1. آئیے اہم اسلامی کتب کو یونیکوڈ میں انٹرنیٹ پر پیش کرنے کے لئے مل جل کر آن لائن ٹائپنگ کریں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ کے ذریعے آپ روزانہ فقط دس پندرہ منٹ ٹائپنگ کر کے ہزاروں صفحات پر مشتمل اہم ترین کتب کو ٹائپ کرنے میں اہم کردار ادا کرکے صدقہ جاریہ میں شامل ہو سکتے ہیں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ میں شمولیت کے لئے یہاں کلک کریں۔۔
  2. محدث ٹیم منہج سلف پر لکھی گئی کتبِ فتاویٰ کو یونیکوڈائز کروانے کا خیال رکھتی ہے، اور الحمدللہ اس پر کام شروع بھی کرایا جا چکا ہے۔ اور پھر ان تمام کتب فتاویٰ کو محدث فتویٰ سائٹ پہ اپلوڈ بھی کردیا جائے گا۔ اس صدقہ جاریہ میں محدث ٹیم کے ساتھ تعاون کیجیے! ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔ ۔

ننگے سر نماز پڑھنے کو شعار نہ بنائیں

'نماز' میں موضوعات آغاز کردہ از جی مرشد جی, ‏اکتوبر 31، 2017۔

  1. ‏نومبر 06، 2017 #21
    محمد طارق عبداللہ

    محمد طارق عبداللہ سینئر رکن
    جگہ:
    ممبئی - مہاراشٹرا
    شمولیت:
    ‏ستمبر 21، 2015
    پیغامات:
    2,201
    موصول شکریہ جات:
    679
    تمغے کے پوائنٹ:
    213

    تمھاری "علمی حیثت" کی بابت اشماریہ بھائی نے پوچھا تو تھا ، کیوں جواب نا بن پڑا؟
    ملاحظہ ھو:

    جتلا دوں کہ آپ قرآن کی آیت کے مفھوم پر اپنی سمجھ بتا (منوا) رھے تھے !!
     
  2. ‏نومبر 06، 2017 #22
    محمد طارق عبداللہ

    محمد طارق عبداللہ سینئر رکن
    جگہ:
    ممبئی - مہاراشٹرا
    شمولیت:
    ‏ستمبر 21، 2015
    پیغامات:
    2,201
    موصول شکریہ جات:
    679
    تمغے کے پوائنٹ:
    213

    اتہامات کے سلسلے اور دراز کرو کیونکہ اب تم اپنی اصلیت پر اتارو ھو
     
  3. ‏نومبر 06، 2017 #23
    جی مرشد جی

    جی مرشد جی رکن
    شمولیت:
    ‏ستمبر 21، 2017
    پیغامات:
    435
    موصول شکریہ جات:
    11
    تمغے کے پوائنٹ:
    38

    السلام علیکم ورحمۃ اللہ
    بھائی میں کچھ کہتا ہوں اور آپ کس مسئلہ کو لے بیٹھتے ہو۔ میں نے واضح لفظوں میں کہا کہ سر ننگا رکھنے کی ترغیب کسی حدیث میں نہیں لہٰذا اس کو شعار نہ بنائیں۔ سر ڈھانکنا واجب ہے یا مستحب یہ میرا موضوع نہیں۔ میں تو اتحاد کے لئے کہہ رہا ہوں کہ باقی معاملات میں ہر دو کے پاس کوئی نہ کوئی دلیل ہے مگر سر ننگا رکھنے والوں کے پاس کوئی دلیل نہیں تو ایسے کام کو شعار بنانا بدرجہ اولیٰ غلط ہے لہٰذا اسے تو چھوڑ دینے کی ترغیب تمام مسلک کے علماء کے ذمہ ہے کہ وہ اپنے اپنے متبعین کو اس کی تلقین کریں۔

    اس کا مقصد بھی ساتھ ہی بتایا اسے بھی دیکھ لیں۔
     
  4. ‏نومبر 06، 2017 #24
    عمر اثری

    عمر اثری سینئر رکن
    جگہ:
    نئی دھلی، انڈیا
    شمولیت:
    ‏اکتوبر 29، 2015
    پیغامات:
    4,043
    موصول شکریہ جات:
    1,039
    تمغے کے پوائنٹ:
    387

    مجھے مزید بحث نہیں کرنی. جو کہنا تھا سو کہ دیا.
     
  5. ‏نومبر 11، 2017 #25
    جی مرشد جی

    جی مرشد جی رکن
    شمولیت:
    ‏ستمبر 21، 2017
    پیغامات:
    435
    موصول شکریہ جات:
    11
    تمغے کے پوائنٹ:
    38

    السلام علیکم ورحمۃ اللہ
    تو کون کون بھائی اس نیکی کے کام میں معاون بنے گا؟
    جو خود بھی اس سے احتراض کرے اور اپنے رفیقوں کو بھی اس سے بچنے کی ترغیب دے۔
     
  6. ‏نومبر 21، 2017 #26
    جی مرشد جی

    جی مرشد جی رکن
    شمولیت:
    ‏ستمبر 21، 2017
    پیغامات:
    435
    موصول شکریہ جات:
    11
    تمغے کے پوائنٹ:
    38

    سب بھائیوں سے گزارش ہے کہ سر ڈھانپ کر نماز پڑھنے کی عادت ڈالیں۔
    خصوصاٍ جن کا یہ شعار بن چکا ہے وہ تو پہلی فرصت میں اسے چھوڑ دیں کہ کسی ایسی چیز کو شعار بنانا جس کا حکم نہ ہو فرقہ واریت کو ہوا دینا ہے۔
     
لوڈ کرتے ہوئے...

اس صفحے کو مشتہر کریں