• الحمدللہ محدث فورم کو نئےسافٹ ویئر زین فورو 2.1.7 پر کامیابی سے منتقل کر لیا گیا ہے۔ شکایات و مسائل درج کروانے کے لئے یہاں کلک کریں۔
  • آئیے! مجلس التحقیق الاسلامی کے زیر اہتمام جاری عظیم الشان دعوتی واصلاحی ویب سائٹس کے ساتھ ماہانہ تعاون کریں اور انٹر نیٹ کے میدان میں اسلام کے عالمگیر پیغام کو عام کرنے میں محدث ٹیم کے دست وبازو بنیں ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔

اعلانات محدث فورم کے قواعد وضوابط

سٹیٹس
مزید جوابات پوسٹ نہیں کیے جا سکتے ہیں۔

ابوالحسن علوی

علمی نگران
رکن انتظامیہ
شمولیت
مارچ 08، 2011
پیغامات
2,524
ری ایکشن اسکور
11,550
پوائنٹ
641
بسم الله الرحمن الرحيم​

السلام عليكم ورحمة الله وبركاته

محدث فورم کسی خاص مسلک، جماعت یا گروہ کا نمائندہ فورم نہیں ہے بلکہ سلف صالحین کے منہج پر کتاب وسنت کے فہم اور اس کی اتباع کا مدعی ہے۔


نمبر1
فورم کے اراکین اپنی رائے کتاب وسنت کے دلائل کی روشنی میں بیان کریں گے اور اس کی مزید وضاحت بھی کر سکیں گے لیکن اپنے فہم یا رائے پر بے جا اصرار مناسب نہیں ہے کیونکہ ہمارے ذمہ صرف پہنچانا ہے نہ کہ جبرا منوانا۔فھل علی الرسل الا البلاغ المبین۔
نمبر2
متفرق مسالک، مذاہب، تحریکوں اور شخصیات کی ذات کو ہدف تنقید نہ بنایا جائے اور نہ ہی کسی طبقے کی معزز شخصیات کو برا بھلا کہا جائے بلکہ ان کے عقائد ونظریات کا دلائل کی روشنی میں جائزہ لیا جائے۔
نمبر3
یہ فورم علمی، دعوتی اور دینی موضوعات کے ساتھ خاص ہے لہٰذا اس میں کھیل کود اور تفریح وغیرہ جیسے موضوعات سے اجتناب کیا جائے۔
نمبر4
یہ ایک دعوتی و تبلیغی فورم ہے نہ کہ دار الافتاء، پس فورم کا اصل مقصود نقلی و عقلی دلائل کے ساتھ علمی مکالمہ و مباحثہ ہے لہذا شخصیات، مسالک، اسلامی تحریکوں اور سیاسی جماعتوں کی تکفیر و تفسیق کے لیے اس فورم کو بطور پلیٹ فارم استعمال کرنا ممنوع ہے۔
نمبر5
سلف صالحین کے فہم کے خلاف کتب، لٹریچر اور مضامین کی کاپی پیسٹ یا نشر و اشاعت کے لیے فورم کے استعمال کی اجازت نہیں ہے۔ ہاں! اس فورم پر دلائل کی بنیاد پر مکالمہ کے معاملہ میں مختلف مکاتب فکر، مسالک اور مناہج کے حاملین کی حوصلہ افزائی کی جائے گی۔
نمبر6
فورم میں لمبی پوسٹس کو اجزا میں شیئر کیا جائے گا اور اگر کوئی پوسٹ کسی اور ویب سائیٹ سے لی گئی ہے تو آخر میں متعلقہ ویب سائیٹ کا حوالہ دیا جائے۔
نمبر7
فورم کے شرکا ء اور اراکین باہم گالم گلوچ، ذاتیات پر تنقید اور ناشائستہ زبان سے اجتناب کریں اور حتی الامکان ایک دوسرے کے بارے بدگمانی اور سوئے ظن کے اظہار سے گریز کیا جائے۔
نمبر8
فورم میں واضح اور مکمل تصویر کے استعمال سے اجتناب کیا جائے۔
نمبر9
فورم کی انتظامیہ یا اراکین سے متعلق کسی بھی قسم کا شکوہ یا شکایت اوپن فورم میں نہیں ہونی چاہیے بلکہ صرف مخصوص زمرے (ہم سے رابطہ وغیرہ)میں بیان کیا جائے۔
نمبر10
اگرچہ انبیائے کرام کے علاوہ کوئی معصوم نہیں ہے لیکن فکری وذہنی انتشار بھی دین میں مطلوب ومقصود نہیں لہٰذا کسی بھی مسئلہ میں فورم کی انتظامیہ کی رائے بطور قضانہ کہ بطور اجتہاد حتمی تصور ہو گی۔
نمبر11
فورم پر شائع شدہ مواد کو اسی صورت میں(as it is) دوسری ویب سائیٹس وغیرہ پر دینی اور دعوتی مقاصد کے تحت پیش کیا جا سکتا ہے لیکن اس مواد کی کتابی یا تحریری شکل میں نشر و اشاعت سے پہلے متعلقہ باحثین اور فورم انتظامیہ سے اجازت لینا ضروری ہے۔
نمبر12
کسی بھی پوسٹ میں محدث فورم کے درج بالا قواعد وضوابط کا التزام ضروری ہو گا۔
نمبر13
ان قواعد وضوابط کی خلاف ورزی کی صورت میں یا تو انتطامیہ کی طرف سے متعلقہ پوسٹ میں قواعد وضوابط کی روشنی میں اصلاح کر دی جائے گی۔
نمبر14
یا پھر یوزر کی پوسٹ کو فورا نامنظور کرتے ہوئے اسے ذاتی پیغام کے ذریعے اپنی پوسٹ میں اصلاح کی توجہ دلائی جائے گی ۔اور اگر یوزر اپنی پوسٹ میں اصلاح کر کے ذاتی پیغام کے ذریعے انتظامیہ کو مطلع کر دیتا ہے تو اس کی پوسٹ کو دوبارہ منظور کر دیا جائے گا۔
نمبر15
اگر کسی یوزر کی پوسٹ میں مباحثہ یا مناظرہ یاجواب در جواب وغیرہ کا سلسلہ شروع ہو جائے گا تو اس پوسٹ کو مکالمہ میں منتقل کر دیا جائے گا اور وہاں اس پوسٹ پر مکالمہ کے قواعد وضوابط یعنی قاعدہ نمبر 2 اور قاعدہ نمبر 5 کا سختی سے نفاذ ہو گا۔ کسی بھی پوسٹ کو مکالمہ میں منتقل کرتے وقت متعلقہ دھاگے میں انتظامیہ کی طرف سے اطلاع دے دی جائے گی۔
نمبر16
قواعد و ضوابط کی کسی شدید یا سنگین خلاف ورزی پر ہی کوئی تھریڈ یا مراسلہ منظر عام سے ہٹایا جاتا ہے ، ایسی صورت میں متعلقہ رکن یا دوسرے اراکین سے درخواست ہے کہ اوپن فورم میں غیرضروری شکایات کے ذریعے انتظامیہ کے اس ایکشن پر بحث سے احتراز کیا جائے۔
نمبر17
محدث فورم سوشل نیٹ ورکنگ کا ایک دینی پلیٹ فارم ہے جس کا اصل مقصود دعوت و تبلیغ کی خاطر جدید ذرائع ابلاغ کے ایک میڈیم کے طور استعمال کرنا ہے۔ فورم کے عمومی شرکاء عام مسلمان یا طلبۃ العلم ہوتے ہیں لہذا یہاں مسالک، فرق، جماعتوں اور شخصیات کی تکفیر سے متعلقہ مضامین یا تھریڈ لگانے کی ہر گز اجازت نہیں ہے کیونکہ تکفیر کا اصل پلیٹ فارم دار الافتاء ہیں اور اس کے اصل اہل راسخون فی العلم ہیں۔
 

