• الحمدللہ محدث فورم کو نئےسافٹ ویئر زین فورو 2.1.7 پر کامیابی سے منتقل کر لیا گیا ہے۔ شکایات و مسائل درج کروانے کے لئے یہاں کلک کریں۔
  • آئیے! مجلس التحقیق الاسلامی کے زیر اہتمام جاری عظیم الشان دعوتی واصلاحی ویب سائٹس کے ساتھ ماہانہ تعاون کریں اور انٹر نیٹ کے میدان میں اسلام کے عالمگیر پیغام کو عام کرنے میں محدث ٹیم کے دست وبازو بنیں ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔

جنت میں لے جانے والے اعمال

شمولیت
اگست 11، 2013
پیغامات
17,066
ری ایکشن اسکور
6,725
پوائنٹ
1,069
بسم اللہ الرحمن الرحیم

جنت میں لے جانے والے اعمال

نحمدہ ونصلی علی رسولہ الکریم

جنت میں جانے کیلئے جو اعمال درکار ہیں ان کو یہاں پر احادیث صحیحہ کی روشنی میں مع حوالہ کتب و حدیث نمبر پیش کیے جاتے ہیں:


(1) ﷲ اور اس کے رسول صلی ﷲ علیہ وسلم اور دین اسلام پر ایمان لانے میں خوشی محسوس کرنا:

حضرت ابو سعید خدری رضی ﷲ عنہ سے روایت ہے کہ نبی اکرم صلی ﷲ علیہ وسلم نے فرمایا:

'' جس شخص نے یوں کہا : میں ﷲ کے رب ہونے پر ، اسلام کے دین ہونے پر اور محمد صلی ﷲ علیہ وسلم کے رسول ہونے پر راضی ہوں اس کیلئے جنت واجب ہوگئی .''


(ابوداؤد ، 1353/1)


(2) رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم کی اطاعت کرنا:

حضرت ابو ھیریرة رضی ﷲ عنہ سے روایت ہے کہ نبی اکرم صلی ﷲ علیہ وسلم نے فرمایا:

''میری تمام امت جنت میں داخل ہوگی مگر جس نے انکار کیا ( وہ جنت میں داخل نہیں ہوگا) '' صحابہ کرام رضوان ﷲ اجمعین نے عرض کیا '' یا رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم کس نے انکار کیا ؟'' آپ صلی ﷲ علیہ وسلم نے ارشاد فرمایا '' جس نے میری اطاعت کی وہ جنت میں داخل ہوگیا اور جس نے نافرمانی کی اس نے انکار کیا.''

( بخاری ،2797)

(3) نرم مزاجی ، عاجزی ، نرم دلی اور حلیم الطبع صفات:

حضرت ابوھریرة رضی ﷲ عنہ سے روایت ہے کہ نبی اکرم صلی ﷲ علیہ وسلم نے فرمایا:

'' جنت میں ایسے لوگ داخل ہوں گے جن کے دل چڑیوں جیسے ہوں گے''.(یعنی چڑیوں کی طرح ان کے دل نرم ہوں گے)

(مسلم،2840)

(4) غریبی، فقیری اور محتاجی:

حضرت حارثہ بن وھب رضی ﷲ عنہ نے نبی اکرم صلی ﷲ علیہ وسلم کو فرماتے ہوئے سنا آپ صلی ﷲ علیہ وسلم نے ارشاد فرمایا '' کیا تمہیں بتاؤں جنت میں جانے والے لوگ کون ہیں؟
'' صحابہ کرام نے عرض کیا '' کیوں نہیں''
آپ صلی ﷲ علیہ وسلم نے ارشاد فرمایا ''
ہر ناتواں ، لوگوں کے نزدیک کمزور ( لیکن ﷲ کے نزدیک برگزیدہ) اگر (کسی معاملے میں) ﷲ کی قسم کھالے تو ﷲ اسے سچا کردے '' .
پھر فرمایا '' کیا میں تمہیں جہنم میں جانے والے لوگوں کے بارے میں نہ بتاؤں؟''
صحابہ کرام نے عرض کیا '' کیوں نہیں ''
آپ صلی ﷲ علیہ وسلم نے ارشاد فرمایا '' ہر جھگڑالو، بداخلاق اور تکبر کرنے والا ''

(مسلم،2853 )

(5) سنت مؤکدہ ادا کرنا :

حضرت ام حبیبہ رضی ﷲ عنہا رسول اکرم صلی ﷲ علیہ وسلم کی زوجہ محترمہ سے روایت ہے کہ انہوں نے رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم کو فرماتے سنا ہے کہ '' جو شخص روزانہ ﷲ کی رضا کیلئے فرضوں کے علاوہ بارہ رکعت نوافل ادا کرتا ہے ﷲ تعالیٰ اس کے لئے جنت میں ایک گھر بناتا ہے.''

