میں ایک نمایاں نام استاذ الاساتذہ حافظ محمد عبد اللہ غازی پوری رحمہ اللہ کا بھی ہے۔
    آپ سلفیانِ برصغیر کی اولین تنظیم " آل انڈیا اہلِ حدیث کانفرنس " کے پہلے صدر اور میاں نذیر حسین محدث دہلوی رحمہ اللہ کے اخص تلامذہ سے تھے۔ بقول سید سلیمان ندوی مرحوم: 'آپ کا حلقہ تلامذہ میاں صاحب محدث دہلوی کے بعد ان کے شاگردوں میں سب سے وسیع تھا'۔
    حافظ غازی پوری رحمہ اللہ نے 53 سال درس و تدریس، تصنیف و تالیف، دعوت و تبلیغ اور دیگر ملی و ملکی خدمات کی انجام دہی میں بسر کیے اور سیکڑوں ہزاروں لوگ آپ کے دامنِ علم و عمل سے مستفید ہوئے۔لیکن افسوس کی بات یہ ہے کہ اب تک اس عالم جلیل کے احوال و آثار پردہ اخفا میں تھے۔ بنا بریں زیر نظر کتاب میں اسی محدث کبیر کے حالات و خدمات پر روشنی ڈالی گئی ہے اور ان کی مساعی جمیلہ کو اجاگر کیا گیا ہے۔
    علاوہ ازیں حافظ غازی پوری رحمہ اللہ جن اداروں، جماعتوں اور معاصر تحریکوں کے ساتھ مل کر کام کرتے رہے، نایاب تاریخی مصادر کی روشنی میں ان کا مفصل تعارف بھی کتاب میں موجود ہے جن میں تحریک مجاہدین ہند، آل انڈیا اہل حدیث کانفرنس، مدرسہ احمدیہ آرہ، جامعہ ریاض العلوم دہلی وغیرہ شامل ہیں۔
    شیخ ارشاد الحق اثری حفظہ اللہ اور مولانا محمد ابو القاسم فاروقی ( بنارس۔ انڈیا) نے کتاب پر نظر ثانی کی ہے اور شیخ اثری حفظہ اللہ نے مفصل تاریخی و معلوماتی مقدمہ بھی لکھا ہے۔ جزاھما اللہ خیرا
    یہ کتاب 600 صفحات پر مشتمل ہے اور مکتبہ بیت السلام لاہور ( 04237320422) سے مل سکتی ہے۔ بذریعہ ڈاک منگوانے کی سہولت بھی موجود ہے۔
    (حافظ شاہد رفیق صاحب)
     
لوڈ کرتے ہوئے...

اس صفحے کو مشتہر کریں