1. آئیے اہم اسلامی کتب کو یونیکوڈ میں انٹرنیٹ پر پیش کرنے کے لئے مل جل کر آن لائن ٹائپنگ کریں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ کے ذریعے آپ روزانہ فقط دس پندرہ منٹ ٹائپنگ کر کے ہزاروں صفحات پر مشتمل اہم ترین کتب کو ٹائپ کرنے میں اہم کردار ادا کرکے صدقہ جاریہ میں شامل ہو سکتے ہیں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ میں شمولیت کے لئے یہاں کلک کریں۔
  2. آئیے! مجلس التحقیق الاسلامی کے زیر اہتمام جاری عظیم الشان دعوتی واصلاحی ویب سائٹس کے ساتھ ماہانہ تعاون کریں اور انٹر نیٹ کے میدان میں اسلام کے عالمگیر پیغام کو عام کرنے میں محدث ٹیم کے دست وبازو بنیں ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔

عورتوں كى طرف (ديكھنے كى بيمارى ) والا شخص كيا كرے؟

'نکاح' میں موضوعات آغاز کردہ از محمد عامر یونس, ‏اگست 29، 2013۔

  1. ‏اگست 29، 2013 #1
    محمد عامر یونس

    محمد عامر یونس خاص رکن
    جگہ:
    karachi
    شمولیت:
    ‏اگست 11، 2013
    پیغامات:
    16,986
    موصول شکریہ جات:
    6,510
    تمغے کے پوائنٹ:
    1,069

    عورتوں كى طرف (ديكھنے كى بيمارى) والا شخص كيا كرے؟

    میرے بھائی اس کو پوسٹ کو ضرور پڑھیں شاید کسی کے دل میں اتر جائے میری بات !

    مجھے اكثر بےپردہ عورتوں كو ديكھنے كى بيمارى ہے اكثر طور پر ميں اپنے اوپر كنٹرول نہيں كر سكتا، مجھے كوئى نصيحت كريں كہ مجھے كيا كرنا چاہيے ؟

    جسے كوئى زہريلا زخم ہو جائے تو اسے وہ كام كرنا چاہيے جس سے زہر كا اخراج ہو، زخم ترياق اور مرہم سے صحيح ہوتا ہے، اس بيمارى كا علاج كئى ايك طريقوں سے ہو سكتا ہے:
    پہلا طريقہ تو شادى ہے اسے شادى كر لينى چاہيے، كيونكہ نبى كريم صلى اللہ عليہ كا فرمان ہے:
    " جب تم ميں سے كوئى شخص كسى عورت كے محاسن كو ديكھے تو وہ اپنى بيوى كے پاس آئے كيونكہ اس كى بيوى كے ساتھ بھى وہى كچھ ہے جو اس عورت كے ساتھ تھا "
    اس سے شہوت ٹوٹ ہو كر عشق كمزور ہو جاتا ہے.

    دوم:
    اسے نماز پنجگانہ كى پابندى كرنى چاہيے، اور سحرى كے وقت اللہ سے عاجز و انكسارى كے ساتھ دعا كرے، اور نماز پورے خشوع و خضوع اور دل كے ساتھ ادا كرنى چاہيے، اور درج ذيل دعا كثرت سے كيا كرے:
    " يا مقلب القلوب ، ثبت قلبي على دينك "
    اے دلوں كو الٹنے والے، ميرے دل كو اپنے دين پر ثابت ركھ "
    " يا مصرف القلوب صرف قلبي إلى طاعتك وطاعة رسولك "
    اے دلوں كو پھيرنے والے، ميرے دل كو اپنى اور اپنے رسول كى اطاعت كى طرف پھير دے"
    كيونكہ جب بھى وہ مستقل طور پر ہميشہ عاجزى و انكسارى سے يہ دعا كريگا تو اللہ سبحانہ و تعالى اس كے دل كو اس بيمارى سے پھير دے گا، جيسا كہ اللہ سبحانہ و تعالى كا فرمان ہے:
    { اسى طرح ہم اس سے برائى اور فحاشى كو دور كر ديتے ہيں، يقينا وہ ہمارے مخلص بندوں ميں سے تھا }يوسف ( 24 ). انتہى
    ماخوذ از: الفتاوى الكبرى لشيخ الاسلام ابن تيميہ رحمہ اللہ ( 3 / 77 ).

    سوم:
    وہ اپنے آپ كو بےپرد عورتوں والى جگہوں سے دور ركھے، اور اسى طرح فحاشى كے ٹى وي چينلوں سے بھى دور رہے جو گندى اور مخرب الاخلاق فلميں اور تصاوير پيش كرتے رہتے ہيں جو دل ميں اثر كر كے اسے كمزور كر ديتى ہيں.
     
    • پسند پسند x 2
    • متفق متفق x 1
    • لسٹ
  2. ‏اگست 29، 2013 #2
    محمد عامر یونس

    محمد عامر یونس خاص رکن
    جگہ:
    karachi
    شمولیت:
    ‏اگست 11، 2013
    پیغامات:
    16,986
    موصول شکریہ جات:
    6,510
    تمغے کے پوائنٹ:
    1,069

    1185788_407053439406683_1106919972_n.jpg
     
    • شکریہ شکریہ x 2
    • زبردست زبردست x 1
    • معلوماتی معلوماتی x 1
    • لسٹ
  3. ‏اگست 29، 2013 #3
    اسحاق

    اسحاق مشہور رکن
    شمولیت:
    ‏جون 25، 2013
    پیغامات:
    894
    موصول شکریہ جات:
    2,074
    تمغے کے پوائنٹ:
    196

    جزاک الله خیرا، عمده میسج هی
     
  4. ‏اگست 29، 2013 #4
    Dua

    Dua سینئر رکن
    شمولیت:
    ‏مارچ 30، 2013
    پیغامات:
    2,579
    موصول شکریہ جات:
    4,379
    تمغے کے پوائنٹ:
    463

    اللہ ہمارے معاشرے کو پاکیزہ کر دے۔آمین
    جزاکم اللہ خیرا
     
    • شکریہ شکریہ x 1
    • متفق متفق x 1
    • لسٹ
لوڈ کرتے ہوئے...

اس صفحے کو مشتہر کریں