• الحمدللہ محدث فورم کو نئےسافٹ ویئر زین فورو 2.1.7 پر کامیابی سے منتقل کر لیا گیا ہے۔ شکایات و مسائل درج کروانے کے لئے یہاں کلک کریں۔
  • آئیے! مجلس التحقیق الاسلامی کے زیر اہتمام جاری عظیم الشان دعوتی واصلاحی ویب سائٹس کے ساتھ ماہانہ تعاون کریں اور انٹر نیٹ کے میدان میں اسلام کے عالمگیر پیغام کو عام کرنے میں محدث ٹیم کے دست وبازو بنیں ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔

عبدالرزاق بن ہمام

خضر حیات

علمی نگران
رکن انتظامیہ
شمولیت
اپریل 14، 2011
پیغامات
8,773
ری ایکشن اسکور
8,458
پوائنٹ
964
تقریب تہذیب کے مولف یعنی ابن حجر نے کہا

ان کا شیعہ ہونا ثابت نہیں کیونکہ ہم کو شیعوں کے پاس ان کی کوئی روایت نہیں ملی اگر شیعہ ہوتے تو ان سے وہ روایت کرتے


ابن حجر کی تحقیق میں نقص ہے
ابن حجر نے کس جگہ کہا ہے تقریب کا صفحہ نمبر ؟
 

وجاہت

رکن
شمولیت
مئی 03، 2016
پیغامات
421
ری ایکشن اسکور
44
پوائنٹ
45
ابن حجر نے کس جگہ کہا ہے تقریب کا صفحہ نمبر ؟
پہلے @قاضی786 بھائی سے پوچھ لیں - جو سوال پوچھ رہے ہیں اس پر -

دوسرا یہ کہ ان پر تشیع کا بھی الزام ہے، مگر تحریر تقریب التہذیب کے مصنفو نے لکھا ہے

ثقة حافظ، لم يثبت تشيعه، ولم نجد له رواية عند الشيعة، فلو كان شيعيا لرووا عنه

اس پارے میں اہل علم کیا کہتے ہیں؟

شکریہ
 

وجاہت

رکن
شمولیت
مئی 03، 2016
پیغامات
421
ری ایکشن اسکور
44
پوائنٹ
45
ویسے انہوں نے تو تقریب کا حوالہ کہیں نہیں دیا ۔
چلیں آپ بتادیں یا وہ بتادیں ۔
چلیں ان سے پوچھ لیں پہلے کیوں کہ انہوں نے عربی عبارت پیش کی اور سوال کیا- حیرت اس بات پر ہے کہ علماء نے ان سے اس کا حوالہ نہیں پوچھا اور لمبے لمبے جوابات چھاپتے چلے گیۓ- ابتسامہ
 
شمولیت
مئی 27، 2016
پیغامات
256
ری ایکشن اسکور
75
پوائنٹ
85
ثقة حافظ، لم يثبت تشيعه، ولم نجد له رواية عند الشيعة، فلو كان شيعيا لرووا عنه
4064- عبد الرزاق ابن همام ابن نافع الحميري مولاهم أبو بكر الصنعاني ثقة حافظ مصنف شهير عمي في آخر عمره فتغير وكان يتشيع من التاسعة مات سنة إحدى عشرة وله خمس وثمانون ع
 

خضر حیات

علمی نگران
رکن انتظامیہ
شمولیت
اپریل 14، 2011
پیغامات
8,773
ری ایکشن اسکور
8,458
پوائنٹ
964
چلیں ان سے پوچھ لیں پہلے کیوں کہ انہوں نے عربی عبارت پیش کی اور سوال کیا- حیرت اس بات پر ہے کہ علماء نے ان سے اس کا حوالہ نہیں پوچھا اور لمبے لمبے جوابات چھاپتے چلے گیۓ- ابتسامہ
بھائی ’ وجاہت ‘ واضح ہوگی ہے آپ کی ’ جہالت ‘ ۔ :)
تحریر تقریب التہذیب اور کتاب ہے ۔ قاضی صاحب نے اس کی عبارت نقل کی ہے ۔
آپ نے ’ تقریب التہذیب ‘ کا نام دیکھ کر جٹ سے اس کو ابن حجر کی طرف منسوب کردیا ہے ۔
آپ جیسے بھائیوں کو میں ان چیزوں کی اس لیے توجہ دلاتا رہتا ہوں کہ آپ اتنی چھوٹی چھوٹی چیزوں میں تمیز کی صلاحیت نہیں رکھتے ، لیکن آپ کے ذھن میں پتہ نہیں کون سا تحقیقی زعم پیدا ہوگیا کہ شاید محدثین سارے جھک ہی مارتے رہے ہیں ، اس کے بعد صدیوں تک لوگ اسی مکھی پر مکھی مارتے آئے ، اور اب آپ لوگ ان کی غلطیوں کو طشت ازبام کر رہے ہو ۔
 
Top