• الحمدللہ محدث فورم کو نئےسافٹ ویئر زین فورو 2.1.7 پر کامیابی سے منتقل کر لیا گیا ہے۔ شکایات و مسائل درج کروانے کے لئے یہاں کلک کریں۔
  • آئیے! مجلس التحقیق الاسلامی کے زیر اہتمام جاری عظیم الشان دعوتی واصلاحی ویب سائٹس کے ساتھ ماہانہ تعاون کریں اور انٹر نیٹ کے میدان میں اسلام کے عالمگیر پیغام کو عام کرنے میں محدث ٹیم کے دست وبازو بنیں ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔

HELP IN HAJJ

ابوالحسن علوی

علمی نگران
رکن انتظامیہ
شمولیت
مارچ 08، 2011
پیغامات
2,524
ری ایکشن اسکور
11,533
پوائنٹ
641
حج ہر اس شخص پر فرض ہے جو اس کی استطاعت رکھتا ہوں۔ اگر آپ استطاعت رکھتے ہیں تو آپ پر فرض ہے اور اگر آپ کی دادا اور دادی استطاعت رکھتے ہوں تو ان پر فرض ہے۔ اور جس پر فرض ہے، اسے اپنا فرض پہلے ادا کرنا چاہیے۔ اور جس کے پاس استطاعت نہیں ہے تو اس پر یہ فرض نہیں ہے کہ وہ صاحب استطاعت بنے۔ ارشاد باری تعالی ہے:
وَلِلَّـهِ عَلَى النَّاسِ حِجُّ الْبَيْتِ مَنِ اسْتَطَاعَ إِلَيْهِ سَبِيلًا ۚ وَمَن كَفَرَ‌ فَإِنَّ اللَّـهَ غَنِيٌّ عَنِ الْعَالَمِينَ ﴿٩٧﴾
اور لوگوں پر خدا کا حق (یعنی فرض) ہے کہ جو اس گھر تک جانے کا مقدور رکھے وہ اس کا حج کرے اور جو اس حکم کی تعمیل نہ کرے گا تو خدا بھی اہلِ عالم سے بے نیاز ہے ۔
 
Top