1. آئیے اہم اسلامی کتب کو یونیکوڈ میں انٹرنیٹ پر پیش کرنے کے لئے مل جل کر آن لائن ٹائپنگ کریں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ کے ذریعے آپ روزانہ فقط دس پندرہ منٹ ٹائپنگ کر کے ہزاروں صفحات پر مشتمل اہم ترین کتب کو ٹائپ کرنے میں اہم کردار ادا کرکے صدقہ جاریہ میں شامل ہو سکتے ہیں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ میں شمولیت کے لئے یہاں کلک کریں۔
  2. آئیے! مجلس التحقیق الاسلامی کے زیر اہتمام جاری عظیم الشان دعوتی واصلاحی ویب سائٹس کے ساتھ ماہانہ تعاون کریں اور انٹر نیٹ کے میدان میں اسلام کے عالمگیر پیغام کو عام کرنے میں محدث ٹیم کے دست وبازو بنیں ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔

نماز وتر میں قنوت کے بعد اپنی زبان میں دعاء کرنا۔۔

'نوافل وسنن' میں موضوعات آغاز کردہ از عامر عدنان, ‏جنوری 09، 2017۔

  1. ‏جنوری 09، 2017 #1
    عامر عدنان

    عامر عدنان مشہور رکن
    جگہ:
    انڈیا،بنارس
    شمولیت:
    ‏جون 22، 2015
    پیغامات:
    858
    موصول شکریہ جات:
    240
    تمغے کے پوائنٹ:
    118

    السلام علیکم ورحمتہ اللہ وبرکاتہ

    اہل علم سے گزارش ہے کہ اس کا جواب فراہم کر دیں کہ نماز وتر میں دعاء قنوت کے بعد اپنی زبان میں دعاء کر سکتے ہیں اس کی شرعی حیثیت بتلا دیں ـ جزاک اللہ خیراً
     
    • شکریہ شکریہ x 1
    • پسند پسند x 1
    • لسٹ
  2. ‏جنوری 09، 2017 #2
    اسحاق سلفی

    اسحاق سلفی فعال رکن رکن انتظامیہ
    جگہ:
    اٹک ، پاکستان
    شمولیت:
    ‏اگست 25، 2014
    پیغامات:
    6,368
    موصول شکریہ جات:
    2,395
    تمغے کے پوائنٹ:
    791

    السلام عليكم ورحمة الله وبركاته
    کیا سجدے میں پڑ کر آدمی اُردو ، پنجابی میں دعا کرے یا عربی میں آپ صلی اللہ علیہ وسلم پر درود بھی پڑھ سکتا ہے، اور قرآنی دعائیں بھی پڑھ سکتا ہے؟


    الجواب بعون الوهاب بشرط صحة السؤال


    وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاته!
    الحمد لله، والصلاة والسلام علىٰ رسول الله، أما بعد!

    سجدۂ نماز میں عربی کے علاوہ کسی بھی زبان میں دعاء بھی نہیں کرسکتا۔ دُرود کا مقام نماز میں پہلا اور دوسرا قعدہ ہے۔ سجدہ و رکوع میں قرآن پڑھنے کی ممانعت آئی ہے۔
    خبردار! میں رکوع اور سجدے میں قرآنِ حکیم پڑھنے سے روکا گیا ہوں۔ پس تم رکوع میں اپنے رب کی عظمت بیان کرو اور سجدے میں خوب دعا مانگو، تمہاری دعا قبولیت کے لائق ہوگی۔

    فتاوی احکام ومسائل




    محدث فتویٰ​
     
  3. ‏جنوری 09، 2017 #3
    اسحاق سلفی

    اسحاق سلفی فعال رکن رکن انتظامیہ
    جگہ:
    اٹک ، پاکستان
    شمولیت:
    ‏اگست 25، 2014
    پیغامات:
    6,368
    موصول شکریہ جات:
    2,395
    تمغے کے پوائنٹ:
    791

    عربی زبان میں دعائیں سیکھنا آج کل تو بہت آسان ہے ، دعاؤں کی کتابیں عام دستیاب ہیں ان سے دیکھ کر یاد کرلے ، یا اپنے قریب موجود کسی عالم سے سیکھ لے ، کسی آڈیو ویڈیو ڈیوائس سے سن کر یاد کرلے ،حتی کہ اکثر موبائل فون میں یہ سہولت ممکن ہے ،

    یہ تو اکثر لوگ جانتے ہیں کہ صحابہ کرام کے پاکیزہ دور میں ہی اسلام سمرقند و بخارا اور یورپ و افریقہ تک پھیل گیا تھا ،
    اور وہاں کے نو مسلم باشندوں کو اپنی زبان میں نماز و اذکار کی اجازت اس دور کےکسی عالم سے ثابت نہیں ۔
    اور اگر ثابت ہے تو میرے علم میں نہیں ۔
     
    • علمی علمی x 2
    • پسند پسند x 1
    • مفید مفید x 1
    • لسٹ
  4. ‏فروری 13، 2019 #4
    عامر عدنان

    عامر عدنان مشہور رکن
    جگہ:
    انڈیا،بنارس
    شمولیت:
    ‏جون 22، 2015
    پیغامات:
    858
    موصول شکریہ جات:
    240
    تمغے کے پوائنٹ:
    118

    محترم شیخ میرے سوال کا مطلب یہ تھا کہ اگر نمازی دعائے قنوت پڑھ چکا ہے (عربی میں ہی) اور امام نے تکبیر بھی نہیں ہے ۔ یعنی امام کے تکبیر کہنے میں کچھ وقت باقی ہے اور مقتدی دعائے قنوت پڑھ چکا ہے ۔ تو کیا مقتدی اللہ سے کچھ دعائیں کر سکتا ہے جو کہ عربی میں نہ ہو بلکہ عام زبان میں ہو مثلاً اے اللہ میرے والدین کی بیماریوں کو دور کر دے یا یہ کہ میرے گناہوں کو معاف کر دے وغیرہ وغیرہ ۔۔
     
  5. ‏فروری 13، 2019 #5
    اسحاق سلفی

    اسحاق سلفی فعال رکن رکن انتظامیہ
    جگہ:
    اٹک ، پاکستان
    شمولیت:
    ‏اگست 25، 2014
    پیغامات:
    6,368
    موصول شکریہ جات:
    2,395
    تمغے کے پوائنٹ:
    791

    جی اس صورت میں مقتدی دعاء تو کرسکتا ہے ، کہ محل دعاء کا ہے ،لیکن دعاء عربی میں پڑھنا ہوگی ،
    ایسے مواقع کیلئے قرآن و حدیث کی چند مختصر جامع دعائیں یاد کرلینی چاہئیں ۔
    جیسا "ربنا آتنا فی الدنیا ۔۔۔۔ والی دعاء
    اسئلک العافیۃ فی الدنیا والآخرۃ ۔۔۔ وغیرہ جا مع ادعیہ
     
  6. ‏فروری 13، 2019 #6
    عامر عدنان

    عامر عدنان مشہور رکن
    جگہ:
    انڈیا،بنارس
    شمولیت:
    ‏جون 22، 2015
    پیغامات:
    858
    موصول شکریہ جات:
    240
    تمغے کے پوائنٹ:
    118

    جزاک اللہ خیرا یا شیخ محترم
     
لوڈ کرتے ہوئے...

اس صفحے کو مشتہر کریں