( مسلم،728)

(6) شرک سے بچنا، نماز اور زکوة کی ادائیگی کرنا اور صلہ رحمی کرنا:

حضرت ابو ایوب رضی ﷲ عنہ کہتے ہیں کہ ایک آدمی نبی کریم صلی ﷲ علیہ وسلم کی خدمت میں حاضر ہوا اور عرض کیا مجھے کوئی ایسے عمل بتائیے جو مجھے جنت کے قریب اور جہنم سے دور کردے آپ صلی ﷲ علیہ وسلم نے ارشاد فرمایا '' ﷲ کی بندگی کر اور اس کے ساتھ کسی کو شریک نہ ٹھہرا ، نماز قائم کر ،زکوة ادا کر اور رحم والوں سے تعلق قائم رکھ''. جب وہ آدمی واپس پلٹا تو رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم نے فرمایا'' جن باتوں کا اسے حکم دیا گیا ہے اگر ان پرعمل کیا تو جنت میں داخل ہوگا''

(مسلم،13)

(7) خوش اخلاقی، تہجد گزاری، نفلی روزے رکھنا اور دوسروں کو کھانا کھلانا:

حضرت علی رضی ﷲ عنہ کہتے ہیں کہ رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم نے فرمایا'' جنت میں ایسے محل ہیں جن کے اندر (کھڑے ہوں) تو باہر کی ہر چیز نظر آتی ہے اور باہر(کھڑے ہوں) تو اندر کی ہر چیز نظر آتی ہے ''.ایک اعرابی نے کھڑے ہو کر عرض کیا'' اے ﷲ کے نبی صلی ﷲ علیہ وسلم ! یہ کس آدمی کے لئے ہے؟'' آپ صلی ﷲ علیہ وسلم نے ارشاد فرمایا '' اس کے لئے ہے جو اچھی بات کرے، کھانا کھلائے ، بکثرت روزے رکھے اور جب لوگ مزے کی نیند سو رہے ہوں اٹھ کر نماز پڑھے .''

(ترمذی ، حدیث حسن 2051/2 )

(8) عدل کرنا، پاکبازی ، نرم دلی اور دوسروں سے سوال نہ کرنا:

حضرت عیاض بن حمار مجاشعی رضی ﷲ عنہ سے روایت ہے کہ رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم نے ایک روز اپنے خطبہ میں ارشاد فرمایا '' جنت میں جانے والے تین قسم کے لوگ ہیں

(1) حاکم، انصاف کرنے ولا ، سچ بولنے والا اور نیک کاموں کی توفیق دیا گیا

(2) وہ شخص جو ہر قرابت دار اور ہر مسلمان کے لئے مہربان اور نرم دل ہے

(3) وہ شخص جو پاک دامن ہے اور عیالداری کے باوجود کسی سے سوال نہیں کرتا.''

(مسلم،2865)

(9) شریف مزاجی، لوگوں کا محبوب بننا:

حضرت عبد ﷲ بن مسعود رضی ﷲ عنہ کہتے ہیں رسول ﷲ صلی ﷲ وسلم نے فرمایا'' ہر وہ شخص جو نرم دل ہے شریف النفس ، منکسر مزاج ہے اور لوگوں سے قریب(یعنی ہر دلعزیز) ہے اس پر جہنم کی آگ حرام ہے.''

(احمد، صحیح البانی ، دیکھیں الجامع صغیر، جلد سوم ، حدیث 3130)

(10) دو یا دو سے زیادہ بیٹیوں کی پروارش کرنا:

حضرت انس بن مالک رضی ﷲ عنہ کہتے ہیں کہ رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم نے فرمایا'' جس نے دو لڑکیوں کو ان کے جوان ہونے تک پالا پوسا قیامت کے دن میں اور وہ اس طرح آئیں گے اور آپ صلی اﷲ علیہ وسلم نے انگلیوں کو آپس میں ملایا .''

