• الحمدللہ محدث فورم کو نئےسافٹ ویئر زین فورو 2.1.7 پر کامیابی سے منتقل کر لیا گیا ہے۔ شکایات و مسائل درج کروانے کے لئے یہاں کلک کریں۔
  • آئیے! مجلس التحقیق الاسلامی کے زیر اہتمام جاری عظیم الشان دعوتی واصلاحی ویب سائٹس کے ساتھ ماہانہ تعاون کریں اور انٹر نیٹ کے میدان میں اسلام کے عالمگیر پیغام کو عام کرنے میں محدث ٹیم کے دست وبازو بنیں ۔تفصیلات جاننے کے لئے یہاں کلک کریں۔

اعتقادی نفاق

شمولیت
نومبر 04، 2012
پیغامات
82
ری ایکشن اسکور
351
پوائنٹ
36
یہی نفاق اکبرہے جس میں ایک منافق بظاہر اسلام کی نمائش کرتاہے لیکن اپنے اندر کفر کو چھپائے رکھتاہے سب سے نچلے طبقہ میں پہنچ جاتاہے ۔اللہ نے تمام بر ے اوصاف سے انہیں متصف کیاہے کبھی کافر کہا کبھی بے ایمان کہا کبھی دین اور دین داروں کے ساتھ مذاق اڑانے والے سے انہیں تعبیر کیا ان کی بری صفات بیان کرتے وثت کہا گیا کہ یہ ہمہ تن دشمنان اسلام کی طرف جھکے رہتے ہیں اس لیے کہ ان کی اسلام دشمنی بھی ان ظاہر کافر دشمنوں سے کم نہیں ہو تی ۔لہذا یک منافق بظاہر اللہ تعالی ،اس کرے فرشتوں ،اس کی کتا بوں ،اس کے رسولو ں اور یو م آخرت پر ایمان کا اعلان کرتاہے ۔لیکن اندرونی طور پر ان چیزوں سے عاری ہوتاہے ۔بلکہ ان حقائق کو جھٹلاتاہے ۔اللہ تعالی پر ایمان لاتا ہے نہ اس بات پر کہ اللہ تعالی نے اپنے ایک بندہ پر اپنا کلام پاک نازل فرمایا ہے اور اس کو رسو ل کو بنایاہے تاکہ وہ اس کی اجازت سے لوگو ں کو ہدایت کرے ،اللہ تعا لی نے کلام مجید میں ان منافقوں کے پردہ کوفاش فرمایاہے اور ان کے باطنی راز کو کھول دیاہے او راپنے بندوں پر ان کے معاملہ کو ظاہر کردیاہے ،تا کہ وہ بھی نفاق او راہل نفاق سے خبردار ہیں اللہ تعالی نے سورہ بقرہ کی ابتداء میں لوگوں کے تین طبقوں کا تذکرہ کیاہے ۔مو منین ،کفار ،اور منافقین ،پس مو منوں کے سلسلہ میں چار آیتیں نازل ہوئیں ،کافروں کے سے متعلق دو آیتیں ،جب کہ منافقین کے بارے میں تیرہ آیتیں ،او ریہ صرف منافقو ں کی کثرت لوگوں میں نفا ق کے پھلنے او راسلام او راہل اسلام کے لئے عظیم فتنہ ثابت ہو نے کی وجہ سے ،او رمنافقوں کی ریشہ دوانیوں کی وجہ سے اسلام کو بہت سے مصائب بہی جھلینے پڑے ہیں
اعتقادی نفا ق کی چھ قسمیں ہیں :
1رسول اللہ (ﷺ)کی لائی ہو ئی شربعت کی بعض باتو ں سے بغض رکھنا ۔
2رسول اللہ (ﷺ)سے بعض رکھنا ۔
3رسول اللہ (ﷺ)کی لائی ہو ئی شریعت کے بعض حصہ کو جھٹلانا۔
4رسول اللہ (ﷺ)کے الا ئے ہو ئے دین کے زوال سے خوش ہونا ۔
5رسول اللہ (ﷺ)کے دین کے غلبہ وبالا دستی سے تکلف اور رنج وغم ہو نا
6رسول اللہ (ﷺ)کو جھٹلانا ۔ (مجموعۃ التوحیدیۃ )واللہ اعلم
 

حرب بن شداد

سینئر رکن
شمولیت
مئی 13، 2012
پیغامات
2,149
ری ایکشن اسکور
6,343
پوائنٹ
437
یہی نفاق اکبرہے جس میں ایک منافق بظاہر اسلام کی نمائش کرتاہے لیکن اپنے اندر کفر کو چھپائے رکھتاہے
3رسول اللہ (ﷺ)کی لائی ہو ئی شریعت کے بعض حصہ کو جھٹلانا۔
واللہ اعلم
شیعہ کے نزدیک شرع کے دلائل صرف تین ہیں۔۔۔
١۔ کتاب اللہ۔
٢۔ سنت رسول صلی اللہ علیہ وسلم۔
٣۔ آئمہ معصومین کے اقوال وارشادات۔

