1. آئیے اہم اسلامی کتب کو یونیکوڈ میں انٹرنیٹ پر پیش کرنے کے لئے مل جل کر آن لائن ٹائپنگ کریں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ کے ذریعے آپ روزانہ فقط دس پندرہ منٹ ٹائپنگ کر کے ہزاروں صفحات پر مشتمل اہم ترین کتب کو ٹائپ کرنے میں اہم کردار ادا کرکے صدقہ جاریہ میں شامل ہو سکتے ہیں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ میں شمولیت کے لئے یہاں کلک کریں۔
  2. آئیے! مجلس التحقیق الاسلامی کے زیر اہتمام جاری عظیم الشان دعوتی واصلاحی ویب سائٹس کے ساتھ ماہانہ تعاون کریں اور انٹر نیٹ کے میدان میں اسلام کے عالمگیر پیغام کو عام کرنے میں محدث ٹیم کے دست وبازو بنیں ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔

تبلیغیوں کی "فضائل اعمال" کے جھوٹ

'اصلاح احوال' میں موضوعات آغاز کردہ از Aamir, ‏جولائی 12، 2011۔

  1. ‏جنوری 20، 2018 #91
    یوسف ثانی

    یوسف ثانی فعال رکن رکن انتظامیہ
    جگہ:
    پاکستان
    شمولیت:
    ‏ستمبر 26، 2011
    پیغامات:
    2,761
    موصول شکریہ جات:
    5,269
    تمغے کے پوائنٹ:
    562

    مجھے تو بزرگوں، علمائے کرام اور دینی اسکالرز سے صرف اتنی سی "غرض" ہے کہ وہ مجھے اپنی زبان و قلم سے:
    1. قرآن اور صحیح احادیث کے وہ مشکل مضامین سمجھا سکیں، جسے میں از خود سمجھنے سے قاصر ہوں۔
    2. مجھے روز مرہ کے معاملات میں قرآن و سنت کے حوالہ سے یہ رہنمائی فراہم کرسکیں کہ کون سا معاملہ دینی اعتبار سے درست اور کون سا معاملہ نادرست ہے
    3. جن جدید معاملات میں قرآن و سنت خاموش ہیں، اور جن پر میں "مخمصے" کا شکار ہوں، ان کے بارے میں رہنمائی فرماسکیں کہ یہ والا معاملہ فلاں فلاں دینی اصول کے تحت درست یا نادرست ہے۔
    اس کے علاوہ مجھے ان لاکھوں کروڑوں "بزرگان دین" کی ذاتی سوانح حیات، ان کے کارہائے نمایاں و غیر نمایاں، وہ صاحب کشف و کرامات تھے یا نہیں، ان کے ساتھ قبر و حشر میں کیا ہوگا۔۔۔ سے مجھے کوئی لینا دینا نہیں۔ مجھے تو صرف اور صرف اپنی فکر ہے کہ میری زندگی قرآن و سنت کے مطابق گزرے اور جب جب مجھ سے گناہ سرزد ہو، مجھے اس کا احساس ہوجائے تاکہ میں توبہ استغفار کرکے، سیدھی راہ پر آسکوں، اپنی ذاتی قبر کے معاملات کی فکر کروں، اپنے زیر اثر لوگوں کی فکر کروں۔۔۔۔۔۔۔ اس کے لئے مجھے تبلیغی نصاب، فضائل اعمال اور اسی قسم کے کتب میں بزرگوں کے جھوٹے سچے قصے پڑھنے کی قطعا" ضرورت نہیں۔ میرے لیے وہی قصص کافی ہیں جو قرآن اور صحیح احادیث میں بیان ہوئے ہیں۔ اللہ مجھے اور تمام مسلمانوں کو قرآن و سنت ہی کی روشنی میں اپنی آخرت کی فکر کرنے کی توفیق عطا فرمائے۔ آمین ثم آمین یا رب العامین ۔
     