(مسلم،2631)

جاری ہے ----
 
شمولیت
اگست 11، 2013
پیغامات
17,066
ری ایکشن اسکور
6,725
پوائنٹ
1,069
(11) وضو کے بعد دو رکعت نفل (تحیة الوضو ) باقاعدگی سے ادا کرنا:

حضرت ابوھریرة رضی ﷲ عنہ کہتے ہیں کہ رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم نے (ایک روز) نماز فجر کے بعد حضرت بلال رضی ﷲ عنہ سے پوچھا '' اے بلال! اسلام لانے کے بعد تمہارا وہ کون سا عمل ہے جس پر تمہیں بخشش کی زیادہ امید ہے کیوں کہ آج رات میں نے جنت میں اپنے آگے آگے تمہارے چلنے کی آواز سنی ہے.'' حضرت بلال رضی ﷲ عنہ نے عرض کیا '' میں اس سے زیادہ امید افزا عمل تو کوئی نہیں پاتا کہ دن یا رات میں جب بھی وضو کرتا ہوں تو جتنی ﷲ تعالیٰ کو منظور ہو نماز پڑھ لیتا ہوں.''

(بخاری،1098 و مسلم،2458)

(12) نماز ، روزے کی پابندی کرنا اور شوہر کی اطاعت کرنا، پاکبازی کے ساتھ رہنا:

حضرت ابوھریرة رضی ﷲ عنہ کہتے ہیں رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم نے فرمایا:'' جو عورت پانچ نمازیں ادا کرے، رمضان کے روزے رکھے، اپنی شرمگاہ کی حفاظت کرے اور اپنے شوہر کی اطاعت کرے (قیامت کے روز) اسے کہا جائے گا جنت کے (آٹھوں) دروازوں میں سے جس سے چاہو داخل ہو جاؤ .''

(ابن حبان ، صحیح جامع الصغیر ، للالبانی ، الجزء الاول حدیث 673 )

(13) ﷲ کی راہ میں جہاد کرنا:

حضرت معاذ بن جبل رضی ﷲ سے روایت ہے کہ نبی کریم صلی ﷲ علیہ وسلم نے فرمایا:'' جس آدمی نے ﷲ کی راہ میں اتنی دیر تک قتال کیا جتنی دیر اونٹنی کا دودھ دودھنے میں لگتی ہے ، اس پر جنت واجب ہوگئی.''

( ترمذی، حدیث صحیح 1353/2)

(14) یتیم کی کفالت کرنا :

حضرت ابوھریرة رضی ﷲ عنہ کہتے ہیں رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم نے فرمایا'' یتیم کی کفالت کرنے والا خواہ یتیم اس کا رشتہ دار ہو یا کوئی اور ہو، اور میں جنت میں ان دو انگلیوں کی طرح( ساتھ ساتھ) ہوں گے.'' .امام مالک رحمة ﷲ علیہ نے انگشت شہادت اور درمیانی انگلی سے اشارہ کرکے بتایا.

(مسلم،2983)

(15) حج مبرور کرنا:

حضرت ابوھریرة رضی ﷲ عنہ کہتے ہیں رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم نے فرمایا'' عمرہ ان تمام گناہوں کا کفارہ ہے جو موجودہ اور گزشتہ عمرہ کے درمیان سرزد ہوئے ہوں اور حج مبرور کا بدلہ تو جنت ہی ہے.''

(بخاری ، 1683 ومسلم،1349)

(16) مسجد بنانا:

حضرت عثمان بن عفان رضی ﷲ عنہ کہتے ہیں میں نے رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ کو فرماتے ہوئے سنا '' جس نے ﷲ کے لئے مسجد بنائی ﷲ تعالیٰ اس کے لئے اسی طرح کا گھر جنت میں بنائے گا.''

(مسلم،533)

(17)شرم گاہ اور زبان کی حفاظت کرنا:

حضرت سہل بن سعد رضی ﷲ عنہ کہتے ہیں رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم نے فرمایا '' جو شخص مجھے ضمانت دے اس چیز کی جو دو جبڑوں کے درمیان ہے ( یعنی زبان) اور اس چیز کی جو دو ٹانگوں کے درمیان ہے(یعنی شرمگاہ) میں اسے جنت کی ضمانت دیتا ہوں.''

( بخاری،6109)

(18) ہمسایہ سے حسن سلوک کرنا:

حضرت ابوھریرة رضی ﷲ عنہ کہتے ہیں ایک آدمی نے رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم کی خدمت میں عرض کیا یا رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم ! فلاں عورت دن کو روزے رکھتی ہے رات کو قیام کرتی ہے لیکن ہمسائیوں کو اذیت پہنچاتی ہے آپ صلی ﷲ علیہ وسلم نے ارشاد فرمایا'' یہ عورت جہنم میں ہے''. پھر صحابہ کرام رضوان ﷲ اجمعین نے ( ایک دوسری عورت کے بارے میں) عرض کیا'' فلاں عورت صرف فرض نماز ادا کرتی ہے اور پنیر کے ٹکڑے صدقہ کرتی ہے لیکن ہمسائیوں کو اذیت نہیں پہنچاتی''. آپ صلی ﷲ علیہ وسلم نے ارشاد فرمایا'' یہ عورت جنتی ہے'' .

