1. آئیے اہم اسلامی کتب کو یونیکوڈ میں انٹرنیٹ پر پیش کرنے کے لئے مل جل کر آن لائن ٹائپنگ کریں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ کے ذریعے آپ روزانہ فقط دس پندرہ منٹ ٹائپنگ کر کے ہزاروں صفحات پر مشتمل اہم ترین کتب کو ٹائپ کرنے میں اہم کردار ادا کرکے صدقہ جاریہ میں شامل ہو سکتے ہیں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ میں شمولیت کے لئے یہاں کلک کریں۔
  2. آئیے! مجلس التحقیق الاسلامی کے زیر اہتمام جاری عظیم الشان دعوتی واصلاحی ویب سائٹس کے ساتھ ماہانہ تعاون کریں اور انٹر نیٹ کے میدان میں اسلام کے عالمگیر پیغام کو عام کرنے میں محدث ٹیم کے دست وبازو بنیں ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔

اردو ادب عالیہ کا المیہ

'اردو زبان وادب' میں موضوعات آغاز کردہ از یوسف ثانی, ‏نومبر 01، 2014۔

  1. ‏نومبر 01، 2014 #1
    یوسف ثانی

    یوسف ثانی فعال رکن رکن انتظامیہ
    جگہ:
    پاکستان
    شمولیت:
    ‏ستمبر 26، 2011
    پیغامات:
    2,763
    موصول شکریہ جات:
    5,270
    تمغے کے پوائنٹ:
    562

    کل میں انسان کی عظمت پر لکھ رہا تھا که اچانک محلے میں بہت شور سنائی دینے لگا. باہر نکل کر دیکھا تو آدمی آدمی پر بھونک رہا تھا اور ساتھ ہی کچھ کتے میٹھی نیند سوۓ ھوئے تھے.(کرشن چندر)
     
    • شکریہ شکریہ x 1
    • پسند پسند x 1
    • زبردست زبردست x 1
    • لسٹ
  2. ‏نومبر 01، 2014 #2
    یوسف ثانی

    یوسف ثانی فعال رکن رکن انتظامیہ
    جگہ:
    پاکستان
    شمولیت:
    ‏ستمبر 26، 2011
    پیغامات:
    2,763
    موصول شکریہ جات:
    5,270
    تمغے کے پوائنٹ:
    562

    فیس بُک پر یہ اقتباس پڑھنے کے بعد میرا تبصرہ:
    سماج کے ”اچھے کرداروں“ کی خامیوں اور ”برے کرداروں“ کی خوبیوں کو فنی چابکدستی سے نمایاں کرکے سفید کو سیاہ اور سیاہ کو سفید ثابت کرنے میں اردو کے ادب عالیہ کا جواب نہیں ہے۔ اور یہی اردو ادب کا سب سے بڑا المیہ ہے۔۔ کرشن چندر کے اس ”ادبی شہ پارہ“ کے مطابق تو کتا انسان (کرشن چندر) سے افضل قرار پاتا ہے ؟ کیا ایسا ہی ہے ؟
     
    • پسند پسند x 2
    • شکریہ شکریہ x 1
    • لسٹ
  3. ‏نومبر 01، 2014 #3
    makki pakistani

    makki pakistani سینئر رکن
    شمولیت:
    ‏مئی 25، 2011
    پیغامات:
    1,325
    موصول شکریہ جات:
    3,028
    تمغے کے پوائنٹ:
    282

    یہ صرف اردو ادب کا المیہ نھیں بلکہ انسانیت کا بھی المیہ ھے ۔کرشن چندر نے شائد جو دیکھا اسکو ادب میں آداب کے ساتھ سمو دیا،مگر آج جو جوگ باقائدہ "مجلس لگا کر"صوتی اثرات کے ساتھ اور کچھ لوگ تحریری شکل میں اپنے آپکو باقائدہ "کتے"(سایئکل کے نھیں)یا سگ (شائد یہ زیادہ مھذب ) ھونے کا عملی ثبوت دیتے ھیں ۔اسکو کونسا المیہ کہیں گے؟
     
    • شکریہ شکریہ x 2
    • پسند پسند x 1
    • متفق متفق x 1
    • غیرمتعلق غیرمتعلق x 1
    • لسٹ
  4. ‏نومبر 02، 2014 #4
    مشکٰوۃ

    مشکٰوۃ سینئر رکن
    جگہ:
    اللہ کی رحمتوں کے زیر سائے ان شاء اللہ
    شمولیت:
    ‏ستمبر 23، 2013
    پیغامات:
    1,466
    موصول شکریہ جات:
    926
    تمغے کے پوائنٹ:
    237

    اللہ تعالیٰ نے انسان کو اشرف المخلوقات بنایا ہے تو اس کی کچھ خوبیاں بھی ہیں ورنہ کالانعام ہو نے میں کیا شبہ؟؟؟
    غالبا کرشن چندر کو بھی میری طرح کچھ ایسے ہی مل گئے ہوں گے جنہیں انسان کہنا انسانیت کی توہین ہے ۔۔۔
    ویسے تشبیہات استعاروں کی مدد سے کرشن چندر سے کتا افضل ہوا تو یکے بعد دیگرے یہاں کسی سے لومڑی افضل ہوگی اور کسی سے سانپ ،کہیں سے گیدڑ کی افضلیت کا ذکر چھڑ جائے گا تو کہیں گدھ انسان کا سردار کہلائے گا۔۔۔۔
     
    • پسند پسند x 1
    • مفید مفید x 1
    • لسٹ
لوڈ کرتے ہوئے...

اس صفحے کو مشتہر کریں