1. آئیے اہم اسلامی کتب کو یونیکوڈ میں انٹرنیٹ پر پیش کرنے کے لئے مل جل کر آن لائن ٹائپنگ کریں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ کے ذریعے آپ روزانہ فقط دس پندرہ منٹ ٹائپنگ کر کے ہزاروں صفحات پر مشتمل اہم ترین کتب کو ٹائپ کرنے میں اہم کردار ادا کرکے صدقہ جاریہ میں شامل ہو سکتے ہیں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ میں شمولیت کے لئے یہاں کلک کریں۔
  2. آئیے! مجلس التحقیق الاسلامی کے زیر اہتمام جاری عظیم الشان دعوتی واصلاحی ویب سائٹس کے ساتھ ماہانہ تعاون کریں اور انٹر نیٹ کے میدان میں اسلام کے عالمگیر پیغام کو عام کرنے میں محدث ٹیم کے دست وبازو بنیں ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔

احمد رضا کے ترجمہ کے علاوہ کسی کا بھی ترجمہ پڑهو گے تو گمراہ ہو جائیں گے !

'دعوت اسلامی' میں موضوعات آغاز کردہ از محمد عامر یونس, ‏اگست 04، 2015۔

  1. ‏اگست 04، 2015 #1
    محمد عامر یونس

    محمد عامر یونس خاص رکن
    جگہ:
    karachi
    شمولیت:
    ‏اگست 11، 2013
    پیغامات:
    16,985
    موصول شکریہ جات:
    6,510
    تمغے کے پوائنٹ:
    1,069

  2. ‏اگست 04، 2015 #2
    محمد نعیم یونس

    محمد نعیم یونس خاص رکن رکن انتظامیہ
    شمولیت:
    ‏اپریل 27، 2013
    پیغامات:
    26,519
    موصول شکریہ جات:
    6,610
    تمغے کے پوائنٹ:
    1,207

    اشرف علی تھانوی صاحب ایک شخص کے لئے قرآن کا ترجمہ دیکھنا کیوں حرام قرار دیتے ہیں؟

    تحصیل کنڈہ میں ایک تحصیلدارصاحب میرے دوست تھے ۔انہوں نے مجھ کو بلایا تھا ۔وہاں ایک اہلمد ملےبوڑھے اور بہت نیک قرآن کی تلاوت کے پابند تہجد کے پابند، مترجم قرآن شریف لائےاور یہ آیت نکالی ۔

    يَا أَيُّهَا الَّذِينَ آمَنُوا لَا تَقُولُوا رَاعِنَا وَقُولُوا انْظُرْنَا وَاسْمَعُوا ۗ وَلِلْكَافِرِينَ عَذَابٌ أَلِيمٌ (2:104)
    اے اہل ایمان! (گفتگو کے وقت پیغمبرِ خدا سے) راعنا نہ کہا کرو۔ انظرنا کہا کرو۔ اور خوب سن رکھو، اور کافروں کے لیے دکھ دینے والا عذاب ہے۔

    اور کہنے لگے کیا تلاوت میں لفظ؛ راعنا؛چھوڑاجائے۔کیونکہ قرآن شریف میں اس سےمنع فرما یا ہے کہ نہ کہو۔؛راعنا ؛
    میں نےکہا۔
    اسی واقعہ کو دیکھ کر فتوی دیتا ہوں کہ تم کو ترجمہ دیکھنا حرام ہے۔

    ملفوظا ت حکیم الامت
    واللہ اعلم
     
    Last edited: ‏اگست 04، 2015
    • شکریہ شکریہ x 1
    • پسند پسند x 1
    • لسٹ
  3. ‏اگست 04، 2015 #3
    ابن داود

    ابن داود فعال رکن رکن انتظامیہ
    شمولیت:
    ‏نومبر 08، 2011
    پیغامات:
    3,318
    موصول شکریہ جات:
    2,651
    تمغے کے پوائنٹ:
    556

    السلام علیکم ورحمۃ اللہ وبرکاتہ!
    عربی کا اتنا مشکل ہونے ، اور ایک ایک لفظ کے کئی کئی معنی ہونے سے ترجمہ کرنا کتنا مشکل کا م ہے، یہ بتلانے کے بعد احمد رضا خان صاحب کے ترجمہ کے علاوہ باقی تمام کے تراجم کو گمراہی کا منبع قرار کون دے رہا ہے،
    ایک جاہل مطلق ! اس جاہل سے کوئی پوچھے کہ آپ احمد رضا خان کی اردو کتابیں نہیں سمجھ سکتے، آپ نے احمد رضا خان کی کتابیں صرف تبرک کے طور پر رکھیں ہوئی ہیں، آپ نے یہ فیصلہ کیسے صادر کردیا؟
    ویسے اس جاہل آدمی کو کوئی احمد رضا خان صاحب کے والد نقی علی خان صاحب کا سورۃ الفتح کی دوسری آیت کا ترجمہ دکھلائے!!
     
  4. ‏اگست 04، 2015 #4
    محمد ارسلان

    محمد ارسلان خاص رکن
    شمولیت:
    ‏مارچ 09، 2011
    پیغامات:
    17,865
    موصول شکریہ جات:
    40,799
    تمغے کے پوائنٹ:
    1,155

    اصل میں جب ہم اِن لوگوں کی طرف سے پیش کردہ من مانی مفہوم و تحریف پر مبنی تراجم و تفاسیر کو رد کرتے ہیں اور فہم سلف صالحین کو ترجیح دیتے ہیں، تب ان کے پاس اپنے موقف کو درست ثابت کرنے کے لئے کچھ نہیں بچتا۔

    اسی لئے یہ نیا فلسفہ گھڑنا کہ احمد رضا بریلوی کے ترجمے کے علاوہ دوسرا کوئی ترجمہ دیکھنا یا پڑھنا گمراہی ہے، مجھے اسی طرف اشارہ لگتا ہے کہ نہ کوئی صحابہ کرام رضی اللہ عنہم کا لیا گیا فہم پڑھے نہ سمجھے، اور احمد رضا بریلوی کے ترجمے پر ہی اکتفاء کرے اور ہمارا ذہنی غلام بن کر رہے۔ واللہ تعالیٰ اعلم

    اللہ تعالیٰ ایسے لوگوں کو ہدایت عطا فرمائے آمین
     
لوڈ کرتے ہوئے...
متعلقہ مضامین
  1. شیخ قاسم
    جوابات:
    2
    مناظر:
    979
  2. محمد عامر یونس
    جوابات:
    0
    مناظر:
    509
  3. محمد عامر یونس
    جوابات:
    1
    مناظر:
    829
  4. محمد اسد
    جوابات:
    2
    مناظر:
    1,110
  5. محمد ارسلان
    جوابات:
    0
    مناظر:
    377

اس صفحے کو مشتہر کریں