1. آئیے اہم اسلامی کتب کو یونیکوڈ میں انٹرنیٹ پر پیش کرنے کے لئے مل جل کر آن لائن ٹائپنگ کریں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ کے ذریعے آپ روزانہ فقط دس پندرہ منٹ ٹائپنگ کر کے ہزاروں صفحات پر مشتمل اہم ترین کتب کو ٹائپ کرنے میں اہم کردار ادا کرکے صدقہ جاریہ میں شامل ہو سکتے ہیں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ میں شمولیت کے لئے یہاں کلک کریں۔
  2. آئیے! مجلس التحقیق الاسلامی کے زیر اہتمام جاری عظیم الشان دعوتی واصلاحی ویب سائٹس کے ساتھ ماہانہ تعاون کریں اور انٹر نیٹ کے میدان میں اسلام کے عالمگیر پیغام کو عام کرنے میں محدث ٹیم کے دست وبازو بنیں ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔

یا رسول اللہ ( صل اللہ علیہ و آلہ و سلم ) مدد کہنا...

'توحید اسماء وصفات' میں موضوعات آغاز کردہ از ایک گنہگار, ‏اکتوبر 02، 2014۔

  1. ‏اکتوبر 02، 2014 #11
    میرب فاطمہ

    میرب فاطمہ مشہور رکن
    جگہ:
    لاھور
    شمولیت:
    ‏جون 06، 2012
    پیغامات:
    195
    موصول شکریہ جات:
    214
    تمغے کے پوائنٹ:
    107

    جنگِ یمامہ میں مسلیمہ کذاب کے ساتھ فوج کی تعداد ساٹھ ہزار تھی، جبکہ مسلمانوں کی تعداد کم تھی۔ مقابلہ بہت شدید تھا۔ ایک وقت نوبت یہاں تک پہنچ گئی کہ مسلمان مجاہدین کے پاؤں اکھڑنے لگے۔ سیدنا خالد بن ولید رضی اللہ عنہ سپہ سالار تھے۔ انہوں نے یہ حالت دیکھی تو:
    و نادی بشعارھم یومئذ، و کان شعارھم یومئذ: یا محمداہ !
    "انہوں نے مسلمانوں کا نعرہ بلند کیا۔ اس دن مسلمانوں کا نعرہ یَامحمداہ تھا۔"
    (تاریخ الطبری: 181/2 ، البدایۃ النھایۃ لابن کثیر: 324/6)
    موضوع(من گھڑت): یہ روایت موضوع ہے، کیونکہ:
    ٭ اس میں سیف بن عمر کوفی راوی بالاتفاق "ضعیف و متروک" موجود ہے۔
    ٭ شعیب بن ابراہیم کوفی "مجہول" ہے۔
    ٭ ضحاک بن یربوع کی توثیق نہیں ملی۔
    ٭اس کا باپ یربوع کیسا ہے؟ معلوم نہیں ہوسکا۔
    ٭ رجل من سحیم کا کوئی اتہ پتہ نہیں۔
     
    • زبردست زبردست x 4
    • پسند پسند x 2
    • لسٹ
  2. ‏اکتوبر 02، 2014 #12
    ایک گنہگار

    ایک گنہگار مبتدی
    شمولیت:
    ‏اگست 28، 2014
    پیغامات:
    72
    موصول شکریہ جات:
    26
    تمغے کے پوائنٹ:
    18

    محترمہ میرب صاحبہ...
    براہ کرم ...حوالہ جات؟؟؟؟
     
  3. ‏اکتوبر 02، 2014 #13
    محمد عامر یونس

    محمد عامر یونس خاص رکن
    جگہ:
    karachi
    شمولیت:
    ‏اگست 11، 2013
    پیغامات:
    16,957
    موصول شکریہ جات:
    6,505
    تمغے کے پوائنٹ:
    1,069

  4. ‏اکتوبر 02، 2014 #14
    ایک گنہگار

    ایک گنہگار مبتدی
    شمولیت:
    ‏اگست 28، 2014
    پیغامات:
    72
    موصول شکریہ جات:
    26
    تمغے کے پوائنٹ:
    18

    جزاکم اللہ خیراً. .. بس
    @محمد عامر یونس بهائی اس لنک پر بهی وہی کچھ لکها ہے. کن محدثین نے ان پر ضعیف کا حکم لگایا ہے، یہ نہیں لکها. وہ اگر مل جائے تو بہترین ہو گا. ان شاءالله
     
  5. ‏اکتوبر 02، 2014 #15
    قادری رانا

    قادری رانا رکن
    شمولیت:
    ‏جون 20، 2014
    پیغامات:
    668
    موصول شکریہ جات:
    54
    تمغے کے پوائنٹ:
    93

    یمامہ جنگ میں کفار بھی تکبیر کہتے تھے
    تھا فرق مومن اور کافر میں نعرہ یا رسول اللہ
     
