• الحمدللہ محدث فورم کو نئےسافٹ ویئر زین فورو 2.1.7 پر کامیابی سے منتقل کر لیا گیا ہے۔ شکایات و مسائل درج کروانے کے لئے یہاں کلک کریں۔
  • آئیے! مجلس التحقیق الاسلامی کے زیر اہتمام جاری عظیم الشان دعوتی واصلاحی ویب سائٹس کے ساتھ ماہانہ تعاون کریں اور انٹر نیٹ کے میدان میں اسلام کے عالمگیر پیغام کو عام کرنے میں محدث ٹیم کے دست وبازو بنیں ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔

اسم معرب کی تعریف، حکم اور اعراب کی اقسام

شمولیت
اپریل 27، 2020
پیغامات
202
ری ایکشن اسکور
44
پوائنٹ
41
اسم معرب کی تعریف، حکم اور اعراب کی اقسام

فصل 1- تعریف اسم معرب
س:- اسم معرب سے کیا مراد ہے ؟
ج:- یہ وہ اسم ہے جو اپنے غیر کے ساتھ مرکب ہو اور مبنی اصل کے مشابہ نہ ہو- اور عامل موجود ہو-
س:- مبنی اصل سے کیا مراد ہے ؟
ج:- مبنی اصل سے مراد حرف، امر حاضر اور فعل ماضی ہیں-
س:- معرب کا دوسرا نام کیا ہے ؟
ج:- اسم متمکّن-
س:- کیا فقط "زید" معرب ہے ؟
ج:- نہیں کیونکہ اس کا اسناد غیر کے ساتھ نہیں ہورہا ہے-
س:- کیا "ھؤلاء" معرب ہے؟
ج:- نہیں کیونکہ مبنی الاصل یعنی حرف ہے-

فصل 2 - حکم اسم معرب
س:- معرب کا حکم/خاصیت کیا ہے؟
ج:- اس کا آخر عوامل کے اختلاف سے بدل جاتا ہے-
س:- اختلاف کی کتنی اقسام ہیں ؟
ج:- دو لفظاً و تقدیراً-
س:- لفظاً کی مثال دیں-
ج:- " جاءنی زیدٌ " ، " رائیتُ زيدًا " ، " مررتُ بزيدٍ "
س:- تقدیراً کی مثال دیں-
ج:- " جاءنی موسی " ، " رائیتُ موسی " ، " مررتُ بموسی "(یعنی موسی تینوں حالتوں میں نہیں بدلا)
س:- اعراب سے کیا مراد ہے؟
ج:- اس کی وجہ سے معرب اسم کا آخر بدلتا ہے جیسے ضمۃ ، فتحۃ ، کسرۃ –
س:- وہ کون سے کلمات ہیں جن کا آ‏‏خر عوامل کے اختلاف سے بدلتا ہے؟
ج:- اسم معرب و منصرف و متمکّن اور فعل مضار‏ع (بس یہ دو ہی صورتیں ہیں)