( احمد ، 136)

(19) ﷲ تعالیٰ کے نناوے (99) نام یاد رکرنا:

حضرت ابوھریرة رضی ﷲ عنہ سے روایت ہے کہ رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم نے فرمایا'' ﷲ تعالیٰ کے ایک کم سو یعنی نناوے نام ہیں جس نے یاد کئے وہ جنت میں داخل ہوا.''

(بخاری ،2585 مسلم،2677 )

(20) قرآن حفظ کرنا:

حضرت ابوسعید خدری رضی ﷲ عنہ کہتے ہیں رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ نے فرمایا'' حافظ قرآن جب جنت میں داخل ہوگا تو اسے کہا جائے گا قرآن کا تلاوت کرتا جا اور درجے چڑھتا جا چنانچہ وہ ہر آیت کے بدلہ میں ایک درجہ بلند ہوتا جائے گا حتی کہ آخری آیت تک پہنچ جائے گا جو اسے یاد ہوگی اور وہی اس کا (مستقل) درجہ ہوگا.''

( ابن ماجہ ، حدیث صحیح 2037/2 )


جاری ہے ----
 
شمولیت
اگست 11، 2013
پیغامات
17,066
ری ایکشن اسکور
6,725
پوائنٹ
1,069
(21) کثرت سے سلام کرنا:

حضرت عبد ﷲ بن سلام رضی ﷲ عنہ کہتے ہیں رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم نے فرمایا'' لوگو! سلام پھیلاؤ(یعنی کثرت سے کیا کرو) کھانا کھلاؤ ( لوگوں کو) ، اور جب (دوسرے) لوگ سو رہے ہوں تو نماز (تہجد) پڑھو (ان اعمال کے نتیجے میں) سلامتی کے ساتھ جنت میں داخل ہوگے''.

(ترمذی، حدیث صحیح 2019/2 )

(22) مریض کی عیادت کرنا:

حضرت ثوبان رضی ﷲ عنہ کہتے ہیں رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم نے فرمایا'' مریض کی عیادت کرنے والا جب تک واپس نہ آجائے تب تک جنت کے باغ میں رہتا ہے.''

( مسلم،2568)

(23) ﷲ کی رضا کیلئے علم سیکھنا:

حضرت ابوھریرة رضی ﷲ عنہ سے روایت ہے کہ نبی اکرم صلی ﷲ علیہ وسلم نے فرمایا'' جو شخص علم دین حاصل کرنے کیلئے راستہ طے کرے ﷲ تعالیٰ اس کیلئے جنت کا راستہ (طے کرنا) آسان فرمادیتے ہیں''.

( مسلم،2699)

(24) اچھی طرح وضو کرنے کے بعد کلمہ شہادت پڑھنا:

حضرت عمر بن خطاب رضی ﷲ عنہ کہتے ہیں رسول اکرم صلی ﷲ علیہ وسلم نے فرمایا'' تم میں سے جو شخص اچھی طرح وضو کرے پھر کہے اَشْھَدُ اَنْ لاَّ اِلٰہِ الاَّ اللّٰہُ وَحْدَہ لَاشَرِیْکَ لَہ وَاَشْھَدُ اَنَّ مُحَمَّدًا عَبْدُہ وَرَسُوْلُہ (یعنی میں گواہی دینا ہوں کہ ﷲ کے سوا کوئی الہٰ وہ اکیلا ہے اور اس کا کوئی شریک نہیں اور محمدۖ ﷲ کے بندے اور اس کے رسول ہیں) اس کے لئے جنت کے آٹھوں دروازے کھول دئیے جاتے ہیں جس سے چاہے داخل ہو''.

