1. آئیے اہم اسلامی کتب کو یونیکوڈ میں انٹرنیٹ پر پیش کرنے کے لئے مل جل کر آن لائن ٹائپنگ کریں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ کے ذریعے آپ روزانہ فقط دس پندرہ منٹ ٹائپنگ کر کے ہزاروں صفحات پر مشتمل اہم ترین کتب کو ٹائپ کرنے میں اہم کردار ادا کرکے صدقہ جاریہ میں شامل ہو سکتے ہیں۔ محدث ٹائپنگ پراجیکٹ میں شمولیت کے لئے یہاں کلک کریں۔۔
  2. محدث ٹیم منہج سلف پر لکھی گئی کتبِ فتاویٰ کو یونیکوڈائز کروانے کا خیال رکھتی ہے، اور الحمدللہ اس پر کام شروع بھی کرایا جا چکا ہے۔ اور پھر ان تمام کتب فتاویٰ کو محدث فتویٰ سائٹ پہ اپلوڈ بھی کردیا جائے گا۔ اس صدقہ جاریہ میں محدث ٹیم کے ساتھ تعاون کیجیے! ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔ ۔

کیا احناف کی نماز عند اللہ مقبول نہیں؟

'منہج' میں موضوعات آغاز کردہ از جی مرشد جی, ‏اکتوبر 04، 2017۔

  1. ‏اکتوبر 04، 2017 #1
    جی مرشد جی

    جی مرشد جی رکن
    شمولیت:
    ‏ستمبر 21، 2017
    پیغامات:
    440
    موصول شکریہ جات:
    11
    تمغے کے پوائنٹ:
    38

    ابن داود نے علامہ سیطی رحمۃ اللہ علیہ کی ایک تحریر ایک تھریڈ میں پیش کی ہے۔
    بھائی @اشماریہ اور @احمد پربھنوی اس کو ملاحظہ فرمائیں۔
     
    • ناپسند ناپسند x 2
    • شکریہ شکریہ x 1
    • لسٹ
  2. ‏اکتوبر 04، 2017 #2
    جی مرشد جی

    جی مرشد جی رکن
    شمولیت:
    ‏ستمبر 21، 2017
    پیغامات:
    440
    موصول شکریہ جات:
    11
    تمغے کے پوائنٹ:
    38

     
  3. ‏اکتوبر 04، 2017 #3
    اشماریہ

    اشماریہ سینئر رکن
    جگہ:
    کراچی
    شمولیت:
    ‏دسمبر 15، 2013
    پیغامات:
    2,635
    موصول شکریہ جات:
    722
    تمغے کے پوائنٹ:
    276

    علامہ سیوطی رح شافعی ہیں اور یہاں انہوں نے شوافع کے لیے دوسرے مسالک والوں کے پیچھے نماز پڑھنے کا حکم تحریر کیا ہے.
    اس طرح کے اقوال احناف میں بھی موجود ہیں. دونوں طرف کے معتدل عماء کے فتاوی ان اقوال پر نہیں ہیں.

    بہر صورت یہ مسئلہ شوافع کے سوچنے کا ہے کہ وہ ہمارے پیچھے نماز پڑھیں یا نہ پڑھیں. ہمارے لیے اس میں کوئی درد سری نہیں ہے.
    ویسے بھی اس عبارت میں احناف کا ذکر نہیں ہے اور ان مسائل میں سے مختلف میں دوسرے مسالک بھی احناف کے ساتھ ہیں مثلا نیت و ترتیب کا شرط نہ ہونا وغیرہ.
    ابن داود بھائی سے پوچھ لیں کہ نیت اور ترتیب ان کے یہاں شرط ہے یا نہیں؟ اگر شرط نہیں ہے تو پھر سیوطی رح کے قول کے مطابق شوافع کی ان کے پیچھے نماز ہو جاتی ہے یا نہیں؟
     
  4. ‏اکتوبر 05، 2017 #4
    ابن داود

    ابن داود فعال رکن رکن انتظامیہ
    شمولیت:
    ‏نومبر 08، 2011
    پیغامات:
    2,921
    موصول شکریہ جات:
    2,538
    تمغے کے پوائنٹ:
    525

    السلام علیکم ورحمۃ اللہ وبرکاتہ!
    امام سیوطی نے یہاں حنفیوں کی نماز کو باطل قرار دیا ہے!
    اس لئے انہوں نے دوسروں کو ان کے پیچھے نماز پڑھنے والوں کو نماز دہرانے کا حکم دیا ہے!
    بغور پڑھ کر تبصرہ کرنا چاہئے!
     