ابوالحسن علوی

علمی نگران
رکن انتظامیہ
شمولیت
مارچ 08، 2011
پیغامات
2,524
ری ایکشن اسکور
11,550
پوائنٹ
641
2.متفرق مسالک، مذاہب، تحریکوں اور شخصیات کی ذات کو ہدف تنقید نہ بنایا جائے اور نہ ہی کسی طبقے کی معزز شخصیات کو برا بھلا کہا جائےبلکہ ا ن کے عقائد ونظریات کا دلائل کی روشنی میں جائزہ لیا جائے ۔
5.فورم کے شرکا ء اور اراکین باہم گالم گلوچ، ذاتیات پر تنقید اور ناشائستہ زبان سے اجتناب کریں اور حتی الامکان ایک دوسرے کے بارے بدگمانی اور سوئے ظن کے اظہار سے گریز کیا جائے۔
دوسروں پر تنقید کرنا اور اپنے پر نقد برداشت کرناصحت مند معاشروں کی علامت ہے لیکن اس میں نقد وتنقید میں اسلوب بیان میں بہرحال نرمی ہونی چاہیے۔ کسی کی ذات کو ہدف تنقید بنانے اور فکر پر نقد کرنے میں جو فر ق ہے ، وہ ہر کسی کے لیے واضح ہے ۔ مذکورا بالا قواعد وضوابط کی تعیین تقریبا ڈیڑھ ماہ پہلے ہوئی تھی لیکن اس بارے کچھ باتیں توجہ طلب ہیں کہ ہمارے یوزرز نقد وتنقید میں کسی مسلک کے نام یا اس مسلک کے نمائندگان یا محترم شخصیات کو ہدف نہ بنائیں۔
جزاکم اللہ خیرا۔
 

