1. آئیے اہم اسلامی کتب کو یونیکوڈ میں انٹرنیٹ پر پیش کرنے کے لئے مل جل کر آن لائن ٹائپنگ کریں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ کے ذریعے آپ روزانہ فقط دس پندرہ منٹ ٹائپنگ کر کے ہزاروں صفحات پر مشتمل اہم ترین کتب کو ٹائپ کرنے میں اہم کردار ادا کرکے صدقہ جاریہ میں شامل ہو سکتے ہیں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ میں شمولیت کے لئے یہاں کلک کریں۔
  2. آئیے! مجلس التحقیق الاسلامی کے زیر اہتمام جاری عظیم الشان دعوتی واصلاحی ویب سائٹس کے ساتھ ماہانہ تعاون کریں اور انٹر نیٹ کے میدان میں اسلام کے عالمگیر پیغام کو عام کرنے میں محدث ٹیم کے دست وبازو بنیں ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔

کیا نذیر حسین دہلوی رحمہ اللہ صوفی تھے اور محی الدین ابن عربی کا دفاع کرنے والے تھے؟

'منہج' میں موضوعات آغاز کردہ از عامر عدنان, ‏دسمبر 02، 2019۔

  1. ‏دسمبر 02، 2019 #1
    عامر عدنان

    عامر عدنان مشہور رکن
    جگہ:
    انڈیا،بنارس
    شمولیت:
    ‏جون 22، 2015
    پیغامات:
    865
    موصول شکریہ جات:
    241
    تمغے کے پوائنٹ:
    118

    السلام علیکم ورحمتہ اللہ وبرکاتہ
    ایک پوسٹ نظر سے گزری اسے یہاں نقل کر دیتا ہوں ۔ اہل علم سے جواب درکار ہے ۔
    " لو اپنے نذیرحسین دہلوی کو کافر کہو اپنے اصول سے
    نذیر حسین دہلوی کا شاگرد فضل حسین بہاری خود نذیر حسین دہلوی کے حوالے سے لکھتا ہے:
    صحیح بخاری وغیرہ کتب صحاح میں آپ (نذیر دہلوی) جس وقت کتاب الرقاق پڑھاتے اور نکات تصوف کو بیان فرماتے تو خود فرماتے صاحبو ہم تو احیاءالعلوم کو یہاں دیکھتے ہیں اسی لئے طبقہ علمائے کرام میں شیخ اکبر محی الدین بن عربی کی بڑی تعظیم کرتے اور خاتم الولایۃ المحمدیہ فرماتے۔" [الحیاۃ بعد المماۃ ص 123]
    اور خود نذیر حسین دہلوی نے غیر مقلد بشیر الدین قنوجی سے بھی شیخ ابن عربی کے دفاع میں مناظرہ کیا ہے۔ [الحیاۃ بعد المماۃ ص 123]
    اور جگہ اس طرح کہا ہے:
    سید الطائفہ حضرت شیخ اکبر محی الدین بن عربی رضی اللہ عنہ کہتے ہیں۔[الحیاۃ بعد المماۃ ص 306]
    ایک اور جگہ اس طرح کہا ہے:
    حضرت شیخ اکبر رضی اللہ عنہ [الحیاۃ بعد المماۃ ص 322] "

    Urduweb
     
لوڈ کرتے ہوئے...

اس صفحے کو مشتہر کریں