فصل 3 - اقسام اعراب
س:- اسم معرب کے اعراب کی کتنی اقسام ہیں ؟
ج:- یہ نو ہیں-
س:- پہلی قسم کون سی ہے ؟
ج:- رفع " ضمۃ " کے ساتھ - نصب " فتح " کے ساتھ - جر " کسرۃ " کے ساتھ
س:- یہ کن صورتوں میں واقع ہوتا ہے ؟
ج:- تین صورتوں میں
1)مفرد منصرف صحیح کے ساتھ
2)قا‏ئم مقام صحیح (جاری مجری صحیح) کے ساتھ
3)جمع مکسر منصرف کے ساتھ
س:- مفرد منصرف صحیح سے کیا مراد ہے ؟
ج:- یہ وہ اسم ہے جس کے آخر میں حرف علت نہ ہو- مثلاً " زیدٌ " اور " قا‏ئمٌ " –
س:- جاری مجری صحیح سے کیا مراد ہے ؟
ج:- وہ اسم جس کے آخر میں " واؤ " یا " یاء " ما قبل ساکن ہو مثلاً" ونْوٌ " ، " ظبْيٌ "-
س:- جمع مکسر منصرف سے کیا مراد ہے ؟
ج:- اسم کی ایسی جمع جس میں منفرد کا وزن سلامت نہ ہو مثلاً " رجلٌ " سے " رجالٌ "-
س:- اس جمع میں کس سے اعتراز ہے ؟
ج:- اس جمع سے اعتراز ہے جو غیر منصرف ہو اور سالم سے اعتراز ہے دونوں کے الگ الگ اعراب ہوتے ہیں-
س:- اعراب کی دوسری قسم کون سی ہے ؟
ج:- رفع " ضمۃ " کے ساتھ - نصب " کسرۃ " کے ساتھ - جر " کسرۃ " کے ساتھ
س:- یہ کن صورتوں میں واقع ہوتا ہے ؟
ج:- جمع مونث سالم کے ساتھ –
س:- جمع مونث سالم کی مثال دیں –
ج: " مُسْلِمَاتٌ " , " مُسْلِمَاتٍ " , " مُسْلِمَاتٍ "
‎‎س:- اعراب کی تیسری قسم کون سی ہے ؟
ج:- رفع " ضمۃ " کے ساتھ - نصب " فتح " کے ساتھ - جر " فتح " کے ساتھ
س:- یہ کس صورت میں واقع ہوتا ہے ؟
ج:- غیر منصرف کے ساتھ مثلاً " جاءنی عمرُ " ، " را‏ئیتُ عمرَ " ، " مررت بِعمرَ " –
‎‎س:- اعراب کی چوتھی قسم کون سی ہے ؟
ج:- رفع " واؤ " کے ساتھ - نصب " الف " کے ساتھ - جر " یاء " کے ساتھ
س:- یہ کس صورت میں واقع ہوتا ہے ؟
ج:- اسماۓ ستہ مکبّرۃ کے ساتھ
س:- مگر اس میں شرائط کتنی ہیں ؟
ج:- دو شرائط ہیں
1)واحد کے صیغے میں ہو
2)مضاف ہو یاء متکلم کے علاوہ کسی دوسری ضمیر کی طرف
س:- وہ اسماۓ ستہ مکبّرۃ کون کون سے ہیں ؟
ج:- 1) اخوك2) ابوك3) حنوك4) حموك5) فوك6) ذومال
‎‎س:- اعراب کی پانچویں قسم کون سی ہے ؟
ج:- رفع " الف " کے ساتھ - نصب " یاء ما قبل مفتوح " کے ساتھ - جر " یاء ما قبل مفتوح " کے ساتھ
س:- یہ کس صورت میں واقع ہوتا ہے ؟
ج:- تین صورتوں میں
1)تثنیہ کے ساتھ
2)كِلْتَ اور كِلا ، کے ساتھ جب کہ وہ ضمیر کی طرف مضاف ہو- (اسم ظاہر کی طرف نہ ہو) - (معنی ہر دو)
3)اثنانِ اور اثنتانِ کے ساتھ (دو مذکر و مونث) یہ تثنیہ نہیں بلکہ الفاظ ہیں -
س:- اگر كِلْتَ اور كِلا اسم ظاہر کی طرف مضاف ہو تو اعراب کیا ہوگا ؟
ج:- تقدیری تینوں حالتوں میں –
س:- اعراب کی چھٹی قسم کون سی ہے ؟
ج:- رفع " واؤ ما قبل مضموم " کے ساتھ - نصب " یاء ما قبل مکسور " کے ساتھ - جر " یاء ما قبل مکسور " کے ساتھ
س:- یہ کس صورت میں واقع ہوتا ہے ؟
ج:- تین صورتوں میں
1)جمع مذکر سالم کے ساتھ
2) أُولو کے ساتھ
3)عشرون اور اس کے اخوات کے ساتھ
س:- عشرون کے اخوات کون سے ہیں ؟
ج:- ثلثون ، اربعون ، خمسون ، ستون ، سبعون ، ثمانون ، تسعون –
س:- نون تثنیہ اور نون جمع سالم میں کیا فرق ہے ؟
ج:- تثنیہ کا نون ہمیشہ مکسور ہوتا ہے اور جمع سالم کا نون ہمیشہ مفتوح ہوتا ہے –
س:- اضافت کا ان پر کیا اثر ہوتا ہے ؟
ج:- یہ دونوں ساقط ہو جاتے ہیں مثلاً " جاءنی غلامًا زیدٍ " ، " مسلمو مصرٍ " –
س:- اعراب کی ساتویں قسم کون سی ہے ؟
ج:- رفع " ضمہ تقدیری " کے ساتھ - نصب " قتحہ تقدیری " کے ساتھ - جر " کسرۃ تقدیری " کے ساتھ
س:- یہ کس صورت میں واقع ہوتا ہے ؟
ج:- دو صورتوں میں
1)اسم مقصورۃ کے ساتھ
2)اسم جو یاء متکلم کی طرف مضاف ہو اور جمع مذکر سالم نہ ہو، کے ساتھ
س:- اسم مقصورۃ سے کیا مراد ہے ؟
ج:- وہ اسم جس کے آخر میں الف مقصورۃ ہو مثلاً " عصا "-
س:- بالمضاف الی یاء المتکلم غیر جمع المذکر السالم کی مثال دیں –
ج:- " غلامی "
س:- اعراب کی آٹھویں قسم کون سی ہے ؟
ج:- :- رفع " ضمہ تقدیری " کے ساتھ - نصب " قتحہ لفظی " کے ساتھ - جر " کسرۃ تقدیری " کے ساتھ
س:- یہ کس صورت میں واقع ہوتا ہے ؟
ج:- اسم منقوص کے ساتھ
س:- اسم منقوص سے کیا مراد ہے ؟
ج:- اسم منقوص وہ اسم ہے جس کے آخر میں یاء ما قبل مکسور (کسرۃ) ہو – مثلاً قاضی
س:- اعراب کی نویں قسم کون سی ہے ؟
ج:- رفع " واؤ تقدیری " کے ساتھ - نصب " یاء لفظی " کے ساتھ - جر " یاء لفظی " کے ساتھ
س:- یہ کس صورت میں واقع ہوتا ہے ؟
ج:- جمع مذکر سالم (جو یاء متکلم کی طرف مضاف ہو) کے ساتھ
س:- مثال دیں
ج:- جیسے کہا جاۓ " جاءنی مُسْلِمّی " اصل میں " مُسْلِمُونَ " تھا واؤ اور یاء ایک جگہ جمع ہوۓ – ان دونوں میں سے پہلا ساکن ہے پس واؤ کو یاء سے بدل دیا گیا اور یاء میں ادغام کردیا گیا – اور میم کا ضمہ ، کسرۃ سے بدل گیا یاء کی مناسبت کی وجہ سے
پس " مسلمّی " ہو گیا-
 
Top