(مسلم،234)

(25) صبح و شام سید الاستغفار پڑھنا:

حضرت شداد بن اوس رضی ﷲ عنہ کہتے ہیں کہ رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم نے فرمایا '' سب سے افضل استغفار یہ ہے کہ تم کہو

اَللّٰہُمَّ اَنْتَ رَبِّیْ لَآ اِلٰہَ اِلَّآ اَنْتَ خَلَقْتَنِیْ وَ اَنَا عَبْدُکَ وَ اَنَا عَلٰی عَھْدِکَ وَ وَعْدِکَ مَا اسْتَطَعْتُ اَعُوْذُبِکَ مِنْ شَرِّ مَا صَنَعْتُ اَبُوْ ئُ لَکَ بِنِعْمَتِکَ عَلَیَّ وَ اَبُوْ ئُ بِذَنْبِیْ فَاغْفِرْ لِیْ فَاِ نَّہ' لاَ ےَغْفِرُ الذُّنُوْبَ اِلَّآ اَنْت.

(اے ﷲ ! آپ میرے رب ہیں ، آپ کے سِوا کوئی معبود نہیں ، آپ نے مجھے بنایا اور میں بندہ ہوں آپ کا ، اور میں آپ سے کیے ہوئے عہد اور وعدے پر قائم ہوں ، اپنی طاقت کے مطابق، آپکی پناہ چاہتا ہوں بُرے کاموں کے وبال سے جومیں نے کیے ہیں۔ مجھے اقرار ہے اُس احسان کا جو مجھ پر آپکا ہے اور مجھے اعتراف ہے اپنے گناہوں کا پس بخش دیجئے میرا گناہ، کیونکہ کوئی نہیں بخشتا گناہ آپ کے سوا.)''رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم نے فرمایا ''جو شخص یہ کلمات یقین کے ساتھ دن کے وقت پڑھے شام سے قبل فوت ہو جائے وہ جنتی ہے اور جس نے رات کے وقت یقین کے ساتھ یہ کلمات کہے اور صبح ہونے سے پہلے فوت ہوگیا وہ بھی جنتی ہے''.

(بخاری،5947)

(26) بینائی پر صبر کرنا:

حضرت انس بن مالک رضی ﷲ عنہ کہتے ہیں میں نے رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم کو فرماتے ہوئے سنا ہے کہ '' ﷲ تعالیٰ فرماتا ہے کہ جب میں اپنے بندے کواس کی دو محبوب چیزوں (آنکھوں) سے آزماتا ہوں اور وہ اس پر صبر کرتا ہے تو اس کے بدلے میں اسے جنت دیتا ہوں.''

(بخاری،5329)

(27) ماں باپ کی خدمت کرنا:

حضرت ابوھریرة رضی ﷲ عنہ نبی کریم صلی ﷲ علیہ وسلم سے روایت کرتے ہیں کہ آپ صلی ﷲ علیہ وسلم نے ارشاد فرمایا'' اس شخص کی ناک خاک آلود ہو رسوا اور ذلیل ہو ہلاک ہو جس نے اپنے والدین میں سے کسی ایک کو بڑھاپے میں پایا پھر( ان کو راضی کرکے) جنت میں داخل نہ ہوا.''

(مسلم،2551)

(28) تکلیف دہ چیز کو دور کرنا:

حضرت ابوھریرة رضی ﷲ عنہ سے روایت ہے کہ رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم نے فرمایا'' ایک درخت مسلمانوں کو تکلیف دیتا تھا ایک شخص آیا اس نے وہ درخت کاٹ دیا اور جنت میں چلا گیا.''

(مسلم،1914)

(29) بیماری پر صبر کرنا:

حضرت عطاء بن رباح رحمة ﷲعلیہ (تابعی) کہتے ہیں حضرت عبدﷲ بن عباس رضی ﷲ عنہ نے مجھ سے کہا کیا میں تجھے جنتی عورت نہ دکھاؤں ؟ میں نے عرض کیا کیوں نہیں؟ حضرت عبدﷲ بن عباس رضی ﷲ عنہ نے (ایک عورت کی طرف اشارہ کرکے) کہا یہ کالی عورت نبی کریم صلی ﷲ علیہ وسلم کی خدمت میں حاضر ہوئی اور عرض کیا میں مرگی کی مریضہ ہوں اور (مرگی کے دوران) میرا ستر کھل جاتا ہے آپ ﷲ تعالیٰ سے میرے لئے دعا فرمائیں( ﷲ مجھے صحت عطا فرمائے) آپ صلی ﷲ علیہ وسلم نے ارشاد فرمایا'' اگر تو چاہے تو صبر کر تیرے لئے جنت ہے اور اگر چاہے تو ﷲ سے تیرے لئے دعا کرتا ہوں وہ تجھے صحت عطا فرمادے گا ''(اس صورت میں جنت کا وعدہ نہیں کرتا) اس عورت نے عرض کیا میں صبر کروں گی لیکن ساتھ یہ بھی عرض کیا (مرگی کے دوران) میرا ستر کھل جاتا ہے ﷲ تعالیٰ سے دعا فرمائیں کہ میرا ستر نہ کھلے. رسول اکرم صلی ﷲ علیہ وسلم نے اس کیلئے یہ دعا فرمادی.''

