1. آئیے اہم اسلامی کتب کو یونیکوڈ میں انٹرنیٹ پر پیش کرنے کے لئے مل جل کر آن لائن ٹائپنگ کریں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ کے ذریعے آپ روزانہ فقط دس پندرہ منٹ ٹائپنگ کر کے ہزاروں صفحات پر مشتمل اہم ترین کتب کو ٹائپ کرنے میں اہم کردار ادا کرکے صدقہ جاریہ میں شامل ہو سکتے ہیں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ میں شمولیت کے لئے یہاں کلک کریں۔
  2. آئیے! مجلس التحقیق الاسلامی کے زیر اہتمام جاری عظیم الشان دعوتی واصلاحی ویب سائٹس کے ساتھ ماہانہ تعاون کریں اور انٹر نیٹ کے میدان میں اسلام کے عالمگیر پیغام کو عام کرنے میں محدث ٹیم کے دست وبازو بنیں ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔

ماه صفر كے بدعی عقائد

'بدعی عقائد' میں موضوعات آغاز کردہ از عبد الوکیل, ‏دسمبر 31، 2012۔

  1. ‏دسمبر 31، 2012 #1
    عبد الوکیل

    عبد الوکیل مبتدی
    شمولیت:
    ‏نومبر 04، 2012
    پیغامات:
    142
    موصول شکریہ جات:
    604
    تمغے کے پوائنٹ:
    0

    صفر کے مہینے کے متعلق بدشگونیاں

    بعض لوگ ماہ صفر یعنی اسلامی سال کے دوسرے مہینہ کو منحوس خیال کرتے ہیں۔ انہیں یہ بدگمانی ہے کہ اس مہینے میں برکت نازل نہیں ہوتی اور یہ کہ اس میں آفات و مصائب اور بلیات نازل ہوتی ہیں۔
    ان لوگوں میں سے بعض کے نزدیک اس کے پہلے تیرہ دن بڑے تیز یعنی سختی لئے ہوتے ہیں ۔ اس بارے میں ان کے ہاں ایک اصطلاح تیرہ تیزی کی ہے۔ ان کا عقیدہ ہوتا ہے کہ ان دنوں میں شادی نہ کی جائے اورنہ ہی کسی نئے کاروبار کو اختیار کیاجائے۔
    ان فاسد عقائد و خیالات کے بارہ میں نبی اکرمﷺ کا فرمان ہے
    لَا عَدْوَی وَلَا طِیَرَۃَ وَلَا ہَامَۃَ وَلَا صَفَرَ
    [بخاری 5707]

    ترجمہ: کوئی بیماری متعدی نہیں ہے (یعنی ایک سے دوسرے کو نہیں لگ سکتی۔) نہ بدشگونی کا کوئی تصور ہے‘اور ہامہ کا کوئی وجود نہیں ہے اور صفر کا مہینہ منحوس نہیں ہے

    حدیث کی تشریح
    صفر کے مہینہ میں نحوست کی تردید میں سات احادیث وارد ہیں۔
    انسان کیلئے نحوست اس کے اپنے گناہوں کے سبب ہوتی ہے کوئی وقت اورکوئی مہینہ منحوس نہیں ہوتا
     
  2. ‏دسمبر 31، 2012 #2
    اعتصام

    اعتصام مشہور رکن
    جگہ:
    sukkur sindh
    شمولیت:
    ‏فروری 09، 2012
    پیغامات:
    483
    موصول شکریہ جات:
    678
    تمغے کے پوائنٹ:
    130

    بلکل ٹھیک کہا ہے میں بھی آپ سے متفق ہوں
     
لوڈ کرتے ہوئے...

اس صفحے کو مشتہر کریں