1. آئیے اہم اسلامی کتب کو یونیکوڈ میں انٹرنیٹ پر پیش کرنے کے لئے مل جل کر آن لائن ٹائپنگ کریں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ کے ذریعے آپ روزانہ فقط دس پندرہ منٹ ٹائپنگ کر کے ہزاروں صفحات پر مشتمل اہم ترین کتب کو ٹائپ کرنے میں اہم کردار ادا کرکے صدقہ جاریہ میں شامل ہو سکتے ہیں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ میں شمولیت کے لئے یہاں کلک کریں۔
  2. آئیے! مجلس التحقیق الاسلامی کے زیر اہتمام جاری عظیم الشان دعوتی واصلاحی ویب سائٹس کے ساتھ ماہانہ تعاون کریں اور انٹر نیٹ کے میدان میں اسلام کے عالمگیر پیغام کو عام کرنے میں محدث ٹیم کے دست وبازو بنیں ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔

★ دلچسپ بیان -◄ آج کے دور میں ہمیں کیسے پتہ چلےگا کہ کوئی بزرگ یا پیر الله کا ولی ہے؟

'تقابل مسالک' میں موضوعات آغاز کردہ از محمد عامر یونس, ‏اگست 26، 2015۔

  1. ‏اگست 26، 2015 #1
    محمد عامر یونس

    محمد عامر یونس خاص رکن
    جگہ:
    karachi
    شمولیت:
    ‏اگست 11، 2013
    پیغامات:
    17,061
    موصول شکریہ جات:
    6,523
    تمغے کے پوائنٹ:
    1,069

    ★ دلچسپ بیان -◄ آج کے دور میں ہمیں کیسے پتہ چلےگا کہ کوئی بزرگ یا پیر الله کا ولی ہے؟

    ● الله کےنیک بندوں اور اولیاءالله کی کیاپہچان ہوتی ہے؟

    ● آج کے دور میں جو پیربابا (ننگا) ہو، یا زندگی میں کبھی نہ نہایا ہو اُس بچارے کو ولی الله بنا دیاجاتاہے

    ● اس -◄ Video کو دیکھیۓ اور زیادہ سے زیادہ Share کرکے اِن (نقلی) پیر بابوں کو بےنقاب کیجیۓ


     
  2. ‏اگست 26، 2015 #2
    محمد عامر یونس

    محمد عامر یونس خاص رکن
    جگہ:
    karachi
    شمولیت:
    ‏اگست 11، 2013
    پیغامات:
    17,061
    موصول شکریہ جات:
    6,523
    تمغے کے پوائنٹ:
    1,069

    السلام علیکم ورحمۃ اللہ وبرکاتہ!

    یہ بات تو سچ ہے کہ اللہ کا ولی صرف وہ جو شرک نہ کرے اور اللہ کے دین کتاب و سنت کو مضبوطی سے تھامے رکھے اور اس پر عمل کرے -
     
  3. ‏اگست 26، 2015 #3
    یوسف ثانی

    یوسف ثانی فعال رکن رکن انتظامیہ
    جگہ:
    پاکستان
    شمولیت:
    ‏ستمبر 26، 2011
    پیغامات:
    2,763
    موصول شکریہ جات:
    5,270
    تمغے کے پوائنٹ:
    562

    سوال یہ ہے کہ ہمیں آج کے دور میں اللہ کے ولی کو بصورت بزرگ یا پیر تلاش کرنے کی ضرورت ہی کیا ہے ؟

    کیا ہمارے لئے قرآن، صحیح احادیث، سیرت النبی صلی اللہ علیہ وسلم اور سیرت صحابہ رضی اللہ تعالیٰ عنہم کافی نہیں ہیں ؟

    ”سچے پیر“ کی تلاش انہیں ہوتی ہے جو اپنا دین و ایمان ایسے پیر کے حوالہ کرکے اس سے ”بیعت“ ہونا چاہتے ہیں۔ پیروں کے اس جنگل میں بھانت بھانت کے پیر موجود ہیں، جن میں سے انتہائی قلیل تعداد ہی دین حق پر قائم ہوگی۔ ایک سچے پیر کو پہچاننے کے لئے آپ کو بھی ”سچا پیر“ ہونا چاہئے۔ جیسے سچے سونے کی شناخت ایک سچا جوہری ہی کرسکتا ہے، کوئی اور نہیں۔ اگر آپ خود سچے پیر جیسے ہیں تو آپ کو کسی اور سچے پیر کی ضرورت ہی نہیں۔ اور اگر ایسا نہیں ہے تو اس بات کا قوی امکان ہے کہ آپ کسی جعلی پیر کے ہتھے چڑھ کر اپنا دین و ایمان ضائع کر بیٹھیں گے۔ لہٰذا اس پُر خطر راستے پر چلنے کی بجائے قرآن، صحیح احادیث، سیرت النبی صلی اللہ علیہ وسلم اور سیرت صحابہ رضی اللہ تعالیٰ عنہم کے محفوظ راستہ کو اختیار کیجئے۔ ان شاء اللہ کامیابی آپ کی منزل چومے گی۔
     
    • متفق متفق x 2
    • شکریہ شکریہ x 1
    • مفید مفید x 1
    • لسٹ
لوڈ کرتے ہوئے...

اس صفحے کو مشتہر کریں