(بخاری،5328)

(30) خاتون کا اپنے شوہر سے محبت کرنا، زیادہ بچوں کو جنم دینا، تکلیف اٹھانا اور شوہر کے ظلم پر صبر کرنا:

حضرت کعب بن عجرہ رضی ﷲ عنہ کہتے ہیں رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم نے فرمایا'' کیا میں تمہیں جنت میں جانے والے مردوں کے بارے میں نہ بتاؤں ؟(سنو!) نبی جنتی ہے ،شہید جنتی ہے ، صدیق جنتی ہے، پیدا ہوتے ہی فوت ہونے والا بچہ جنتی ہے ، دور دراز سے اپنے بھائی کو محض ﷲ کی رضا کیلئے ملنے ولا جنتی ہے، کیا میں تمہیں جنت میں جانے والی عورتوں کے بارے میں نہ بتاؤں ؟ اپنے شوہر سے محبت کرنی والی، زیادہ بچوں کو جنم دینے(کی تکلیف اٹھانے ) والی اور وہ نیک عورت کہ جس کا شوہر اس پر ظلم کرے تو کہے'' میرا ہاتھ تیرے ہاتھ میں ہے میں اس وقت تک نہیں سوؤںگی جب تک تو راضی نہ ہوجائے.''

(طبرانی، الجامع الصغیر للالبانی حدیث 2601 )

جاری ہے ----
 
شمولیت
اگست 11، 2013
پیغامات
17,066
ری ایکشن اسکور
6,725
پوائنٹ
1,069
(31) شریعت کی حلال کردہ چیزوں کو حلال اور حرام کردہ چیز کو حرام جاننا:

حضرت جابر رضی ﷲ عنہ سے روایت ہے کہ ایک آدمی نے رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم سے سوال کیا'' یا رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم اگر میں فرض نمازیں ادا کروں ، رمضان کے روزے رکھوں( شریعت کی) حلال کردہ چیزوں کو حلال جانوں اور حرام کرہ چیزوں کو حرام جانوں لیکن اس سے زیادہ کچھ نہ کروں ، تو کیا میں جنت میں چلا جاؤں گا ؟'' آپ صلی ﷲ علیہ وسلم نے ارشاد فرمایا ''ہاں'' .

( مسلم،15)

(32) دو نابالغ بچوں کے فوت ہونے پر صبر کرنا:

حضرت ابوھریرة رضی ﷲ عنہ سے روایت ہے کہ رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم نے انصار کی عورتوں سے فرمایا'' تم میں سے جس کے تین بچے فوت ہوجائیں اور وہ ﷲ کی رضا کیلئے صبر کرے تو جنت میں جائے گی ایک عورت نے عرض کیا ''یا رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم! اگر دوبچے مریں تو اس کے لئے کیا حکم ہے؟'' آپ صلی ﷲ علیہ وسلم نے ارشاد فرمایا '' اگر دو مریں تب بھی یہی ثواب ہے''.

( مسلم،حدیث 2632 )

(33) ہر نماز کے بعد آیة الکرسی پڑھنا:

حضرت ابوامامہ رضی ﷲ کہتے ہیں رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم نے فرمایا'' جس نے ہر نماز کے بعد آیة الکرسی پڑھی اسے موت کے سواکوئی چیز جنت میں جانے سے نہیں روک سکتی.''

(حدیث صحیح، نسائی ، ابن حبان اور طبرانی ، سلسلہ احادیث الصحیحة للالبانی ، الجز الثانی ، حدیث 972 )

(34) '' َلاَحَوْلَ وَلاَ قُوَّةَ اِلاَّ بِاللّٰہِ''کا کثرت سے وظیفہ کرنا:

حضرت ابوذر رضی ﷲ عنہ کہتے ہیں کہ مجھے رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم نے فرمایا'' کیا میں تجھے جنت کے خزانوں میں سے ایک خزانے کے بارے میں آگاہ نہ کروں؟'' میں نے عرض کیا یا رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم! ضرور آگاہ فرمائیں. آپ صلی ﷲ علیہ وسلم نے فرمایا

َلاَحَوْلَ وَلاَ قُوَّةَ اِلاَّ بِاللّٰہِ''