  6. ‏اکتوبر 02، 2014 #16
    قادری رانا

    قادری رانا رکن
    شمولیت:
    ‏جون 20، 2014
    پیغامات:
    668
    موصول شکریہ جات:
    54
    تمغے کے پوائنٹ:
    93

    یہاں کیونکہ اس مسئلہ پر بحث نہیں ہورہی اور نہ ہی ہم نے کرنی ہے مگر صرف ایک بات وہابی حضرات کے مولوی وحید الزمان کے قلم سے
    یامحمد یا عبد القادر پکارنے کو شرک کہنا عجیب بات ہے (ھدیۃ المہدی ج 2 ص 23)
    پھر عبد الغفور اثری نے پوری کتاب لکھی دی کہ نعرہ یا رسول اللہ جائز ہے ۔ملاحظہ ہو نعرہ یا محمد کی تحقیق ۔میری صرف ایک گزارش ہے اگر تو یا رسول اللہ کہنا شرک ہے تو مندرجہ بالا حضرات کو بلا تردد مشرک قرار دیا جائے۔جزاک اللہ
     
  7. ‏اکتوبر 02، 2014 #17
    میرب فاطمہ

    میرب فاطمہ مشہور رکن
    جگہ:
    لاھور
    شمولیت:
    ‏جون 06، 2012
    پیغامات:
    195
    موصول شکریہ جات:
    214
    تمغے کے پوائنٹ:
    107

    1.جهالة الرجل السحيمي الراوي عن خالد بن الواليد.
    2.الضحاك بن يربوع قال الذهبي: "قال الأزدي: حديثه ليس بالقائم".
    3.سيف بن عمر التميمي الأسدي قال الذهبي: "له تواليف متروك باتفاق، وقال ابن حبان: اتهم بالزندقة. قلت: أدرك التابعين وقد اتهم، قال ابن حبان: يروي الموضوعات".
    4.شعيب هو ابن إبراهيم الكوفى قال ابن حجر: "راوية كتب سيف عنه فيه جهالة انتهى. ذكره ابن عدى وقال: ليس بالمعروف وله أحاديث وأخبار وفيه بعض النكرة وفيها ما فيه تحامل على السلف".
     
    Last edited: ‏اکتوبر 02، 2014
  8. ‏اکتوبر 02، 2014 #18
    میرب فاطمہ

    میرب فاطمہ مشہور رکن
    جگہ:
    لاھور
    شمولیت:
    ‏جون 06، 2012
    پیغامات:
    195
    موصول شکریہ جات:
    214
    تمغے کے پوائنٹ:
    107

    وحید الزماں کو ہم اھلحدیث نہیں مانتے اور باقی رہی دوسری بات تو اگر اس کو آپ اپنی نظریے سے ہٹ کر پڑھیں تو شاید بات سمجھ جائیں۔۔ ورنہ ضد کا کوئی علاج نہیں۔
     
  9. ‏اکتوبر 02، 2014 #19
    قادری رانا

    قادری رانا رکن
    شمولیت:
    ‏جون 20، 2014
    پیغامات:
    668
    موصول شکریہ جات:
    54
    تمغے کے پوائنٹ:
    93

    ہاہاہا۔۔۔۔۔جناب ہمیں مشرک کہہتے وقت تو آپ کو کوئی تردد نہیں ہوتا ادھر کیوں؟؟وحید الزمااہلحدیث نہیں تو مشرک کہو؟؟کیوں نہیں کہتیں آپ؟؟؟؟؟؟؟؟؟باقی جب تراجم کی بات ہو تو ہمارا وحید الزاماں (پاک و ہند میں اہلحدیث کی خدمات حدیث) اور جب کو ئی مطلب کے خلاف بات ہو تو ہمارا نہیں؟اگر تمہارا نہیں تو کہو مشرک اے۔پھر جناب عبد الغفور اثری صاحب کی بات کا بھی جواب دے۔
     
  10. ‏اکتوبر 02، 2014 #20
    میرب فاطمہ

    میرب فاطمہ مشہور رکن
    جگہ:
    لاھور
    شمولیت:
    ‏جون 06، 2012
    پیغامات:
    195
    موصول شکریہ جات:
    214
    تمغے کے پوائنٹ:
    107

لوڈ کرتے ہوئے...
متعلقہ مضامین
  1. زیشان علی
    جوابات:
    2
    مناظر:
    142
  2. محمد عامر یونس
    جوابات:
    1
    مناظر:
    455
  3. بنتِ تسنيم
    جوابات:
    0
    مناظر:
    656
  4. عامر عدنان
    جوابات:
    4
    مناظر:
    958
  5. Hina Rafique
    جوابات:
    2
    مناظر:
    552

اس صفحے کو مشتہر کریں