ابوالحسن علوی

علمی نگران
رکن انتظامیہ
شمولیت
مارچ 08، 2011
پیغامات
2,524
ری ایکشن اسکور
11,550
پوائنٹ
641
محدث فورم کے قواعد وضوابط (٢)

نمبر1۔
کسی بھی پوسٹ میں محدث فورم کے درج ذیل قواعد وضوابط کا التزام ضروری ہو گا۔
نمر2۔
ان قواعد وضوابط کی خلاف ورزی کی صورت میں یا تو انتطامیہ کی طرف سے متعلقہ پوسٹ میں قواعد وضوابط کی روشنی میں اصلاح کر دی جائے گی۔
نمبر3۔
یا پھر یوزر کی پوسٹ کو فوراً نامنظور کرتے ہوئے اسے ذاتی پیغام کے ذریعے اپنی پوسٹ میں اصلاح کی توجہ دلائی جائے گی۔ اور اگر یوزر اپنی پوسٹ میں اصلاح کر کے ذاتی پیغام کے ذریعے انتظامیہ کو مطلع کر دیتا ہے تو اس کی پوسٹ کو دوبارہ منظور کر دیا جائے گا۔
نمبر4۔
اگر کسی یوزر کی پوسٹ میں مباحثہ یا مناظرہ یا جواب درجواب وغیرہ کا سلسلہ شروع ہو جائے گا تو اس پوسٹ کو مکالمہ میں منتقل کر دیا جائے گا اور وہاں اس پوسٹ پر مکالمہ کے قواعد وضوابط یعنی قاعدہ نمبر2 اور قاعدہ نمبر5 کا سختی سے نفاذ ہو گا۔ کسی بھی پوسٹ کو مکالمہ میں منتقل کرتے وقت متعلقہ دھاگے میں انتظامیہ کی طرف سے اطلاع دے دی جائے گی۔
نمبر5۔
قواعد و ضوابط کی کسی شدید یا سنگین خلاف ورزی پر ہی کوئی تھریڈ یا مراسلہ منظر عام سے ہٹایا جاتا ہے ، ایسی صورت میں متعلقہ رکن یا دوسرے اراکین سے درخواست ہے کہ اوپن فورم میں غیرضروری شکایات کے ذریعے انتظامیہ کے اس ایکشن پر بحث سے احتراز کیا جائے۔
 

ابوالحسن علوی

علمی نگران
رکن انتظامیہ
شمولیت
مارچ 08، 2011
پیغامات
2,524
ری ایکشن اسکور
11,550
پوائنٹ
641
محدث فورم کے قواعد وضوابط (3)
فورم پر کلمہ گو مسلمانوں کی جان ومال کو حلال قرار دینے والے کسی بھی قسم کے مواد کے شیئر کرنے کی اجازت نہیں ہے۔ جن حضرات کو اس قسم کی ابحاث سے دلچسپی ہو، وہ فیس بک، ٹوئٹر اور گوگل پلس جیسی ویب سائیٹس کا رخ کر سکتے ہیں۔ تکفیر، خروج اور مسلمانوں میں باہمی جنگ وجدال کے بارے کسی بھی قسم کی پوسٹس شیئر کرنے کی صورت میں فورم کی رکنیت معطل کر دی جائے گی۔
 

خضر حیات

علمی نگران
رکن انتظامیہ
شمولیت
اپریل 14، 2011
پیغامات
8,777
ری ایکشن اسکور
8,434
پوائنٹ
964
8 نمبر اصول سے ایک استثنا :
’’ فورم پر تصویر کی ممانعت کا قانون بنایاگیا تھا ، جس کا اصل مقصد دیگر بعض فورمز پر اس کے غیر ضروری استعمال اور اس سے برآمد ہونے والے مفاسد کی روک تھام تھی ، اس قانون کے فوائد تو بالکل واضح ہیں ، لیکن ایک نقصان یہ تھا کہ بہت اہم امور پر مشتمل کالمز بھی قلمکاروں کی تصاویر کی بنا پر لگنے سے رہ جاتے تھے ، دوسری طرف تدوین کرکے تصویر ختم کرنا بھی ہر رکن کے لیے ممکن نہیں ، لہذا یہ فیصلہ کیا گیا ہے کہ تصاویر کی ممانعت والے اصول سے کالمز پر موجود تصاویر کو مستثنی کیا جائے ، لیکن اس کے باوجود اگر انتظامیہ یا فورم کا کوئی رکن یہ سمجھے گا کہ کسی تحریر یا کالم میں موجود تصویر مناسب نہیں تو انتظامیہ اس کو حذف کرنے کا حق رکھتی ہے ۔ ‘‘
[USERGROUP=2]@رجسٹرڈ اراکین[/USERGROUP]
 
Last edited:
سٹیٹس
مزید جوابات پوسٹ نہیں کیے جا سکتے ہیں۔
Top