    Last edited: ‏اکتوبر 05، 2017
  5. ‏اکتوبر 05، 2017 #5
    جی مرشد جی

    جی مرشد جی رکن
    شمولیت:
    ‏ستمبر 21، 2017
    پیغامات:
    440
    موصول شکریہ جات:
    11
    تمغے کے پوائنٹ:
    38

    بھائی @ابن داود کی بات ٹھیک لگ رہی ہے کہ امام سیوطی رحمۃ اللہ علیہ نے احناف ہی کے متعلق بات کی ہے۔ وجہ اس کی یہ کہ اسی تحریر میں جن مسائل کا ذکر ہے وہ احناف سے ہی منصوب ہیں۔ مثلاً نبیذ سے وضوء، نجاست کا مسئلہ، کتے کی کھا وغیرہ جیسے مسائل۔
    بھائی @اشماریہ
    میرے خیال میں نبیذ سے وضوء والی بات دوران سفر سے متعلق ہے۔ یعنی مسافر کو اگر پانی نہ ملے اور اس کے پاس نبیذ ہو تو کیا اس کے لئے نبیذ سے وضوء کر لینا چاہیئے یا کہ تیمم کرے۔
    کتےکی کھال کا مسئلہ کچھ یوں ہے کہ جو کھال دباغت سے پاک ہو جاتی ہے وہ ذبح سے بھی پاک ہو جاتی ہے۔ دلیل اس کی یہ ہے کہ جانور جب ذبح کرتے ہیں تو اس کی کھال بغیر دبات پاک ہوتی ہے اس کو دباغت کی ظرورت نہیں ہوتی۔ مگر اگر کوئی جانور بغیر ذبح مر جائے تو اس کی کھال بغیر دباغت کے پاک نہیں ہوتی۔
    یہ مسائل دراصل رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کے اس فرمان سے اخذ کیئے گئے ہیں جس میں ایک مردہ بکری سے استفادہ کا ذکر ہے۔ واللہ اعلم بالصواب
     
  6. ‏اکتوبر 05، 2017 #6
    اشماریہ

    اشماریہ سینئر رکن
    جگہ:
    کراچی
    شمولیت:
    ‏دسمبر 15، 2013
    پیغامات:
    2,635
    موصول شکریہ جات:
    722
    تمغے کے پوائنٹ:
    276

    یہ مسائل جہاں سے بھی اخذ کیے گئے ہیں، امام سیوطیؒ نے ان کے حوالے سے اپنے مسلک کو بیان کیا ہے۔ باقی عربی عبارت جتنی منقول ہے اس میں تو "حنفیوں" کا ذکر نہیں ہے (اگرچہ مترجم نے اپنی سمجھ کے مطابق بریکٹ میں حنفیوں کا ذکر کیا ہے)۔ یہ مسائل اکثر احناف سے متعلق ہیں لیکن دیگر مسالک میں بھی کئی پائے جاتے ہیں تو جب کوئی بھی ایسے مسلک والا نماز پڑھائے گا تو امام سیوطیؒ کے نزدیک اس کے پیچھے دوسروں کو نماز نہیں ہوگی۔ آپ @ابن داود بھائی سے دریافت فرمائیے کہ ان مسائل میں سے نیت اور ترتیب ان کے یہاں شرط ہے یا نہیں؟ اگر نہیں تو پھر امام سیوطیؒ کی نماز ان کے پیچھے بھی نہیں ہوگی۔
     
  7. ‏اکتوبر 05، 2017 #7
    جی مرشد جی

    جی مرشد جی رکن
    شمولیت:
    ‏ستمبر 21، 2017
    پیغامات:
    440
    موصول شکریہ جات:
    11
    تمغے کے پوائنٹ:
    38

    السلام علیکم ورحمۃ اللہ
    بھائی @اشماریہ اس پر کچھ روشنی ڈالنا پسند کریں گے؟
     
  8. ‏اکتوبر 05، 2017 #8
    اشماریہ

    اشماریہ سینئر رکن
    جگہ:
    کراچی
    شمولیت:
    ‏دسمبر 15، 2013
    پیغامات:
    2,635
    موصول شکریہ جات:
    722
    تمغے کے پوائنٹ:
    276

    جی نہیں۔ پسند نہیں کروں گا۔
    آپ ان مسائل کا درس ترمذی میں مطالعہ فرما سکتے ہیں۔
     
  9. ‏اکتوبر 05، 2017 #9
    جی مرشد جی

    جی مرشد جی رکن
    شمولیت:
    ‏ستمبر 21، 2017
    پیغامات:
    440
    موصول شکریہ جات:
    11
    تمغے کے پوائنٹ:
    38

    السلام علیکم ورحمۃ اللہ
    ایک تو اس کا حوالہ دے دیں دوسری بات یہ کہ اس سے صرف مجھے فائدہ ہوگا بقیہ لوگ مستفید نہ ہو سکیں گے۔ ابتدا اس فورم پر بھائی @ابن داود نے کر ہی دی ہے۔
    یہ اس لئے بھی چاہتا ہوں کہ لوگوں کو پتہ چلے کہ بعض مسائل پیدا ہوتے ہیں اور بعض مسائل پیدا کیئے جاتے ہیں۔
     
  10. ‏اکتوبر 05، 2017 #10
    اشماریہ

    اشماریہ سینئر رکن
    جگہ:
    کراچی
    شمولیت:
    ‏دسمبر 15، 2013
    پیغامات:
    2,635
    موصول شکریہ جات:
    722
    تمغے کے پوائنٹ:
    276

    بندے کی مصروفیات اس سے مانع ہیں۔ معذرت چاہتا ہوں۔ آیت خاتم النبیین والے تھریڈ کے لیے بھی بمشکل وقت نکال پا رہا ہوں۔
     
    • شکریہ شکریہ x 1
    • پسند پسند x 1
    • متفق متفق x 1
    • لسٹ
لوڈ کرتے ہوئے...

اس صفحے کو مشتہر کریں