    • پسند پسند x 2
    • مفید مفید x 1
    • لسٹ
  2. ‏جنوری 20، 2018 #92
    فضل ملی

    فضل ملی مبتدی
    شمولیت:
    ‏دسمبر 24، 2017
    پیغامات:
    22
    موصول شکریہ جات:
    2
    تمغے کے پوائنٹ:
    11

    فضائل اعمال پر صرف اعتراض ہی کئے جائنگے یا جواب بہی دیا جائگا
     
  3. ‏جنوری 20، 2018 #93
    ابن داود

    ابن داود فعال رکن رکن انتظامیہ
    شمولیت:
    ‏نومبر 08، 2011
    پیغامات:
    3,318
    موصول شکریہ جات:
    2,651
    تمغے کے پوائنٹ:
    556

    السلام علیکم ورحمۃ اللہ وبرکاتہ!
    آپ کو کس بات کا جواب چاہیئے؟
    غالباً ان کا!
    میرے بھائی! آپ کو اسحاق سلفی بھائی کی بات سمجھ نہیں آئی!
    کہ یہ علم الغیب کی کرامت تو اللہ تعالیٰ نے نبی صلی اللہ علیہ وسلم کو بھی نہیں دی، کہ نبی صلی اللہ علیہ وسلم کو غیب کے معاملات بغیر وحی ہے معلوم ہو جائیں! یعنی نبی صلی اللہ علیہ کو عالم الغیب نہیں بنایا!
    لیکن اس کہانی میں امام ابو حنیفہ رحمہ کو علم الغیب کی کرامت کا حامل بتلایا جارہا ہے! کہ انہیں بغیر وحی کے غیب کے معاملات معلوم ہو جاتے تھے! گویا کہ وہ عالم الغیب تھے!
     
    Last edited: ‏جنوری 20، 2018
    • متفق متفق x 2
    • پسند پسند x 1
    • لسٹ
  4. ‏جنوری 20، 2018 #94
    رحمانی

    رحمانی رکن
    شمولیت:
    ‏اکتوبر 13، 2015
    پیغامات:
    382
    موصول شکریہ جات:
    102
    تمغے کے پوائنٹ:
    77

    یہ ہے توجیہ القائل بمالایرضی بہ القائل۔
    امام ابوحنیفہؒ کے بارے میں متعددکتابوں میں یہ واقعہ منقول ہے،اب یہ واقعہ صحیح بھی ہوسکتاہے اورغلط بھی،قطعیت کا دعویٰ تونہیں کیاجاسکتا،اس کو ماننا ’’ایمان لانا‘‘نہیں ہے، آج کل ایک گروہ کی پتہ نہیں کم عقلی ہے یاپھر بے عقلی، کسی کشف وکرامت کو تسلیم کرنے کو ’’ایمانیات اورعقائد‘‘جوڑدیتی ہے۔
    اللہ کے بندو!ایک بات کسی کی سیرت اورسوانح میں لکھی ہوئی ہے، وہ صحیح بھی ہوسکتی ہے اورغلط بھی،قطعیت کا دعویٰ نہیں کیاجاسکتا، زیادہ سے زیادہ ظن غالب ہوسکتاہے، کیا دنیابھر کے بزرگوں کے بارے میں ہم جوکچھ پڑھتے ہیں اور مانتے ہیں،اس کا تعلق ایمانیات اورعقائد سے ہوجاتاہے،کیاکسی بھی بات کوتسلیم کرنے کا تعلق ’’ایمان وعقائد ‘‘سے ہے۔
    فضل ملی صاحب نے اگر کتاب میں پڑھاکہ امام صاحب کو ایساکشف ہوتاتھاتوجس طرح مختلف کتابوں کی بہت ساری باتیں ہم پڑھتے ہیں اورتسلیم کرتے ہیں اس کو ایمان کا حصہ اورجزء نہیں بناتے،ایسے ہی فضل صاحب نے بھی کیاہے، آپ حضرات کے پاس وہ کون سی دلیل قطعی ہے جو آپ قطعیت سے اس کا انکار کرتے ہیں؟
     