( نیکی کرنے اور برائی سے بچنے کی طاقت اﷲ کی توفیق کے بغیر نہیں )

(حدیث صحیح، ابن ماجہ ، للالبانی ، الجز الثانی ، حدیث 3083 )

(35) سُبْحَانَ رَبِّیَ الْعَظِیْمُ وَبِحَمْدِہ کا وظیفہ کرنا:

حضرت جابر رضی ﷲ عنہ سے روایت ہے کہ نبی کریم صلی ﷲ علیہ وسلم نے فرمایا '' جس نے کہا

سُبْحَانَ رَبِّیَ الْعَظِیْمُ وَبِحَمْدِہ

( عظمت والا اﷲ اپنی حمد کے ساتھ پاک ہے)

' اسکے لئے جنت میں کھجور کا ایک درخت لگایا جاتا ہے.''

(حدیث صحیح، ترمذی ، للالبانی ، الجز الثانی ، حدیث 2757)

(36) اپنے مال کی وجہ سے بے گناہ قتل ہونا:

حضرت عبد ﷲ بن عمر بن عاص رضی ﷲ عنہ سے روایت ہے کہ رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم نے فرمایا'' جو شخص ظلم کے ساتھ اپنے مال کی وجہ سے قتل کیا گیا اس کیلئے جنت ہے .''

(حدیث صحیح، نسائی ،حدیث3808/3 )

(37) عورت کا حمل ساقط ہونے پر صبر کرنا:

حضرت معاذ بن جبل رضی ﷲ عنہ سے روایت ہے کہ نبی اکرم صلی ﷲ علیہ وسلم نے فرمایا'' اس ذات کی قسم جس کے ہاتھ میں میری جان ہے ساقط الحمل بچہ اپنی ماں کو انگلی سے پکڑ کر جنت میں لے جائے گا بشرطیکہ اس نے ثواب کی نیت سے صبر کیا ہو.''

(حدیث صحیح، ابن ماجہ ، حدیث 1305/1 )

(38) قاضی کا حق کے ساتھ فیصلہ کرنا:

حضرت بریدة رضی ﷲ عنہ کہتے ہیں رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم نے فرمایا '' دو قاضی جہنم میں جائیں گے اور ایک قاضی جنت میں. وہ قاضی جس نے حق پہچانا اور اس کے مطابق فیصلہ کیا وہ جنت میں جائے گا اور وہ قاضی جس نے حق پہچانا اور جانتے بوجھتے ظلم کیا( یعنی فیصلہ حق کے خلاف کیا) اور وہ قاضی جس نے علم(تحقیق) کے بغیر فیصلہ کیا دونوں جہنم میں جائیں گے.

(حدیث صحیح، حاکم ، صحیح جامع الصغیر، للالبانی ، الجز الثالث ، حدیث 4174)

(39) کسی مسلمان بھائی کی عدم موجودگی میں اس کی عزت کا دفاع کرنا:

حضرت اسماء بنت یزید رضی ﷲ عنہا کہتی ہیں رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم نے فرمایا'' جس نے کسی بھائی کی عدم موجودگی میں اس کی عزت سے برائی کو دور کیا ﷲ پر اس کا حق ہے کہ وہ اسے آگ سے آزاد کرے.''

( حدیث صحیح، احمد ، صحیح جامع الصغیر، للالبانی ، الجز الخامس ، حدیث 6116 )

(40) کسی سے سوال نہ کرنا:

حضرت ثوبان رضی ﷲ عنہ کہتے ہیں رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم نے فرمایا'' جو شخص مجھے اس بات کی ضمانت دے کہ وہ کسی سے سوال نہیں کرے گا میں اسے جنت کی ضمانت دیتا ہوں.''

(حدیث صحیح، ابوداؤد، حدیث 1446/1 )

(41) غصہ پینا :

حضرت ابودرداء رضی ﷲ عنہ کہتے ہیں سول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم نے فرمایا''غصہ نہ کر تیرے لئے جنت ہے.''

(حدیث صحیح، طبرانی، صحیح جامع الصغیر، للالبانی ، الجز السادس ، حدیث 7251 )

(42) عصر و فجر کی نماز باقاعدگی سے جماعت کے ساتھ ادا کرنا:

حضرت ابوبکر بن ابوموسیٰ اشعری رضی ﷲ عنہ اپنے باپ سے روایت کرتے ہیں کہ رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسمل نے فرمایا'' جس نے ٹھنڈے وقت کی دو نمازیں( فجر و عصر) پڑھیں وہ جنت میں داخل ہوا.''

