1. آئیے اہم اسلامی کتب کو یونیکوڈ میں انٹرنیٹ پر پیش کرنے کے لئے مل جل کر آن لائن ٹائپنگ کریں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ کے ذریعے آپ روزانہ فقط دس پندرہ منٹ ٹائپنگ کر کے ہزاروں صفحات پر مشتمل اہم ترین کتب کو ٹائپ کرنے میں اہم کردار ادا کرکے صدقہ جاریہ میں شامل ہو سکتے ہیں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ میں شمولیت کے لئے یہاں کلک کریں۔
  2. آئیے! مجلس التحقیق الاسلامی کے زیر اہتمام جاری عظیم الشان دعوتی واصلاحی ویب سائٹس کے ساتھ ماہانہ تعاون کریں اور انٹر نیٹ کے میدان میں اسلام کے عالمگیر پیغام کو عام کرنے میں محدث ٹیم کے دست وبازو بنیں ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔

حرم مدنی کے سابق امام شیخ محمد ایوب چل بسے

'اللہ تعالیٰ کے حضور دعا کریں' میں موضوعات آغاز کردہ از خضر حیات, ‏اپریل 16، 2016۔

  1. ‏اپریل 16، 2016 #21
    سید طہ عارف

    سید طہ عارف مشہور رکن
    شمولیت:
    ‏مارچ 18، 2016
    پیغامات:
    733
    موصول شکریہ جات:
    135
    تمغے کے پوائنٹ:
    104

    من أجمل التلاوات :



    تلاوة خاشعة للشيخ محمد أيوب رحمه الله.

    Sent from my SM-G360H using Tapatalk
     
  2. ‏اپریل 16، 2016 #22
    محمد نعیم یونس

    محمد نعیم یونس خاص رکن رکن انتظامیہ
    شمولیت:
    ‏اپریل 27، 2013
    پیغامات:
    26,519
    موصول شکریہ جات:
    6,610
    تمغے کے پوائنٹ:
    1,207

    اس پر پیر والے دن عرض کر ونگا..ان شاء اللہ! علیحدہ مراسلے میں..یہاں پر یوں محسوس ہو رہا ہے جیسے ہم مجلس میں سرگوشیاں کر رہے ہیں....
     
  3. ‏اپریل 17، 2016 #23
    خضر حیات

    خضر حیات علمی نگران رکن انتظامیہ
    جگہ:
    طابہ
    شمولیت:
    ‏اپریل 14، 2011
    پیغامات:
    8,777
    موصول شکریہ جات:
    8,337
    تمغے کے پوائنٹ:
    964

  4. ‏اپریل 17، 2016 #24
    ساجد کمبوہ

    ساجد کمبوہ رکن
    شمولیت:
    ‏اگست 13، 2011
    پیغامات:
    115
    موصول شکریہ جات:
    172
    تمغے کے پوائنٹ:
    82

    اناللہ وانا الیه راجعون . اللهم اغفرله وارحمه وعافه واعف عنه واكرم نزله ووسع مدخله وادخله الجنة الفردوس
     
  5. ‏اپریل 17، 2016 #25
    ابوطلحہ بابر

    ابوطلحہ بابر مشہور رکن رکن انتظامیہ
    جگہ:
    راولپنڈی
    شمولیت:
    ‏فروری 03، 2013
    پیغامات:
    665
    موصول شکریہ جات:
    836
    تمغے کے پوائنٹ:
    195

    انا للہ وانا اليه راجعون
    اَللّٰهُمَّ اغْفِرْ لَهُ وَارْفَعْ دَرَجَتَهُ فِی الْمَهْدِیِّیْنَ وَاخْلُفْهُ فِیْ عَقِبِهِ فِی الْغَابِرِیْنَ وَاغْفِرْ لَنَا وَلَهُ یَا رَبَّ الْعَالَمِیْنَ وَافْسَحْ لَهُ فِی قَبْرِهِ وَنَوِّرْ لَهُ فِیْهِ
     
  6. ‏اپریل 17، 2016 #26
    کنعان

    کنعان فعال رکن
    جگہ:
    برسٹل، انگلینڈ
    شمولیت:
    ‏جون 29، 2011
    پیغامات:
    3,564
    موصول شکریہ جات:
    4,376
    تمغے کے پوائنٹ:
    521

    انا للہ وانا الیه راجعون
     
  7. ‏اپریل 18، 2016 #27
    محمد عامر یونس

    محمد عامر یونس خاص رکن
    جگہ:
    karachi
    شمولیت:
    ‏اگست 11، 2013
    پیغامات:
    16,985
    موصول شکریہ جات:
    6,510
    تمغے کے پوائنٹ:
    1,069

    السلام علیکم ورحمتہ اللہ وبرکاتہ !