  5. ‏جنوری 20، 2018 #95
    رحمانی

    رحمانی رکن
    شمولیت:
    ‏اکتوبر 13، 2015
    پیغامات:
    382
    موصول شکریہ جات:
    102
    تمغے کے پوائنٹ:
    77

    اگرآپ تھوڑازور بیان ان کے حق میں بھی صرف کرتے جو اس طرح کی باتوں کو ایمانیات کا درجہ دے کر ’’شرک وبدعت‘‘کا رٹالگاتے ہیں تو شاید توازن برقراررہتا،ورنہ آپ نے توپورا وزن ایک پلڑے میں ڈال رکھاہے،انسان کو یاتو کسی کے حق میں اورکسی کا فریق واضح طورپر ہوناچاہئے، چھپ کر نہیں،آپ کسی کی حمایت کریں، کھل کر کریں، غیرجانبداری کے ادعا کے ساتھ کسی کی حمایت اچھی بات نہیں ہے۔
     
  6. ‏جنوری 20، 2018 #96
    اسحاق سلفی

    اسحاق سلفی فعال رکن رکن انتظامیہ
    جگہ:
    اٹک ، پاکستان
    شمولیت:
    ‏اگست 25، 2014
    پیغامات:
    6,372
    موصول شکریہ جات:
    2,402
    تمغے کے پوائنٹ:
    791

    ارے رحمانی صاحب !
    آپ جلد بازی میں الٹ فرماگئے ،
    آپ کو لکھنا تھا کہ " کچھ کم عقل ، اور جاہل ہوائی قسم کے مکاشفات اور خیالی قسم کی کرامات نہ ماننے کو کفر اور گمراہی کا عنوان دیتے ہیں "

    ویسے آپ ڈرتے ڈرتے قدرے کام کی بات بھی کہہ گئے !
    اس ادھوری بات کی تکمیل ہم کیئے دیتے ہیں کہ :
    اللہ کے بندو ! ہمارے عظیم نبی ﷺ کے اکثر معجزات معروف ثقہ رواۃ اور امت کےمشہورمحدثین کی کتب میں بالاسانید الصحیحہ مروی ہیں ؛
    جبکہ بزرگوں کے مکاشفات مجہول رواۃ ، غیر مستند مصنفین کی کتب قصص میں منقول ہیں جن کی قطعیت تو درکنار ،سرے سے وجود ہی مشکوک ہے
    اس لئے اسے اپنے ایمان و عقیدہ کا حصہ نہ بناؤ ،
    ــــــــــــــــــــــــ
    تیری داستاں کوئی اور تھی
    میرا واقعہ کوئی اور ہے
    ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
     
    • متفق متفق x 2
    • زبردست زبردست x 1
    • لسٹ
  7. ‏جنوری 20، 2018 #97
    رحمانی

    رحمانی رکن
    شمولیت:
    ‏اکتوبر 13، 2015
    پیغامات:
    382
    موصول شکریہ جات:
    102
    تمغے کے پوائنٹ:
    77

    ویسے آج تک ہم نے تو کسی کو کسی کرامت کے نہ ماننے پر کفر اورگمراہی کا خطاب دیتے نہیں دیکھا،لیکن اسی فورم پر کرامت اورکشف پر ’’شرک وبدعت ‘‘کااطلاق ہوتے بارہادیکھاہے۔
     
  8. ‏جنوری 21، 2018 #98
    فضل ملی

    فضل ملی مبتدی
    شمولیت:
    ‏دسمبر 24، 2017
    پیغامات:
    22
    موصول شکریہ جات:
    2
    تمغے کے پوائنٹ:
    11

    کوئ ایسی کتاب مطلوب ہےجسمیں فضائل اعمال پر اعتراضات کے جوابات کا تجزیہ ہو
     
لوڈ کرتے ہوئے...

اس صفحے کو مشتہر کریں