(مسلم،حدیث 635)

(43) ظہر سے قبل چار رکعت سنت پر مداومت اختیار کرنا:

حضرت ام حبیبہ رضی ﷲ عنہا کہتی ہیں رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم نے فرمایا'' جس نے ظہر سے پہلے چار رکعت ادا کیں ﷲ تعالیٰ اس بندے کیلئے جہنم کی آگ حرام کردیں گے.''

(حدیث صحیح، ترمذی ، حدیث 351/1 )

(44) مسلسل چالیس(40) روز تک تکبیر اولیٰ کے ساتھ پانچوں نمازیں پڑھنا:

حضرت انس بن مالک رضی ﷲ عنہ کہتے ہیں رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم نے فرمایا'' جس نے چالیس دن تک (پانچوں نمازیں) تکبیر اولیٰ کے ساتھ باجماعت ادا کیں اسے کیلئے دو چیزوں سے آزادی لکھی جاتی ہے آگ سے اور نفاق سے.''

( حدیث حسن، ترمذی ،حدیث 200/1)

(45) حاکم کا عدل کرنا، جوانی میں عبادت، زیادہ وقت مسجد میں گزارنا، ﷲ کیلئے دوسرے سے محبت کرنا، تنہائی میں ﷲ سے ڈرنا، ﷲ کے ڈر حسین و جمیل عورت کی دعوت گناہ سے رکنا، ﷲکی راہ میں خفیہ خرچ کرنا:

حضرت ابوسعید رضی ﷲ عنہ سے روایت ہے کہ رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم نے فرمایا'' جس روز کوئی سایہ نہیں ہوگا اس روز ﷲ تعالیٰ سات آدمیوں کو اپنے(عرش) کے سائے تلے جگہ دے گا.

(1) عادل حاکم.
(2) ﷲکی عبادت میں مشغول نوجوان .
(3) وہ شخص جس کا دل مسجد سے نکلنے کے بعد واپس آنے تک مسجد میں اٹکا رہے.(4) ﷲ کیلئے ایک دوسرے سے محبت کرنے والے جن کا ملنا اور الگ ہونا خالص ﷲ کیلئے ہی ہو.
(5) وہ شخص جس نے تنہائی میں ﷲ کو یاد کیا اور اس کی آنکھوں سے آنسو بہہ نکلے.
(6) وہ شخص جسے کسی اونچے خاندان کی خوبصورت عورت نے دعوت گناہ دی اور اس نے کہا '' میں ﷲ عزوجل سے ڈرتا ہوں'' .
(7) وہ شخص جس نے اس طرح چھپا کر صدقہ کیا کہ بائیں ہاتھ تک کو پتہ نہ چلے کہ دائیں نے کیا صدقہ کیاہے.''

(حدیث صحیح،ترمذی ، حدیث1949/2 )

(46) دوسروں کومعاف کرنا:

حضرت معاذ بن انس رضی ﷲ عنہ کہتے ہیں کہ سول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم نے فرمایا'' جو شخص انتقام لینے پر پوری طرح قادر تھا لیکن(انتقام نہ لیا اور) غصہ پی گیا(قیامت کے دن) ﷲ تعالیٰ اسے ساری مخلوق کے سامنے بلائیں گے اور اسے حورعین منتخب کرنے کا اختیار دیا جائے گا کہ جس سے چاہے نکاح کرلے.''

( حدیث صحیح، احمد ، صحیح جامع الصغیر، للالبانی ، الجز الخامس ، حدیث 6394 )

(47) تکبر، خیانت اور قرض سے پاک ہونا:

حضرت ثوبان رضی ﷲ عنہ کہتے ہیں رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم نے فرمایا'' جو شخص تکبر، خیانت اور قرض سے پاک مرا وہ جنت میں داخل ہوگا.''

( حدیث صحیح، ترمذی ، حدیث1278/2 )

(48) اذان کا جواب دینا:

حضرت ابوھریرة رضی ﷲ عنہ کہتے ہیں ہم رسول ﷲ صلی ﷲ علیہ وسلم کے ساتھ تھے حضرت بلال رضی ﷲ عنہ کھڑے ہوئے اور اذان دی جب حضرت بلال رضی ﷲ عنہ خاموش ہوئے تو آپ صلی ﷲ علیہ وسلم نے ارشاد فرمایا'' جس نے موذن جیسے کلمات یقین کے ساتھ دہرائے وہ جنت میں داخل ہوگا.''

( حدیث حسن، نسائی، حدیث 650/1 )
 
Top