ان کے نظریئے کے مطابق امام معصوم کے بغیر اجماع باطل ہے تابہ قیاش چہ رشد؟؟؟۔۔۔ یہ تو ایک ظاہری اصول ہے اگر ذرا گہرائی میں اتر کر غور کیا جائے تو معلوم ہوگا کے شیعہ کے نزدیک ان تین دلائل کا مرجع اور خلاسہ بھی صرف ایک ہے یعنی قول امام۔۔۔ چنانچہ کتاب اللہ کی فلاں آیت کا قول خداوندی ہونا اُن کے نزدیک قول امام سے معلوم ہوگا۔۔۔ اگر امام معصوم یہ ارشاد فرمائیں کےیہ آیت یوں نہیں یوں ہے تو شیعہ کے نزدیک قول معصوم کی بنا پر اس آیت کو اسی طرح ماننا ضروری ہے جس طرح امام نے فرمایا خلاصہ یہ کہ قرآن کلام الہٰی ہے مگر قرآن کریم کی کسی آیت کا قول خداوندی اورکلام الہٰی ہونا شیعہ کے نزدیک امام معصوم کی تصدیق وتصویب پر موقوف ہے۔۔۔

جہاں تک ارشادات نبویہ اور احادیث رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کا سوال ہے شیعہ کے نزدیک وہ بھی صرف اس صورت میں معتبر ہیں جبکہ وہ آئمہ معصومین کے ذریعے پہنچی ہوں یا اقوال آئمہ کے موافق ہوں ورنہ چونکہ ان کے نزدیک صحابہ کرام عادل وثقہ نہیں لہذا ان کی ایسی روایات جو آئمہ معصومین کے ذریعے نہ پہنچی ہوں یاقول معصوم ان کی تائید نہ کرتا ہو وہ شیعہ کے نزدیک ساقط الاعتبار ہوں گی چنانچہ شیعوں کے محدث اعظم علامہ باقر مجلسی کی کتاب بحار الانوار جزودوم (طبع جدید) کتاب العلم میں باب ٢٨ کا عنوان ہے۔۔۔
 

ًمحمد عفان

مبتدی
شمولیت
اگست 13، 2015
پیغامات
2
ری ایکشن اسکور
0
پوائنٹ
21
میرا سوال ھے ک عبداللہ بن ابی منافقت سے پھلے مشرک تھا یا نھیں اور نام کیا پیدایشی یھی تھا؟
 

عبدالرحمن بھٹی

مشہور رکن
شمولیت
ستمبر 13، 2015
پیغامات
2,435
ری ایکشن اسکور
287
پوائنٹ
165
ان کے نظریئے کے مطابق امام معصوم کے بغیر اجماع باطل ہے تابہ قیاش چہ رشد؟؟؟۔۔۔ یہ تو ایک ظاہری اصول ہے اگر ذرا گہرائی میں اتر کر غور کیا جائے تو معلوم ہوگا کے شیعہ کے نزدیک ان تین دلائل کا مرجع اور خلاسہ بھی صرف ایک ہے یعنی قول امام۔۔۔ چنانچہ کتاب اللہ کی فلاں آیت کا قول خداوندی ہونا اُن کے نزدیک قول امام سے معلوم ہوگا۔۔۔ اگر امام معصوم یہ ارشاد فرمائیں کےیہ آیت یوں نہیں یوں ہے تو شیعہ کے نزدیک قول معصوم کی بنا پر اس آیت کو اسی طرح ماننا ضروری ہے جس طرح امام نے فرمایا خلاصہ یہ کہ قرآن کلام الہٰی ہے مگر قرآن کریم کی کسی آیت کا قول خداوندی اورکلام الہٰی ہونا شیعہ کے نزدیک امام معصوم کی تصدیق وتصویب پر موقوف ہے۔۔۔
جہاں تک ارشادات نبویہ اور احادیث رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کا سوال ہے شیعہ کے نزدیک وہ بھی صرف اس صورت میں معتبر ہیں جبکہ وہ آئمہ معصومین کے ذریعے پہنچی ہوں یا اقوال آئمہ کے موافق ہوں ورنہ چونکہ ان کے نزدیک صحابہ کرام عادل وثقہ نہیں لہذا ان کی ایسی روایات جو آئمہ معصومین کے ذریعے نہ پہنچی ہوں یاقول معصوم ان کی تائید نہ کرتا ہو وہ شیعہ کے نزدیک ساقط الاعتبار ہوں گی چنانچہ شیعوں کے محدث اعظم علامہ باقر مجلسی کی کتاب بحار الانوار جزودوم (طبع جدید) کتاب العلم میں باب ٢٨ کا عنوان ہے۔۔۔
محترم! اس بحث کو بالائے طاق رکھتے ہوئے کہ کہ آپ لوگوں کے مذعومہ امام ”معصوم“ ہیں ان کو معصوم فرض کرتے ہوئے عرض ہے کہ؛
آپ تک ان کی باتیں کس طرح پہنچی ہیں معصوم واسطہ سے یا غیر معصوم واسطہ سے؟
 
Top