    امام مسجد نبوی (صلی اللہ علیہ وسلم) شیخ ایوب رحمہ اللہ اللہ کو پیارے ہوگئے، مسجد نبوی میں نماز جنازہ، مناظر آپ بھی دیکھیں

     
  8. ‏اپریل 18، 2016 #28
    محمد عامر یونس

    محمد عامر یونس خاص رکن
    جگہ:
    karachi
    شمولیت:
    ‏اگست 11، 2013
    پیغامات:
    16,985
    موصول شکریہ جات:
    6,510
    تمغے کے پوائنٹ:
    1,069

    السلام علیکم ورحمتہ اللہ وبرکاتہ !

    خوبصورت لہجہ، خوبصورت آواز الشیخ محمد ایوب (امام مسجد نبوی صلی اللہ علیہ وسلم) رحمہ اللہ کے حوالے سے پیغام ٹی وی کی خصوصی رپورٹ

     
  9. ‏اپریل 18، 2016 #29
    محمد عامر یونس

    محمد عامر یونس خاص رکن
    جگہ:
    karachi
    شمولیت:
    ‏اگست 11، 2013
    پیغامات:
    16,985
    موصول شکریہ جات:
    6,510
    تمغے کے پوائنٹ:
    1,069

    برما کا چاند


    السلام علیکم ورحمتہ اللہ وبرکاتہ !

    زخمی زخمی برما کے دامن سے برسوں پہلے اک چاند طلوع ہوا تھا.... جو مدینہ کے افق پر جا چمکا...جی ہاں قاری محمد ایوب ١٩٥٢ میں مکہ میں پیدا ہووے...ان کے والدین سعودیہ ہجرت کر چکے تھے....پھر قاری صاحب وہیں پلے بڑھے..جوان ہوۓ ..اور اس قدر ترقی کی کہ امام مسجد نبوی بن گئے....ان برسوں میں ١٤١٠ ہجری کا سن ان کے لیے خوشیوں کا سال ثابت ہوا ... کہ اس برس تنہا انہوں نے مسجد نبوی شریف میں تراویح کی امامت کی....برسوں گزرے آپ پاکستان تشریف لائے..ایک محفل میں آپ نے تلاوت کی..میں بھی وہاں حاضر تھا...اس محفل کی یادیں آج بھی دل ودماغ کو معطر کر رہی ہیں...

    حرم میں انتظامی تبدیلیاں ہوتی رہتی ہیں...آپ کو امامت کی ذمہ داریوں سے سبکدوش کر دیا گیا...دل میں کسک تھی ..جو پلتی رہی اور گاہے ہونٹوں تک آ جاتی کہ.....

    ".اک بار مصلی نبوی پر پھر سے حاضری ہو..."ہم سنائیں اور سنا کریں وہ"...اور اک اور خواہش کہ چھوٹی بیٹی بھی حافظہ ہو جائے....."

    ..........شاہ سلمان آئے..اپنے بندے کی صدا اللہ نے سن لی اور آپ کو امامت کے لیے کہا گیا......آپ نے امامت کی اور اس کے بعد بہت جلد الله سے ملاقات کو چل دیے...الله ان سے راضی ہو.....ہاں اک بات یاد آئی کہ برما کے مسلمان مظلوم ہوتے تھے ...تب بھی ان پر ظلم کے پہاڑ توڑے جاتے ...ان دنوں سعودی عرب نے بے شمار برمیوں کو اپنے ہاں آباد کیا تھا...قانونی کارروائی کے تقاضے پورے کرنے کے لیے پاکستانی پاسپورٹ کی سہولت ہماری حکومت نے فراہم کی ....یوں ہم کہ سکتے ہیں کہ امام حرم نبوی شریف پاکستانی بھی تھے...اور وہ اپنی اس "شہریت" کا ذکر بھی کیا کرتے تھے...لیکن یہ افتخار تو ہمارے لیے تھا ...کہ وہ پاکستانی بھی تھے


    ............ابوبکرقدوسی

    اللہم اغفر لہ یا رب العالمین
     
لوڈ کرتے ہوئے...

اس صفحے کو مشتہر کریں